خلیفہ بن زاید آل نہیان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
شیخ  ویکی ڈیٹا پر (P511) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
خلیفہ بن زاید آل نہیان
(عربی میں: خليفة بن زايد آل نهيَّان ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Sheikh Khalifa.jpg
 

مناصب
امیر ابوظہبی (12 )   ویکی ڈیٹا پر (P39) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
برسر عہدہ
2 نومبر 2004  – 13 مئی 2022 
Fleche-defaut-droite-gris-32.png زاید بن سلطان آل نہیان 
محمد بن زايد آل نہيان  Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
صدر متحدہ عرب امارات (2 )   ویکی ڈیٹا پر (P39) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
برسر عہدہ
3 نومبر 2004  – 13 مئی 2022 
Fleche-defaut-droite-gris-32.png زاید بن سلطان آل نہیان 
محمد بن زايد آل نہيان  Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
معلومات شخصیت
پیدائش 7 ستمبر 1948  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
العین  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 13 مئی 2022 (74 سال)[1]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ابو ظہبی  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت[2]  ویکی ڈیٹا پر (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of the Trucial States (1968–1971).svg ریاستہائے ساحل متصالح (1948–1971)
Flag of the United Arab Emirates.svg متحدہ عرب امارات (1971–2022)  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
زوجہ شمسہ بنت سہیل المزروعی  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد سلطان بن خلیفہ النہیان،  محمد بن خلیفہ بن زاید آل نہیان  ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والد زاید بن سلطان آل نہیان  ویکی ڈیٹا پر (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والدہ حسا بنت محمد بن خلیفہ النہیان  ویکی ڈیٹا پر (P25) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بہن/بھائی
خاندان آل نہیان  ویکی ڈیٹا پر (P53) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مادر علمی رائل ملٹری اکیڈمی سینڈہرسٹ  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مادری زبان عربی  ویکی ڈیٹا پر (P103) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان عربی،  انگریزی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
ESP Isabella Catholic Order CROSS.svg آرڈر آف اسابیلا دی کیتھولک
Galó de l'Orde del Bany (UK).svg آرڈر آف دی باتھ
UK Order St-Michael St-George ribbon.svg آرڈر آف سینٹ مائیکل اور سینٹ جارج 
Order Zayed rib.png آرڈر آف زاید
ESP Isabella Catholic Order GC.svg گرینڈ کراس آف دی آرڈر آف اسابیلا دی کیتھولک  ویکی ڈیٹا پر (P166) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

خلیفہ بن زاید آل نہیان (عربی: خليفة بن زايد بن سلطان آل نهيان) (پیدائش 1948ء)، جنہیں عمومی طور پر شیخ نہیان یا شیخ خلیفہ کے نام سے پکارا جاتا ہے، متحدہ عرب امارات کے صدر اور ابوظہبی کے امیر رہے۔

پیدائش[ترمیم]

7 ستمبر 1948ء کو ابو ظہبی سے تقریباً ڈیڑھ گھنٹے کی مسافت پر واقع شہر العین کے تاریخی المويجعی قلعے میں پیدا ہوئے تھے۔ والد زاید بن سلطان آل نہیان اور والدہ حسا بنت محمد بن خلیفہ النہیان تھیں،

تعلیم[ترمیم]

رائل ملٹری اکیڈمی سینڈہرسٹ برطانیہ میں زیر تعلیم رہے، اور عسکری تربیت حاصل کی،

عملی زندگی[ترمیم]

1966ء میں جب شیخ زید ابوظہبی کے حاکم بنے تو شیخ خلیفہ کو مشرقی علاقوں میں ان کا نمائندہ مقرر کیا گیا۔ اس وقت شیخ خلیفہ کی عمر صرف 18 سال تھی۔ تین سال بعد ہی جب شیخ خلیفہ کو ولی عہد بنایا گیا تو اس وقت تک وہ برطانیہ کے سینڈہرسٹ کی فوجی اکیڈمی سے فوجی تربیت بھی حاصل کر چکے تھے۔ ولی عہد مقرر کیے جانے کے فوراً بعد انھیں ابو ظہبی کے دفاع کے شعبے کا چیئرمین مقرر کر دیا گیا۔

