ساحر لکھنوی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search


ساحر لکھنوی
معلومات شخصیت
پیدائش 6 ستمبر 1931(1931-09-06)
کراچی  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات نومبر 25، 2019(2019-11-25) (عمر  88 سال)
کراچی  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
قومیت برطانوی ہند
پاکستان
عملی زندگی
مادر علمی ديال سنگھ کالج، لاہور  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ شاعر  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ شہرت مرثیہ
کارہائے نمایاں بیس کتابیں جن میں تین مراثیوں کے مجموعے شامل ہیں

ساحر لکھنوی جن کا حقیقی نام سید قائم مہدی نقوی تھا، پاکستان کے معروف مرثیہ نگار اور قصیدہ گو شاعر تھے۔

پیدائش[ترمیم]

ساحر 6 ستمبر 1931ء کو کراچی میں پیدا ہوئے جہاں ان کا خاندان عارضی طور پر مقیم تھا۔[1]


تعلیم[ترمیم]

وہ ایم اے، ایل ایل بی اور ڈی آئی ایل ایل کی ڈگریوں کے حامل تھے۔[1]

کام[ترمیم]

ساحرؔ لکھنوی ایک بین الاقوامی صنعتی ادارے میں پرسنل اینڈ ایڈمنسٹریشن ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ کی حیثیت سے 1993 تک مصروف کار رہے۔[2]

خاندان[ترمیم]

ان کے چار بیٹیاں اور ایک بیٹا تھا۔[1]

نگارشات[ترمیم]

ساحر کی 20 کتابیں لکھی جا چکی ہیں جن میں مرثیوں کے تین مجموعے تھے: آیات درد، احساس غم، متاع غم۔ ان کا ایک قصیدوں کا مجموعہ بھی تھا۔[1]

انتقال[ترمیم]

ساحر 25 نومبر 2019ء کو انتقال کر گئے تھے۔[1]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]