روزالین کارٹر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
روزالین کارٹر
(انگریزی میں: Rosalynn Carter)[1][2][3][4][5][6][7]  ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
 

مناصب
خاتون اول ریاست ہائے متحدہ (39 )   ویکی ڈیٹا پر (P39) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
برسر عہدہ
20 جنوری 1977  – 20 جنوری 1981 
بیٹی فورڈ 
نینسی ڈیوس ریگن 
معلومات شخصیت
پیدائشی نام (انگریزی میں: Eleanor Rosalynn Smith)[1][2][3][6]  ویکی ڈیٹا پر (P1477) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیدائش 18 اگست 1927ء[8][9][10][11][12][1][3]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پلینز، جارجیا[1][2][3][6][7]  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 19 نومبر 2023ء (96 سال)[13][14][15]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پلینز، جارجیا[16][1][6]  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ وفات خرف[17]  ویکی ڈیٹا پر (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت[18]  ویکی ڈیٹا پر (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت ریاستہائے متحدہ امریکا[2]  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب اصطباغی کلیسیا[19]  ویکی ڈیٹا پر (P140) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جماعت ڈیموکریٹک پارٹی  ویکی ڈیٹا پر (P102) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عارضہ خرف (2023–)[14]  ویکی ڈیٹا پر (P1050) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات جمی کارٹر (7 جولا‎ئی 1946–19 نومبر 2023)[20]  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد جیک کارٹر،  ایمی کارٹر،  جیمز ارل کارٹر سوم[21]،  جیف کارٹر[21]  ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
تعداد اولاد
عملی زندگی
مادر علمی جارجیا ساؤتھ ویسٹرن اسٹیٹ یونیورسٹی (–1946)[19]  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ سیاست دان،  حقوق نسوان کی کارکن،  آپ بیتی نگار،  مصنفہ[22]  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان انگریزی[5][2][7]  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شعبۂ عمل فعالیت پسندی[22]  ویکی ڈیٹا پر (P101) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
امریکی امن ایوارڈ (2009)
نیشنل ویمنز ہال آف فیم (2001)[23][19]
 صدارتی تمغا آزادی  (1999)[1][19]  ویکی ڈیٹا پر (P166) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
دستخط
 
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

ایلینور روزالین کارٹر (انگریزی: Eleanor Rosalynn Carter) ایک امریکی مصنف اور فعالیت پسند ہیں جنھوں نے 1977ء سے 1981ء تک صدر جمی کارٹر کی اہلیہ کے طور پر ریاستہائے متحدہ امریکا کی خاتون اول کے طور پر خدمات انجام دیں۔ کئی دہائیوں سے وہ دماغی صحت سمیت متعدد وجوہات کے لیے ایک سرکردہ وکیل رہی ہیں۔ روزالین کارٹر اپنے وائٹ ہاؤس کے سالوں کے دوران میں سیاسی طور پر سرگرم رہی، کابینہ کے اجلاسوں میں بیٹھیں۔ وہ اپنے شوہر کی قریبی مشیر تھیں۔ انھوں نے بیرون ملک خاص طور پر لاطینی امریکا میں بطور سفیر بھی خدمات انجام دیں۔ اپنے شوہر کی طرح روزالین کارٹر کو ہیبی ٹیٹ فار ہیومینٹی چیریٹی میں ایک اہم شخصیت سمجھا جاتا ہے۔

ابتدائی زندگی[ترمیم]

ایلینور روزالین سمتھ 18 اگست 1927ء کو پلینز، جارجیا میں پیدا ہوئیں۔ وہ ولبرن ایڈگر اسمتھ ایک آٹو مکینک، بس ڈرائیور اور کسان اور فرانسس ایلیتھ "ایلی" مرے اسمتھ ایک استاد، کپڑے بنانے والی اور پوسٹل ورکر کے چار بچوں میں سب سے بڑی تھیں۔ ان کے بھائی ولیم جیرولڈ "جیری" سمتھ (1929ء-2003ء) ایک انجینئر اور مرے لی اسمتھ (1932ء-2003ء) ایک استاد اور وزیر تھے۔ ان کی بہن للیان الیتھیا (اسمتھ) جسے الیتھیا کے نام سے جانا جاتا ہے، اس کا نام اس کی والدہ اور للیان گورڈی کارٹر (اسمتھ اور کارٹر کے خاندانوں کے دوست ہیں [24])، ایک رئیل اسٹیٹ بروکر ہے۔ روزالین کا نام ان کی نانی روزا وائز مرے کے نام پر رکھا گیا تھا۔ [25]

