درندوں کی بستی (ناول)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

درندوں کی بستی ابن صفی کے شاہکار ناولوں میں سے ایک ہے جس میں عمران ایک نئے اور خطرناک انداز میں نظر آتا ہے۔

کہانی[ترمیم]

شکرال کی جنگ کے عنوان سے مشہور چار قسطوں میں سے آخری قسط کی داستان کا تعلق شکرال سے ہے جہاں سے تخریب کاری کی شاخیں نکل کر دور دراز ملکوں میں پھیلی ہوتی ہے اور علی عمران کا ملک بھی اس تخریب کاری کا شکار ہوتا ہے۔ اسی تخریب کاری کے فتنے کو کچلنے کے لئے علی عمران ایک منصوبہ ترتیب دیتا ہے اور بحیثیت ایکس ٹو اپنی پوری ٹیم کو علی عمران کی قیادت میں شکرال روانہ کرتا ہے۔

بلیک زیرو[ترمیم]

ایکس ٹو کا سب سے خاص آدمی بلیک زیرو شکرال میں مارا جاتا ہے۔

انجام[ترمیم]

قارئین کی سوچ کے خلاف درندوں کی بستی میں حقیقی درندوں کے وجود کا پتا لگتا ہے جسے علی عمران اپنے مخصوص طریقے سے انجام تک پہنچاتا ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

[1]

  1. شکرال کی جنگ از ابن صفی