رشمی بنسل

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

رشمی بنسل ایک بھارتی غیر افسانوی مصنفہ، کاروبار کی آغازکنندہ اور جواں سال ماہر خصوصی ہے۔ 2016ء تک وہ کاروباروں کے آغاز کرنے (entrepreneurship) پر سات کتابوں کی مصنفہ ہے۔[1][2] اس کی پہلی کتاب، اسٹے ہنگری اسٹے فولش (بھوکے رہ کر بیوقوف بنیے) 25 ایم بی اے کاروبار شروع کرنے والوں کی ترقی کے راز کو جانچتی ہے اور اس کی 500,000 نقول بھارت میں بک چکے ہیں، جو بھارت میں شائع کسی بھی کتاب کے لیے ایک ریکارڈ ہے۔[3]

سوانح[ترمیم]

بنسل نے ٹاٹا انسٹی ٹیوٹ آف فنڈمنٹل ریسرچ، جنوبی ممبئی میں پرورش پائی جہاں اس کے والد فلکیاتی طبیعیات دان (astrophysicist) تھے۔ کولابا کے سینٹ جوزفز ہائی اسکول میں تعلیم مکمل کر کے سوفیا کالج فار ویمین میں شریک ہوئی۔ وہ انڈین انسٹی ٹیوٹ آف مینیجمنٹ احمدآباد سے ایم بی اے میں فارغ التحصیل ہوئی۔[2]

آئی آئی ایم سے پڑھ کر نکلنے کے فوری بعد وہ ٹائمز آف انڈیا کی برانڈ مینیجر بنی۔ دی اِنڈی پِنڈنٹ کے لیے نوجوانوں کا صفحہ تیار کرنے کے بعد اپنے شوہر یتین بنسل کی مشارکت سے JAM (جسٹ انادر میگزین - نوجوانوں کے لیے ایک رسالہ) کی بنیاد رکھی۔[4][5]

آئی آئی ایم احمدآباد کے ایک پروفیسر راکیش بسنت نے سجھاؤ دیا کہ اسے اپنے تعلیمی ادارے سے کاروبار کا آغاز کرنے والے سابقہ طالب علموں پر ایک کتاب لکھنا چاہیے۔ اس ترغیب کے بعد وہ 2008ء میں Stay Hungry Stay Foolish (اسٹے ہنگری اسٹے فولش) لکھی۔ یہ کتاب اتنی کامیاب رہی کہ 100,000 نسخے شروع کے 10 مہینوں میں بک گئے۔ جلد ہی یہ ہندسہ 350,000 تک پہنچا۔ اس کی اگلی کتاب Connect the Dots (کنیکٹ دی ڈاٹس) ایم بی اے کی سند کے بنا کاروبار شروع کرنے والوں کی ترقی کا جائزہ لیتی ہے۔ یہ بھی ایک کامیاب کتاب کے طور پر ابھری۔ اس کی کتاب I Have a Dream (آئی ہیو اے ڈریم) 2011ء میں چھپی۔ یہ سماجی کاروبار شروع کرنے والوں (social entrepreneurs) پر مرکوز ہے۔ کتاب میں دلچسپ انگریزی اور ہندی کی آمیرش موجود ہے، جسے عرف عام میں ہنگلش کہا جاتا ہے، تاکہ اس کی شخصیات کی حقیقی تصویر منظر عام پر لائی جا سکے۔[2][4]

نیویارک ٹائمز کے ہیتھر ٹیمنز کو دیے گئے ایک انٹرویو میں بنسل نے وضاحت کی کہ وہ ہِنگلش کا استعمال کرنے کا فیصلہ کیا کیونکہ یہ عوامی آواز کی سیدھی نمائندگی کرتی ہے اور انہیں زیادہ عندالحقیقت بناتی ہے۔[4] اس کے بعد وہ مزید چار تیزی سے فروخت ہونے والی کتابیں لکھ چکی ہیں: Poor Little Rich Slum, Follow Every Rainbow, Take Me Home اور Arise Awake۔ یہ تمام کتابیں کاروبار شروع کرنے اور اس دوران کامیاب ہونے کے مشورے پر مبنی ہیں۔ وہ اکثر اپنے خیالات کو ان لوگوں کی مثالوں سے تقویت پہونچاتی ہیں جو ناقابل یقین منازل پار کر چکے ہیں۔[2]

مطبوعات[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Author Rashmi Bansal Biography, Books, Blog, Marriage, Husband, Daughter"۔ Youth Developers۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 November 2016۔ نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  2. ^ ا ب پ ت "Rashmi Bansal: An Author, Speaker and Entrepreneur!"۔ Yo! Success۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 November 2016۔ نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  3. Satyam Sarvaiya۔ "ASSIGNMENT COMMUNICATION SKILLS BOOK REVIEW ON: "STAY HUNGRY STAY FOOLISH""۔ Satyam Sarvaiya۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 March 2017۔ نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  4. ^ ا ب پ Timmons, Heather۔ "A Conversation With: Rashmi Bansal"۔ نیو یارک ٹائمز۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ نادرست |=مردہ ربط (معاونت); Italic or bold markup not allowed in: |publisher= (معاونت)
  5. "Digital capitalization, India, Mumbai, Bansal, 12/17/2008"۔ IFTFdate=26 December 2008۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 7 November 2016۔ نادرست |=مردہ ربط (معاونت)
  6. "God's Own Kitchen" by Rashmi Bansal, Westland