ایلینور روزالین سمتھ کے پر چچا ڈبلیو ایس وائز ان امریکی برازیلیوں میں سے ایک تھے جنہیں کنفیڈریڈوس کے نام سے جانا جاتا ہے جو خامریکی خانہ جنگی کے بعد امریکا سے برازیل ہجرت کر گئے تھے۔ [26]

ایلینور روزالین سمتھ کا خاندان غربت میں رہتا تھا، حالانکہ بعد میں اس نے دعویٰ کیا کہ وہ اور اس کے بہن بھائی لاعلم تھے، کیونکہ اگرچہ ان کے خاندان کے پاس "پیسے نہیں تھے"، نہ ہی "کسی اور کے پاس، جہاں تک ہم جانتے تھے، ہم ٹھیک تھے۔" [27] چرچ اور اسکول اس کے خاندان کی کمیونٹی کے مرکز میں تھے اور میدانی علاقے کے لوگ ایک دوسرے سے واقف تھے۔ [28] ایلینور روزالین سمتھ اپنے ابتدائی بچپن میں لڑکوں کے ساتھ کھیلتی تھی کیونکہ اس کی سڑک پر کوئی لڑکی اس کی عمر کی نہیں تھی۔ وہ عمارتیں بناتی تھی اور ہوائی جہازوں میں دلچسپی رکھتی تھی، جس کی وجہ سے اسے یقین تھا کہ وہ ایک دن معمار بن جائے گی۔ [29]

صحت اور وفات[ترمیم]

اپریل 1977 میں، کارٹر نے چھاتی کے غیر مہلک رسولی کو دور کرنے کے لیے سرجری کروائی۔ [30][31]

مئی 2023 میں، کارٹر سینٹر نے اعلان کیا کہ کارٹر کو ڈیمنشیا کی تشخیص ہوئی ہے۔ بیان میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ وہ اپنے شوہر کے ساتھ گھر پر رہتی ہیں - 17 نومبر 2023 کو، کارٹر ہاسپیس کیئر میں داخل ہوئیں۔ [32][33][34]وہ دو دن بعد جارجیا کے میدانی علاقے میں اپنے گھر میں قدرتی وجوہات کی بنا پر 96 سال کی عمر میں انتقال کر گئیں۔[35][36] سابق صدر کارٹر نے اپنی اہلیہ کی موت کے بعد کہا، "روزلین ہر کام میں میرے برابر کی شریک تھیں۔"[37]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب پ ت ٹ ث ج دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Rosalynn-Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  2. ^ ا ب پ ت ٹ ث ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w63g5cp0 — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023
  3. ^ ا ب پ ت ٹ کتب خانہ کانگریس اتھارٹی آئی ڈی: https://id.loc.gov/authorities/n77009358 — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023 — مصنف: کتب خانہ کانگریس
  4. ^ ا ب U.S. National Archives Identifier: https://catalog.archives.gov/id/10581867 — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023
  5. ^ ا ب پ ایس یو ڈی او سی اتھارٹیز: https://www.idref.fr/144290243 — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023 — عنوان : Identifiants et Référentiels
  6. ^ ا ب پ ت ٹ جی این ڈی آئی ڈی: https://d-nb.info/gnd/12394063X — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023 — اجازت نامہ: CC0
  7. ^ ا ب پ ت بی این ایف - آئی ڈی: https://catalogue.bnf.fr/ark:/12148/cb165393908 — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023 — مصنف: فرانس کا قومی کتب خانہ — عنوان : اوپن ڈیٹا پلیٹ فارم — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  8. Rosalynn Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 19 نومبر 2023
  9. ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w6p67qxj — بنام: Rosalynn Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  10. Rosalynn Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 19 نومبر 2023
  11. GeneaStar person ID: https://www.geneastar.org/genealogie/?refcelebrite=smithe — بنام: Rosalynn Carter
  12. Munzinger person ID: https://www.munzinger.de/search/go/document.jsp?id=00000014904 — بنام: Rosalynn Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  13. Πέθανε η πρώην Πρώτη Κυρία, Ρόζαλιν Κάρτερ — اخذ شدہ بتاریخ: 19 نومبر 2023 — شائع شدہ از: 19 نومبر 2023
  14. ^ ا ب Der Spiegel — اخذ شدہ بتاریخ: 19 نومبر 2023 — شائع شدہ از: 19 نومبر 2023
  15. دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Rosalynn-Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  16. Former First Lady Rosalynn Carter Passes Away at Age 96 — اخذ شدہ بتاریخ: 19 نومبر 2023 — شائع شدہ از: 19 نومبر 2023
  17. Mor l'exprimera dama dels Estats Units, Rosalynn Carter, als 96 anys — شائع شدہ از: 20 نومبر 2023
  18. https://www.elnacional.cat/ca/internacional/mor-exprimera-dama-estats-units-rosalynn-carter-96-anys_1125257_102.html
  19. ^ ا ب پ The Carters: Rosalynn Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023
  20. پیرایج پرسن آئی ڈی: https://wikidata-externalid-url.toolforge.org/?p=4638&url_prefix=https://www.thepeerage.com/&id=p32307.htm#i323062 — اخذ شدہ بتاریخ: 7 اگست 2020
  21. مصنف: ڈئریل راجر لنڈی — خالق: ڈئریل راجر لنڈی
  22. ^ ا ب این کے سی آر - اے یو ٹی شناخت کنندہ: https://aleph.nkp.cz/F/?func=find-c&local_base=aut&ccl_term=ica=xx0153302 — اخذ شدہ بتاریخ: 5 دسمبر 2023
  23. Eleanor Rosalynn Smith Carter — اخذ شدہ بتاریخ: 20 نومبر 2023
  24. Carter, Rosalynn (1984)، p. 3.
  25. IN BRAZIL, A TOUCH OF JOHNNY REB اخذکردہ بتاریخ مئی 17, 2019
  26. Carter, Rosalynn (1984)، p. 12.
  27. Rosalynn Carter (6 مئی، 2010)۔ "Rosalynn Carter: Solving the Mental Crisis for Our Children"۔ Huffington Post 
  28. "Where I'm From"۔ Atlanta۔ فروری 1, 2012۔ اپریل 21, 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ 
  29. "Mrs. Carter says she 'feels fine'"۔ Chicago Tribune۔ April 30, 1977۔ April 23, 2017 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 12, 2017 
  30. "New Attitudes Ushered In by Betty Ford"۔ The New York Times۔ October 17, 1987۔ November 13, 2017 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ December 29, 2017 
  31. "Carter Family Statement about Health of First Lady Rosalynn Carter"۔ Carter Center۔ May 30, 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ May 30, 2023 
  32. "Former first lady Rosalynn Carter has dementia, Carter Center says"۔ CNN۔ May 30, 2023۔ May 30, 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ May 30, 2023 
  33. "Rosalynn Carter, wife of Jimmy Carter, joins husband in hospice care"۔ The Guardian۔ November 17, 2023۔ November 17, 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 18, 2023 
  34. "Rosalynn Carter, former first lady and tireless humanitarian who advocated for mental health issues, dies at 96"۔ NBC News۔ November 19, 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 19, 2023 
  35. "Rosalynn Carter, former first lady, dies at age 96"۔ CBS News۔ November 19, 2023۔ November 20, 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ November 19, 2023 
  36. Aliza Chazan (Nov 19, 2023)۔ "Tributes for Rosalynn Carter pour in from Washington, D.C., and around the country"۔ CBS۔ Colombia Broadcasting۔ اخذ شدہ بتاریخ 22 نومبر 2023