سویتا بہن

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
سویتا بہن
معلومات شخصیت
پیدائش 23 جنوری 1919[1]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ضلع جہلم  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 10 مارچ 2009 (90 سال)[2][1]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ہندوستان  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of India.svg ہندوستان (26 جنوری 1950–)
British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند (–14 اگست 1947)
Flag of India.svg ڈومنین بھارت (15 اگست 1947–26 جنوری 1950)  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مادر علمی گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہور  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان ہندی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
Padma Shri Ribbon.svg پدما شری اعزار برائے سماجیات  ویکی ڈیٹا پر (P166) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

سویتا بہن (1919ء-2009ء) ایک ہندوستانی سیاست دان، سماجی کارکن، ماہر تعلیم اور راجیہ سبھا کی سابق رکن تھی، جو دو ایوانوں والی ہندوستانی پارلیمان کا ایوان بالا ہے۔ [3][4] وہ خواتین کو بااختیار بنانے اور صنفی مساوات کی حامی کے طور پر جانی جاتی تھیں [5] اور 1990ء میں کونسل فار پیریٹی ڈیموکریسی کی طرف سے دنیا کی 3300 ممتاز زندہ خواتین میں شامل کیا گیا تھا [6] انہیں حکومت ہند نے 1971ء میں پدم شری سے نوازا تھا، جو بھارت کا چوتھا سب سے بڑا شہری اعزاز ہے۔ [7]

سوانح[ترمیم]

سویتا بہن کی پیدائش 23 جنوری 1919ء [6] کو روہتاس ضلع جہلم میں سابق برطانوی ہندوستان میں ہوئی، جو اس وقت پاکستان میں ہے۔ [8] انھوں نے اپنی کالج کی تعلیم گورنمنٹ کالج لاہور اور پی ایل کالج شملہ سے حاصل کی۔ [3] چھوٹی عمر میں ہی ہندوستانی جدوجہد آزادی میں شامل ہونے کے بعد وہ سماجی کاموں میں سرگرم ہوگئیں۔ انھوں نے 1944ء میں ویمن سیویکا دل کی بنیاد رکھی اور بعد میں، دہلی میں خواتین کے لیے ہریجن ایڈلٹ ایجوکیشن سینٹر اور ٹیلرنگ اور صنعتی مراکز قائم کیے۔ [3] انھوں نے ہریجن اور دلت بچوں کے لیے تین اسکول بھی قائم کیے تھے۔ [3][8]

سویتا بہن پناہ گزین بیوہ تحفظ کمیٹی کی چیئرمین تھیں اور پناہ گزین خواتین کے لیے دو صنعتی اور تعلیمی مراکز کے قیام میں ان کا اہم کردار تھا۔ [3] [8] وہ آل انڈیا ویمن کونسل، دہلی کی خواتین کی بہبود ایسوسی ایشن اور سپر بازار کوآپریٹو اسٹورز لمیٹڈ، نئی دہلی کی صدارت پر فائز رہیں اور دہلی میونسپل کمیٹی کی پہلی خاتون نائب صدر تھیں، [3] اس عہدے پر وہ 1956ء سے 1957 ء تک رہیں۔ [3][8] انہوں نے 1962 ءسے 1966ء تک پنجاب لیجسلیٹو کونسل، پنجاب قانون ساز اسمبلی کی پیشرو خدمات انجام دیں۔ [3][8] وہ 1972ء میں بھارتی پارلیمان کے ایوان بالا راجیہ سبھا کے لیے منتخب ہوئیں، دہلی کی نمائندگی کرتی تھیں اور 1978ء تک ایوان کی خدمت کرتی رہیں۔ [3][8] وہ بھارتی پارلیمان کی مشترکہ کمیٹی کے 15 نامزد ارکان میں سے ایک تھیں جن کو بھارتی پارلیمان نے سینٹرل کونسل آف ہومیوپیتھی کے قیام کے لیے قائم کیا تھا۔ [9]

سویتا بہن آندھرا پردیش کے علاقے ورنگل کے لیے برہما کماریس ورلڈ اسپرچوئل یونیورسٹی کی راجیوگا ایجوکیشن اینڈ ریسرچ فاؤنڈیشن کے بزنس اینڈ انڈسٹری ونگ کی زونل کوآرڈینیٹر تھیں۔ [10][11] انہیں حکومت ہند نے 1971ء میں پدم شری کے شہری اعزاز سے نوازا تھا۔ کونسل فار پیریٹی ڈیموکریسی نے انہیں 1990ء میں 3300 ممتاز زندہ خواتین میں شامل کیا [6] ان کا انتقال 10 مارچ 2009 ءکو 90 سال کی عمر میں ہوا۔ [3] [8]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب Minutes of the meeting
  2. Synopsis of Debate
  3. ^ ا ب پ ت ٹ ث ج چ ح خ "Synopsis of Debate" (PDF). Rajya Sabha – Government of India. 4 جون 2009. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015. 
  4. "Gujarat Elections: Tired of Congress and BJP, Dalits seek to shift narrative to development, rise above caste politics – Firstpost". www.firstpost.com. اخذ شدہ بتاریخ 01 جون 2018. 
  5. "Rajya Sabha (Council of States of Indian Parliament) and Women's Empowerment". Commonwealth Parliament Association. 2015. 30 مئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015. 
  6. ^ ا ب پ "Council for Parity Democracy". Council for Parity Democracy. 26 جولائی 1990. 30 مئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015. 
  7. "Padma Shri" (PDF). Padma Shri. 2015. اخذ شدہ بتاریخ 11 نومبر 2014. 
  8. ^ ا ب پ ت ٹ ث ج "Minutes of the meeting" (PDF). Rajya Sabha. 4 اپریل 2009. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015. 
  9. "Central Council of Homoeopathy". Joint Committee of Indian Parliament. 3 اپریل 1972. 14 اگست 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015. 
  10. "Business & Industry wing". Business & Industry wing. 2015. 30 مئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015. 
  11. "Rajyoga Education and Research Foundation of the Brahma Kumaris". Rajyoga Education and Research Foundation. 2015. 01 مئی 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 مئی 2015.