رسول جعفریان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
رسول جعفریان
رسول جعفریان (3).jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1343 (عمر 677–678 سال)[1]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
خوراسگان  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Iran.svg ایران  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ مؤرخ،  مصنف  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان فارسی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ملازمت جامعہ تہران  ویکی ڈیٹا پر (P108) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

رسول جعفریان( فارسی: رسول جعفریان‎ ) (پیدائش 30 جون ، 1964) ایک ایرانی پیشوا اور ایرانی تاریخ کے میدان میں محقق ہے۔ اس وقت وہ تہران یونیورسٹی میں شعبہ تاریخ کے پروفیسر ، اسلام اور ایران سے متعلق خصوصی لائبریری کے ڈائریکٹر اور تہران یونیورسٹی کی مرکزی لائبریری کے ڈائریکٹر ہیں۔ [2] رسول جعفاریان ، اکیڈمی آف سائنسز کے جنرل اسمبلی کے ممبروں کے ووٹ کے ساتھ جون 2018 میں ایران کی اکیڈمی آف سائنسز کے مستقل ممبر بن گئے۔ [3] [4]



زندگی[ترمیم]

پیدائش[ترمیم]

رسول جعفریان 30 جون 1964 کو خووراسگان ، صوبہ اصفہان ، ایران پیدا ہوئے۔ [5]



تعلیم[ترمیم]

خووراسگن میں اپنی ابتدائی تعلیم مکمل کرنے کے بعد ، اس نے اصفہان کا سفر کیا اور اپنی مڈل اسکول کی تعلیم وہاں ہی گزاری۔ اصفہان میں قیام کے دوران ، جعفریہ نے مذہبی اسکولوں میں آزادانہ طور پر کلاسوں میں شرکت کی۔ انہوں نے اپنی مدرسہ تعلیم جاری رکھنے کے لیے 1978 میں قم ہجرت کی اور پہلے خان اسکول اور پھر ریسالٹ اسکول کی کلاسز میں تعلیم حاصل کی۔ [6]



تعلیم[ترمیم]

1980 میں ، اپنی تعلیم مکمل کرنے کے بعد ، تہران یونیورسٹی اور اصفہان یونیورسٹی میں تدریس کا آغاز کیا۔ اسلامی علوم اور اسلام کی تاریخ ان شعبوں میں شامل ہے جو اس نے سکھائے ہیں۔ [6] جعفاریان جون 2018 میں ایران کی اکیڈمی آف سائنسز کے مستقل رکن بن گئے [7] اور اس وقت وہ پروفیسر کے عہدے کے ساتھ تہران یونیورسٹی میں درس و تدریس کر رہے ہیں۔ [8]



تحقیق کا میدان[ترمیم]

جعفاریان کی مرکزی تحقیق شیعہ اسلام کی تاریخ پر ہے ، لیکن انہوں نے اسلام کے آغاز کی سیاسی تاریخ اور صفوی دور کی تاریخ جیسے شعبوں میں بھی بہت ساری تحقیق کی ہے۔ [9] انہوں نے ایرانی زیارت (حج ) کی تاریخ سے متعلق متعدد مطالعات اور مضامین بھی شائع کیے ہیں۔ [10]

ایوارڈ[ترمیم]

رسول جعفریہ

جعفاریان کو ان کی تحریروں پر کئی قومی ایوارڈ مل چکے ہیں۔ کتاب شیعہ (کے اٹلس فارسی: اطلس شیعه ) ، جو ایران کے کتاب آف دی ایئر ایوارڈز [11] کے لیے منتخب کیا گیا ہے اور جلال ا e احمد ادبی ایوارڈز اور فارابی بین الاقوامی ایوارڈ کے فاتح [12] اور ایران میں جاری داراوں اور مذہبی سیاسی تنظیموں کی فارسی: جریان‌ها و سازمان‌های مذهبی سیاسی ایران ) فارابی انٹرنیشنل ایوارڈ کے لیے بھی منتخب کیا گیا ہے۔ [13]

انتظامی ذمہ داریاں[ترمیم]

کتاب جائزہ سیشن (4 اگست ، 2019) میں رسول جعفریہ

جعفاریان کے پاس اپنے ریکارڈ میں کئی انتظامی ذمہ داریاں بھی عائد ہیں۔ ان ذمہ داریوں میں شامل ہیں:

1۔ 1995 میں اسلام اور ایران سے متعلق خصوصی لائبریری کا قیام اور انتظام [14]

2 کے سربراہ لائبریری، میوزیم اور اسلامی مشاورتی اسمبلی کے دستاویزی سینٹر ستمبر 2008 سے ایران کی [15] نومبر 17، 2012. کرنے کے لیے [16]

3۔ نومبر 2017 سے تہران یونیورسٹی کے مرکزی لائبریری اور دستاویزی مرکز کے سربراہ [2]

کتابیات[ترمیم]

