دکن مجاہدین

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
دکن مجاہدین
سالہائے فعالیت 2008ء - موجودہ
فعال علاقے ممبئی، بھارت
نظریہ اسلامی انتہا پسند
قابلِ ذکر کاروائیاں 26 نومبر 2008ء ممبئی میں دہشت گردی کی کاروائیاں (دعوٰی، جس کی تصدیق باقی ہے)

دکن مجاہدین مبینہ طور پر اسلامی انتہا پسندوں کی تحریک ہے جس کا تعلق بھارت سے ہے۔ ایک برقی خط کے مطابق جو مختلف خبر رساں اداروں کو بھیجا گیا، یہ دعوٰی کیا گیا ہے کہ 26 نومبر، 2008ء کو ممبئی پر ہونے والے حالیہ دہشت گردی کے حملوں میں دکن مجاہدین ملوث ہے، جس میں ایک سو ایک (101)[1] افراد جاں بحق ہوئے[2] اور دو سو پچاس سے زائد دیگر افراد زخمی ہوئے۔ اس گروہ کے ملوث ہونے کی خبر کی تصدیق اب تک سرکاری طور پر نہیں کی گئی۔ یہ ایک فریب یا کسی فرضی تنظیم کا نام بھی ہو سکتا ہے۔[3] یہ بھی ممکن ہے کہ اگر اس طرح کی کوئی تنظیم موجود بھی ہے تو اُس کا تعلق ممکنہ طور پر بھارتی مجاہدین سے ہو سکتا ہے۔[4][5][6]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "ممبئی میں دہشت گردی کی کاروائیاں:چھ غیر ملکیوں سمیت ایک سو ایک افراد ہلاک"۔ ٹائمز آف انڈیا۔ 2008-11-26۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  2. "دکن مجاہدین نامی تنظیم کا دعوٰی، ممبئی بم دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرلی - خبر"۔ بھارتی خبر رساں ادارے۔ 2008-11-26۔
  3. "ممبئی بھیانک حملوں سے ہل گیا"۔ بی بی سی۔ 2008-11-26۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  4. "بھارتی مجاہدین کی جانب سے ممبئی کو نشانہ بنانے کی دھمکی"۔ انڈیا ٹوڈے۔ 2008-09-14۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  5. "دکن کے مسلح جتھے کا ممبئی کے نہتوں پر حملہ"۔ نیو ڈیزائن ورلڈ Press۔ 2008-11-27۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  6. "دکن مجاہدین کون ہیں؟"۔ فارن پالیسی ڈاٹ کام۔ 2008-11-27۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