1971ء میں متحدہ عرب امارات کے قیام کے بعد شیخ خلیفہ کو ابو ظہبی کا وزیرِ اعظم بنایا گیا۔ اس دوران وہ کئی دیگر عہدوں پر بھی فائز رہے۔ وہ ابو ظہبی کی کابینہ کے سربراہ بھی تھے، وزیرِ دفاع اور وزیرِ مالیات بھی۔ سنہ 1973ء میں انھیں متحدہ عرب امارات کا نائب وزیرِ اعظم مقرر کیا گیا۔ سنہ 1976ء میں امارات کی فوج کا نائب کمانڈر بنایا گیا اور 1980ء کی دہائی میں انھیں ابوظہبی کی سپریم پیٹرولیم کونسل (المجلس الاعلى للبترول) کا سربراہ مقرر کیا گیا۔ یہ عہدہ ان کی موت تک ان کے پاس رہا۔

صدارت و امارت[ترمیم]

شیخ خلیفہ متحدہ عرب امارات کے دوسرے صدر اور ابوظہبی کی امارات کے 16ویں حکمران تھے۔ وہ شیخ زید کے بڑے بیٹے تھے۔

اپنے والد زاید بن سلطان آل نہیان کی وفات کے بعد انہیں یہ دونوں عہدے 3 نومبر، 2004ء کو ملے، گو کہ وہ والد کی علالت کے باعث کچھ عرصہ قبل سے ہی عملی طور پر تمام انتظامی امور کی ذمہ داری سنبھال رہے تھے متحدہ عرب امارات کا صدر بننے کے بعد شیخ خلیفہ نے وفاقی حکومت اور ابوظہبی، دونوں کی بڑی تنظیم نو کی۔

دیگر مناصب[ترمیم]

2004ء سے 2022ء تک سپریم کمانڈر یو اے سی آرمڈ فورسز بھی رہے، چیئرمین سپریم پٹرولیم کونسل کے طور پر 1980ء کی دہائی میں رہے، وہ ابوظہبی ترقیاتی فنڈ کے چئیرمین بھی رہے۔

برج خلیفہ[ترمیم]

4 جنوری 2010ء کو دبئی میں برج خلیفہ کے افتتاح کے موقع پر ان کا نام بین الاقوامی میڈیا پر ابھر کر اس وقت سامنے آیا جب دبئی کے امیر نے افتتاح سے قبل برج دبئی کا نام بدل کر ان کے اعزاز میں برج خلیفہ کر دیا۔ بعض ذرائع کے مطابق اس کی وجہ ابو ظہبی کی جانب سے دبئی کو دی جانے والی امداد بتائی جاتی ہے۔

فالج کا حملہ[ترمیم]

24 جنوری 2014 میں شیخ خلیفہ کو فالج کا حملہ ہوا تھا جس سے ان کی صحت کافی متاثر ہوئی تھی۔

بی بی سی کی ایک رپورٹ کے مطابق شیخ خلیفہ کے سوتیلے بھائی شیخ محمد بن زاید النہیان نے اس وقت کہا تھا کہ شیخ خلیفہ بن زاید النہیان ’ایک مشکل بحران سے گزرے‘ لیکن ’اس پر قابو پا لیا‘ گیا ہے۔

وفات[ترمیم]

13 مئی 2022ء کو طویل علالت کے بعد وفات پا گئے[3]شیخ خلیفہ بن زایدالنہیان کے انتقال پر 40 روز کے سوگ کے ساتھ 3 روز کی عام تعطیل بھی ہوئی، جب کہ اس دوران قومی پرچم سرنگوں رہا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. وفاة رئيس دولة الإمارات الشيخ خليفة بن زايد آل نهيان — اخذ شدہ بتاریخ: 13 مئی 2022 — سے آرکائیو اصل فی 13 مئی 2022 — شائع شدہ از: 13 مئی 2022
  2. https://www.wam.ae/en/details/1395303046735
  3. https://urdu.geo.tv/latest/285575