سلفیورک ایسڈ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
سلفیورک ایسڈ
اسم نظامی

sulfuric acid

دیگر نام Sulphuric acid
Hydrogen sulfate
Oil of vitriol
شناختساز
کاس عدد

[7664-93-9]

ریٹکس عدد

WS5600000

خـواص
سالماتی_صیغہ

H2SO4

مولرکمیت

98.078 g/mol

ظہور clear, colorless,
odorless liquid
کثافت

1.84 g cm−3, liquid

نقطۂ_پگھلاؤ

10 °C, 283 K, 50 °F

نقطۂ ابال

290 °C, 563 K, 554 °F (bp of pure acid. 98% solution boils at 338 °C)

حل پذیری

پانی میں

fully miscible
(exothermic)

لزوجیت

26.7 cP at 20 °C

خـطرات
یورپی_اتحاد جماعت_بندی

Highly Corrosive (C)

NFPA 704
NFPA 704.svg
0
3
2
COR
جملۂ اختطار

R35

جملۂ سلامتی

(S1/2), S26, سانچہ:S30, S45

نقطۂ شرار

Non-flammable

وابستہ مرکبات
Related strong acids Hydrochloric acid
نائٹرک ایسڈ
Hydroiodic acid
Hydrobromic acid
وابستہ مرکبات Hydrogen sulfide
Sulfurous acid
Peroxymonosulfuric acid
Sulfur trioxide
Oleum
ماسواۓ کسی خصوصی بیان کے، تمام مادی معطیات
معیاری درجہ حرات و دباؤ یعنی 25°C, 100 kPa
پر دیۓ گۓ ہیں۔
لاتعلقیتِ معلوماتی خانہ و حوالہ جات

سلفیورک ایسڈ ایک تیزاب ہے۔ اور دنیا کا سب سے طاقتور تیزآب ہے۔اسے گندھک کا تیزاب بھی کہا جاتا ہے۔اسے تمام کیمیائی مادوں کا بادشاہ کہا جاتا ہے۔

بنانے کا طریقہ[ترمیم]

کاپر سلفیٹ ایک نیلے رنگ کا مرکب ہوتا ہے جو کسی بھی آن لائن سائٹ پر دستیاب ہے۔ یہ عام بازاروں میں مل سکتا ہے اور باغبانی کے لیے استعمال ہوتا ہے اور زراعت میں بھی استعمال ہوتا ہے۔ سلفیورک ایسڈ مندرجہ ذیل طریقہ سے بنتا ہے:
1۔ کاپر سلفیٹ کے محلول کو ایک برتن میں لیا جاتا ہے۔
2۔ اس برتن میں دو الیکٹروڈ ڈالے جاتے ہے: کاربن برقیرہ (الیکٹروڈ) (+) اور تانبے کا برقیرہ (الیکٹروڈ) (-)۔
3۔ ان برقیروں کو بجلی کے کسی ذریعے کے ساتھ ملایا جاتا ہے تاکہ الیکٹرولسس ہو جائے ۔ یہ انتظام اسی طرح ایک گھنٹے کے لیے رکھا جاتا ہے یا تب تک جب تک کاپر سلفیٹ کی نیلاہٹ ختم نہ ہو جائے (یعنی روشنی اس میں سے گزر سکے)۔

نتیجہ:[ترمیم]

ایک گھنٹے کے بعد سلفیورک ایسڈ بنتا ہے۔
اینوڈ پر: او ایج نگیٹو← او ٹو

کیتھوڈ پر: کاپر ڈبل پازیٹو+ برقیہ ← کاپر
یہ کاپر کیتھوڈ پر ایک پرت بناتا ہے۔ اسی لیے کیتھوڈ کاپر کا ہی بنایا جاتا ہے۔ اینوڈ بہت جلد خراب ہوتا ہے ، جس لیے پلاٹینم استعمال کیا جاتا ہے۔ لیکن پلاٹینم مہنگا ہوتا ہے ۔ اس لیے کاربن یعنی گریفائٹ استعمال کیا جاتا ہے ، لیکن الیکٹرولسس کے دوران یہ گھل جاتا ہے ، جس وجہ سے ایک دو دفعہ فلٹریشن کرنی پڑتی ہے تاکہ بننے والا سلفیورک ایسڈ کاربن سے صاف ہو۔ محلول میں ہائیڈروجن پازیٹو اور سلفیٹ آئن بچ جاتے ہیں جو سلفیورک ایسڈ بناتے ہے۔[1]

مزید دیکھیے[ترمیم]

نائٹرک ایسڈ

حوالہ جات[ترمیم]