"کرشن" کے نسخوں کے درمیان فرق

Jump to navigation Jump to search
2 بائٹ کا اضافہ ،  3 سال پہلے
م
درستی املا بمطابق فہرست املا پڑتالگر + ویکائی
م (خودکار: خودکار درستی املا ← دار الحکومت، سے، سے، ہو گئی)
م (درستی املا بمطابق فہرست املا پڑتالگر + ویکائی)
 
==کرشن کو ختم کرنے کی کوششیں اور ان کوششوں کی ناکامی==
کرشن کا رضاعی باپ نندا گوالوں کے قبیلے کا سربراہ تھا اور [[برندا بن]] میں رہتا تھا۔ چنانچہ کرشن کا بچپن اور جوانی گایوں کے چرواہے کے طور پر گزری۔جبگزری۔ جب کرشن نے آدم خور بلا پٹان کو ہلاک کیا، جو انہیں قتل کرنے کے لیے بھیجی گئی تھی، تو ہندو عقائد کے مطابق کالیا نام کے ایک سانپ کو دریائے [[جمنا]] کے پانیوں میں زہر ملانے بھیجا گیا تھا تاکہ وہاں کی گائیں مر جائیں۔ کرشن نے اس سانپ کو سدھا لیا۔ ہندو پینٹنگز میں اکثر کرشن کو کالیا کے ساتھ رقص کرتے دکھایا جاتا ہے۔ مزید یہ بھی عقیدہ ہے کہ کرشن نے دیوتاؤں کے بادشاہ اندر کو بھی خوب سبق سکھایا۔ بھگوت پران کے مطابق کرشن نے لوگوں کو بتایا کہ بارش برسانے والا اندر نہیں، اس لیے وہ اس کی پوجا نہ کیا کریں بلکہ اس پہاڑ کی پوجا کریں جہاں سے بارش برستی ہے۔ اس پر اندر کرشن کا دشمن ہو گیا اور اس نے ان سے بدلہ لینے کی ٹھانی، مگر اسے شکست ہوئی۔
 
==گوپیاں==
1966 ء میں قائم ہونے والی سوامی پربھوپد کی روحانی جماعت انٹرنیشنل سوسائٹی فار کرشن کونشیئس کے پیروکاروں کے نزدیک کرشن اور انکی تعلیماتِ حب کو مرکزی اہمیت حاصل ہے۔ کرشن کا یوم ولادت [[جنم اشٹمی]] بڑے عقیدت سے ہر سال بھادوں کے مہینے میں منایا جاتا ہے۔
 
مہابھارت کی محاذ جنگ [[کرک شیتر|کُرُکْ شیتْر]] پر پہنچنے پر ارجن نے جب دیکھا کہ مخالف فوج میں اس کے گرو اور بزرگ موجود ہیں، تو وہ جنگ کے متعلق مخمصے کا شکار ہو گیا۔ اس موقع پر کرشن نے اسے ایک شاندار وعظ دیا۔ یہی بھگوت گیتا یعنی خدا کا گیت کہلاتا ہے اور ہندوؤں کی مقدس کتاب مانا جاتا ہے۔ یہ کتاب خدا کی محبت اور اس کی موجودگی میں رہنےکارہنے کا نہ صرف درس دیتی ہے ۔ہے۔ کرشن کی کامیاب جنگی حکمت عملیوں کے باعث کورو یہ جنگ جیت گئے۔
 
==انتقال==
اپنی زندگی کے آخری دنوں میں کرشن مراقبے کے لیے جنگل میں چلے گئے۔ ایک شکاری کا تیر ایک دن غلطی سے انہیں جا لگا اور کرشن کا انتقال ہو گیا۔ ارجن نے ان کی ارتھی جلا کر ان کی آخری رسومات ادا کیں۔ہندوکیں۔ ہندو عقیدے کے مطابق کرشن کی وفات پر [[دواپار یگ]] کا اختتام ہو گیا اور [[کل یگ]] شروع ہو گیا۔<ref>[http://bhaur.blogspot.in/2011/09/krishna.html?view=classic Cogito, Ergo Sum: (کرشن جی مہاراج) A Brief Biography of Krishna<!-- خودکار تخلیق شدہ عنوان -->]</ref>
 
== مزید دیکھیے ==

فہرست رہنمائی