سیلیکان

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
(سلیکان سے رجوع مکرر)
سیلیکان

سیلیکان یا سیلیکون (silicon) ایک عنصر ہے جس کی کیمیائی علامت ہے۔ عناصر کے دوری جدول میں اس کا چودواں عدد ہے اور اس حوالے سے اس کا جوہری عدد 14 ہے۔ سیلیکان کائنات میں سب سے زیادہ پائے جانے والا آٹھواں عنصر ہے۔ یہ مختلف سیاروں میں ریت، ذرات اور آکسائیڈز کی صورت میں ملتا ہے۔ زمین کی سطح کا 90% سیلیکان کی معدنی شکلوں سے ملکر بنا ہے۔ اس وجہ سے یہ آکسیجن (oxygen) کے بعد زمین پر سب سے زیادہ پائے جانے والا عنصر ہے۔

خصوصیات

سیلیکان ایک دھات کی طرح لگتا ہے، لیکن وہ کچھ نہیں کر سکتا جو دھات کر سکتا ہے، جیسے بجلی کو اچھی طرح سے چلانا۔ سیلیکان آج کے شمارندے (computers) اور تقریبا ہر دوسرے برقیاتی اختراع میں بھی بہت زیادہ استعمال ہوتا ہے۔ آلمانصر (germanium) کو شمارندے میں بھی استعمال کیا جا سکتا ہے، لیکن سیلیکان کو تلاش کرنا بہت آسان ہے۔

مثال کے طور پر ساحل سمندر پر پائی جانے والی تمام ریت سلیکان ڈائی آکسائڈ (silicon dioxide) کے چھوٹے مکاعب سے بنی ہے جسے چقمہ (silica) کہا جاتا ہے۔ شیشے کو ریت کو اتنا گرم کرکے بنایا جاتا ہے جب تک کہ یہ پگھل نہ جائے۔ سیلیکان سے بنے شیشے کو رنگین مرکبات شامل کرکے مختلف رنگوں میں بنایا جا سکتا ہے۔ بہت سے چٹانیں اور معدنیات سیلیکان اور آکسیجن (oxygen) کے مرکبات پر مشتمل ہیں جنہیں چقمید (silicates) کہتے ہیں۔

شمارندے میں سیلیکان

سیلیکان ایک نیم موصل (semiconductor) ہے، اور شمارندے میں زیادہ استعمال ہوتا ہے۔ سیلیکان کا ایک انتہائی خالص ہمجاء (isotope)، سیلیکان-28، اب پہلے سے 40 گنا زیادہ خالص بنایا جاتا ہے۔ شمارندے میں اگلی بڑی ترقی کے لیے یہ بہت اہم ہے۔ یہ ایک دوسرے عناصر کے جواہر (atoms) میں مقنوالے (qubits) کو ذخیرہ کرتا ہے، جیسے فاسفورس (phosphorus)، انتہائی خالص سیلیکان-28 کی ایک چھوٹی سی پرت میں سرایت کرتا ہے۔ یہ مقنوالے ناقابل یقین حد تک تیز اور پیچیدہ حسابات کے لیے بیک وقت ایک اور صفر کو ترمیز (encode) کر سکتے ہیں۔

مزید دیکھیے

حوالہ جات