دلال بنت سعود

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
دلال بنت سعود
(عربی میں: دلال بنت سعود بن عبد العزيز آل سعود ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
President John F. Kennedy Visits Saud bin Abdul-Aziz Al Saud, King of Saudi Arabia (06) (cropped).jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1957  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ریاض  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تاریخ وفات 10 ستمبر 2021 (63–64 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مدفن مقبرہ العود  ویکی ڈیٹا پر (P119) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت  ویکی ڈیٹا پر (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Saudi Arabia.svg سعودی عرب  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات ولید بن طلال  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والد سعود بن عبدالعزیز  ویکی ڈیٹا پر (P22) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
خاندان آل سعود  ویکی ڈیٹا پر (P53) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان عربی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

دلال بنت سعود آل سعود (1957–2021) ایک سعودی عربی کارکن اور مخیر حضرات تھیں۔ آل سعود کی ایک رکن، وہ نوجوانوں اور خطرے سے دوچار بچوں کی فلاح و بہبود کے حوالے سے اپنی سرگرمیوں کے لیے مشہور تھیں۔

زندگی[ترمیم]

شہزادی دلال سعودی عرب کے دوسرے حکمران شاہ سعود کی بیٹیوں میں سے ایک کے طور پر ریاض میں پیدا ہوئیں۔ اس کی والدہ ترکیہ محمد العزیز تھیں۔ شہزادی دلال کے بھائیوں میں شہزادہ منصور، شہزادہ عبداللہ، شہزادہ ترکی، اور شہزادہ الولید شامل تھے۔

شہزادی دلال سعودی شاہی اور تاجر الولید بن طلال آل سعود کی پہلی بیوی تھیں۔ جب ان کی شادی ہوئی تو اس کے سسر شہزادہ طلال نے اسے شادی کے تحفے کے طور پر 200,000 ڈالر کا ہار دیا جسے اس نے اپنے شوہر کے لیے پیسے اکٹھے کرنے کے لیے بیچ دیا۔ دلال بنت سعود نے بعد میں شہزادہ الولید سے طلاق لے لی جس سے ان کے دو بچے تھے: شہزادی ریم اور شہزادہ خالد۔ خالد 1978 میں کیلیفورنیا میں پیدا ہوئے اور ریم 1982 میں پیدا ہوئیں۔

دلال بنت سعود لیگیسی آف ہوپ فاؤنڈیشن کے اعزازی بورڈ رکن تھیں، جو دنیا بھر میں بچوں کے لیے صحت کی دیکھ بھال میں اصلاحات پر توجہ دینے والی ایک تنظیم تھی۔ وہ مختلف مہمات اور پروگراموں میں شامل تھی جو نوجوانوں اور خطرے سے دوچار بچوں کو نشانہ بناتی ہیں اور اس گروپ کی رضاعی دیکھ بھال کرتی ہیں۔

فروری 2021 میں شہزادی دلال کی بیٹی شہزادی ریم نے ٹویٹ کیا کہ دلال کا ٹیومر نکالنے کا آپریشن ہوا۔ وہ 10 ستمبر 2021 کو کینسر کی وجہ سے انتقال کر گئیں۔ سعودی پریس ایجنسی نے اطلاع دی ہے کہ ان کی نماز جنازہ 13 ستمبر 2021 کو ریاض کی امام ترکی بن عبداللہ مسجد میں ادا کی جائے گی۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Saudi Princess Dalal bint Saud bin Abdulaziz Al Saud passes away". Sharjah 24. WAM. 12 September 2021. اخذ شدہ بتاریخ 12 ستمبر 2021.