"ویسٹ فالن معاہدۂ امن" کے نسخوں کے درمیان فرق

Jump to navigation Jump to search
کوئی ترمیمی خلاصہ نہیں
[[یورپ]] کی تاریخ میں ویسٹ فالن کا امن معاہدہ ایک خاص اہمیت کا حامل ہے۔ اس معاہدہ کے نتیجہ میں یورپ میں ایک بڑی مذہبی جنگ کا خاتمہ ہوا اور یورپ کا وہ سیاسی نقشہ تشکیل پایا جو کہ کچھ رد و بدل کے ساتھ اب تک باقی ہے۔ اس معاہدہ میں یورپ کی تمام سیاسی اور مذہبی طاقتوں نے حصہ لیا اور اس لحاظ سے اسے متحدہ یورپ کی جانب پہلا اہم قدم قرار دیا جا سکتا ہے۔
 
==تعارف==
ازمنہءوسطی میں یورپ کی عیسائیت دو بڑے گروہوں میں بٹی ہوئی تھی۔ ان میں سے ایک گروہ کتھولک عیسائیت تھا جس کے سربراہ جناب پوپ صاحب تھے۔ اس کے مقابل پر دوسرا گروہ پروٹسٹنٹ عیسائیوں کا تھا۔ یورپ کے شمال میں بالعموم پروٹسٹنٹ جبکہ جنوب میں کتھولک عیسائیت کے حامی اکثریت میں تھے۔ اس مذہبی تقسیم کے علاوہ یورپ اس وقت سیاسی طور پر چھوٹے چھوٹے نوابوں اور رئیسوں کے تصرف میں تھا جو کہ آگے کسی نہ کسی بادشاہ کے دربار سے منسلک تھے اور بہت سے ان میں سے آزاد بھی تھے۔ عام طور پر مذہبی آزادی موجود نہ تھی اور ہر بادشاہ کا مذہب اختیار کرنا اس کی تمام رعایا کے لئے بھی ضروری تھا۔ یوں یورپ اس وقت سیاسی اور مذہبی تقسیم کے لحاظ سے ایک ایسے قالین کا نقشہ پیش کر رہا تھا جس میں صدہا مختلف رنگ بھر دئے گئے ہوں۔ بڑی طاقتوں میں یورپ کے مرکز میں ”جرمن قوم کی مقدس رومن سلطنت“[[مقدس_رومی_سلطنت]] ،جنوب میں [[فرانس]] اور [[سپین]] کی کتھولک حکومتیں جبکہ شمال میں [[سویڈن]] کی پروٹسٹنٹ طاقت تھی۔
 
==آغاز==
950

ترامیم

فہرست رہنمائی