سکوپ کا مواخذہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ٹینسی بمقابلہ سکوپ
Arthur Garfield Hays reading the scientists’ testimony into the record, Scopes trial, Dayton, Tennessee, July 20, 1925..jpg
عدالت ٹیسنی کی فوجداری قوانین کی عدالت
مقدمے کا مکمل نام ریاست ٹینسی بمقابلہ۔ جون تھامس سکوپ
تاریخ فیصلہ جولائی 21, 1925
حوالہ جات کوئی نہیں
کیس ہسٹری
نتیجہ سکوپ کا مواخذہ
عدالتی اراکین
سماعت کرنے والے جج John T. Raulston

سکوپ کا مواخذہ (انگریزی: Monkey Trial) ایک مشہور امریکی عدالتی مواخذہ تھا (جو مونکی ٹرائل بھی کہلایا ) اس میں امریکی ریاست ٹنیسی کے ہائی اس کو ل استاد جان ٹی سکوپ کو چارلس ڈارون کے نظریہ ارتقا پڑھانے پر سزا دی گئی جس کی وجہ ملکی قانون کی خلاف ورزی اور اس نظریہ کا بائبل انسانی تخلیق سے متعلق تعلیمات کا خلاف ہونا تھا۔ مارچ 1925 میں اس ریاست کے قانون دانوں نے یہ فیصلہ کیا تھا کہ بائبل سے متصادم کوئی بھی قانون پڑھانے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ اس مواخذے پر ساری دنیا کی توجہ سامنے آئی اور لبرل اور قدامت پرستوں میں اس حوالے سے کافی بحث ہوئی۔ جج نے آئین کی اس شق کی اصلیت کو تجربات سے جانچے جانے کو دیکھے جانے کی بجائے اس بات پر فیصلہ دیا کہ آیا استاد نے یہ نظریہ پڑھایا یا نہیں چونکہ انھوں نے ایسا کیا تھا لہذا انھیں اس وجہ سے 100 ڈالر جرمانہ کیا گیا۔ سکوپ نے پھر اعلیٰ عدالت میں جاکر زائد جرمانے کی شکایت کی جس پر اس عدالت نے قانون کو تو برقرار رکھا لیکن سکوپ کو دی گئی سزا کو بھی ناجائز قرار دیا۔1967 میں اس قانون کو ختم کر دیا گیا۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

کتابیات[ترمیم]

  • L. Sprague de Camp، The Great Monkey Trial، Doubleday، آئی ایس بی این 0-385-04625-1
  • Constance Areson Clark، "Evolution for John Doe: Pictures, The Public, and the Scopes Trial Debate"، Journal of American History (4): 1275–1303، ISSN 0021-8723، جے سٹور 2674729
  • Paul K. Conkin، When All the Gods Trembled: Darwinism, Scopes, and American Intellectuals، صفحات 185 pp.، آئی ایس بی این 0-8476-9063-6
  • Mark Edwards، "Rethinking the Failure of Fundamentalist Political Antievolutionism after 1925"، Fides et Historia (2): 89–106، ISSN 0884-5379، پی ایم آئی ڈی 17120377
  • Burton W.، Jr. Folsom، "The Scopes Trial Reconsidered"، Continuity (12): 103–127، ISSN 0277-1446
  • Willard B.، Jr.، ed. Gatewood (ویکی نویس.)، Controversy in the Twenties: Fundamentalism, Modernism, & Evolution
  • Susan Harding، "Representing Fundamentalism: The Problem of the Repugnant Cultural Other"، Social Research (2): 373–393
  • Edward J. Larson، Summer for the Gods: The Scopes Trial and America's Continuing Debate Over Science and Religion، BasicBooks، آئی ایس بی این 0-465-07509-6
  • Edward J. Larson، Evolution، Modern Library، آئی ایس بی این 0-679-64288-9
  • Michael Lienesch، In the Beginning: Fundamentalism, the Scopes Trial, and the Making of the Antievolution Movement، University of North Carolina Press، صفحات 350pp، آئی ایس بی این 0-8078-3096-8
  • Samuel Pyeatt Menefee، "Reaping the Whirlwind: A Scopes Trial Bibliography"، Regent University Law Review (2): 571–595
  • Jeffrey P. Moran، The Scopes Trial: A Brief History with Documents، Bedford/St. Martin's، صفحات 240pp، آئی ایس بی این 0-312-24919-5
  • Shapiro, Adam R. Trying Biology: The Scopes Trial, Textbooks, and the Antievolution Movement in American Schools (2013) excerpt and text search
  • Kary Doyle Smout، The Creation/Evolution Controversy: A Battle for Cultural Power، صفحات 210 pp، آئی ایس بی این 0-275-96262-8
  • John T. Scopes؛ James Presley، Center of the Storm: Memoirs of John T. Scopes، Henry Holt & Company، آئی ایس بی این 0-03-060340-4
  • Jerry R. Tompkins، D-Days at Dayton: Reflections on the Scopes Trial، Louisiana State University Press، او سی ایل سی 411836
  • Grabiner, J.V. & Miller, P.D.، Effects of the Scopes Trial, Science، New Series, Vol. 185, No. 4154 (ستمبر 6, 1974)، pp. 832–837
  • George Gaylord Simpson, Evolution and Education, Science 07 Feb 1975: Vol. 187, Issue 4175, pp. 389
  • Ronald P. Ladouceur, Ella Thea Smith and the Lost History of American High School Biology Textbooks, Journal of the History of Biology، Vol. 41, No. 3, 2008, pp. 435–471

مزید پڑھیے[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]

Original materials from and news coverage of the trial: