زاہدہ خاتون شیروانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
زاہدہ خاتون شیروانی
ز خ ش
معلومات شخصیت
پیدائش 18 دسمبر 1894ء
بھیکم پور، علی گڑھ، ہندوستان
وفات 2 فروری 1922ء
(27 سال)
بھیکم پور، علی گڑھ، ہندوستان
قومیت ہندوستانی
عملی زندگی
پیشہ شاعرہ  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان اردو  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ شہرت شاعری،حقوق نسواں
کارہائے نمایاں ینگ شیروانی لیگ

زاہدہ خاتون شیروانی (18 دسمبر 1894ء2 فروری 1922ء) اردو زبان کی ایک شاعرہ اور لکھاری اور حقوق نسواں کی ایک علمبردار بھی تھیں۔ وہ اپنا قلمی نام ز خ شین رکھتی تھیں۔ اس کی وجہ یہ تھی کہ اس دور کے مسلم خاندان میں عورتوں کی شاعری کو برا سمجھا جانا تھا۔ وہ ایک امیر خاندان شیروانی کی فرد تھیں۔ نسوانی احساس کی حامل ان کی غزلیں جوانوں میں بہت مقبول تھیں۔

وفات[ترمیم]

زاہدہ خاتون کا انتقال 27 سال کی عمر میں 2 فروری 1922ء کو بھیکم پور میں ہوا۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. مالک رام: تذکرہ ماہ و سال، صفحہ 178، مطبوعہ دہلی 2011ء