جعفاریان ایک مصنف مصنف ہے اور تاریخ سائنس میں اس کے بہت سے کام ہیں۔ انہوں نے 1985 میں اسلام کی تاریخ کا تعارف کے عنوان سے ایک کتاب کے ساتھ لکھنا شروع کیا۔ [17] انہوں نے 90 سے زیادہ کتابیں تصنیف کیں ، جن میں سے کچھ بڑی تعداد میں ہیں۔ مثال کے طور پر ، ان کی تاریخی مضامین کے عنوان سے کتاب 20 جلدوں سے زیادہ شائع ہوچکی ہے۔ [18] جو چیز اس کے کام کی اہمیت کو دگنی دیتی ہے وہ اس کے قلم کا اثر ہے۔ ایک طرح سے ، ان کے کچھ کام علمی نصاب کے وسائل اور ایران میں تاریخ میں ماسٹر اور ڈاکٹریٹ کے وسائل میں سے ہیں۔ [19] ان کی تخلیقات کا ترجمہ دوسری زبانوں میں کیا گیا ہے جیسے انگریزی ، [20] عربی [21] [22] [23] اور اردو۔ [24] جعفریان کے کچھ کام یہ ہیں:

  • * اطلس شیعہ (کتاب) ( فارسی: اطلس شیعه‎ )
  • شیعہ ائمہ دانشور اور سیاسی زندگی ( فارسی: حیات فکری و سیاسی امامان شیعه‎ )
  • اسلام کی سیاسی تاریخ ( فارسی: تاریخ سیاسی اسلام‎ )
  • ایران میں مذہبی سیاسی دھاروں اور تنظیموں ( فارسی: جریان‌ها و سازمان‌های مذهبی سیاسی ایران‎ )
  • اسلامی ایران کی تاریخ ( فارسی: تاریخ ایران اسلامی‎ )
  • عاشورہ تحریک پر عکاسی ( فارسی: تأملی در نهضت عاشورا‎ )

الیکٹرانک ریسورس فائلوں کے استعمال سے متعلق قانون[ترمیم]

اگست 2020 میں ، رسول جعفاریان نے ایران میں الیکٹرانک وسائل کی فائلوں کے استعمال سے متعلق ایک قانون کی تجویز پیش کی۔ ایک نوٹ میں ، انہوں نے ایران کی وزارت ثقافت اور اسلامی رہنماidں کو وسائل کی الیکٹرانک فائلوں (کتابیں ، مضامین اور مقالات) کے استعمال کا بل پیش کیا تاکہ وہ حکومت اور پارلیمنٹ کو ڈیجیٹل کتابوں کی اشاعت کی طرف قدم اٹھانے کے لیے بھیجے۔ [25] [26]

مذید دیکھیں[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

 

  1. وی آئی اے ایف - آئی ڈی: https://viaf.org/viaf/26929880/ — اخذ شدہ بتاریخ: 25 مئی 2018 — مصنف: او سی ایل سی — ناشر: او سی ایل سی
  2. ^ ا ب "دکتر رسول جعفریان به ریاست کتابخانه مرکزی منصوب شدند" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  3. "یکصد و بیست و دومین جلسه مجمع عمومی فرهنگستان علوم برگزار شد _ انتخاب دکتر رسول جعفریان به عضویت پیوسته فرهنگستان علوم" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  4. "روزنامه اطلاعات_ انتخاب دکتر رسول جعفریان به عضویت پیوسته فرهنگستان علوم" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  5. "روزنامه اعتماد __ انديشه ديروز پاسخگوي ايران فردا نيست" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  6. ^ ا ب "استاد رسول جعفریان - تبیان" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  7. "اعضای پیوسته - فرهنگستان علوم" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  8. "اطلاعات شخصی - رسول جعفریان" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. [مردہ ربط]
  9. "پژوهش های تاریخ تشیع - رسول جعفریان - امامت پژوهی" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  10. "پنجاه سفرنامه حج قاجاری به روایت رسول جعفریان - خبرآنلاین" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  11. "برگزيدگان بيست و هفتمين دوره كتاب سال اعلام شدند _ ایبنا" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  12. "كاري كه به كاردان سپرده شد _ ایبنا" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  13. "مراسم تقدير از برگزيدگان مسابقه كتابخواني »تأملي در نهضت عاشورا« با حضور دكتر رسول جعفريان" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  14. "رزومه - رسول جعفریان" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  15. "رسول_ جعفریان رئیس کتابخانه مجلس شد - همشهری آنلاین" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  16. "رسول جعفریان استعفا داد - جهان نيوز" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  17. "رسول جعفریان؛ جستجوگر تشیع در تاریخ - وب سایت نشریه جستار" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  18. "کتابخانه تخصصی تاریخ اسلام و ایران" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  19. "منابع آزمون کارشناسی ارشد تاریخ _ ارشد تست" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  20. "تاریخ سیاسی اسلام جلد 2 (تاریخ خلفا)" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  21. "سيرة سيّد الأنبياء و المرسلين محمد صلی الله علیه و آله جامع المحامد کلّها _ کتابخانه مجازی الفبا" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  22. "سيرة سيد الانبياء و المرسلين محمد (ص) - کتابخانه تخصصی تاریخ اسلام و ایران" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  23. "ترجمه «اطلس شیعه» به درخواست آیت الله سیستانی" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  24. "ترجمه کتاب تاریخ سیاسی اسلام (سیره رسول خدا) تألیف استاد رسول جعفریان بزبان اردو _ کتابخانه مجازی الفبا" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  25. "پیشنهادی از رسول جعفریان _ قانون استفاده از فایل_های الکترونیکی منابع - همشهری آنلاین" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 
  26. "قانون استفاده از فایل_های الکترونیکی منابع_ نشر کتاب دیجیتالی - خبرگزاری مهر _ اخبار ایران و جهان _ Mehr News Agency" (بزبان فارسی). اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2021. 

بیرونی روابط[ترمیم]