سید جواد نقوی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
سید جواد نقوی
Syed Jawad Naqvi.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1952 (عمر 67–68 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ہری پور  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب اسلام
فرقہ اہل تشیع
فقہی مسلک جعفری
عملی زندگی
مادر علمی حوزہ علمیہ قم  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
P islam.svg باب اسلام

سید جواد نقوی پاکستانی اصولی شیعہ عالم دین ہیں۔ وہ ۱۹۵۲ء میں ہری پور خیبر پختونخوا، پاکستان میں پیدا ہوئے۔

نقوی کی ایک خصوصیت یہ ہے کہ وہ اسلامِ ناب یا شیعہ نقطۂ نظر سے خالص اسلام کو منفرد انداز میں فروغ دیتے ہیں۔ اس میں کچھ روایتی شیعہ مسلمان علماء کے طریقوں سے انحراف کرتے ہیں جو سنی اسلام کے عقائد سے متصادم ہوتے ہیں اور مکالموں سے بھرے خطبے دیتے ہیں۔[1] وہ جدید دور میں اسلام پر عمل کرنے پر توجہ دیتے ہیں، نہ کہ ماضی کی یاد تازہ کرنے پر۔ نقوی ایک ماہنامہ رسالے، مشربِ ناب، کے بانی ہیں۔[2] ان کے خطابات اور تقاریر[3] انہیں دیگر مسلمان اردو علما سے ممتاز کرتے ہیں۔ وہ ایرانی انقلاب کے سخت حامی ہیں۔ وہ اپنی کئی تقاریر میں ولایت فقيہ کو منفرد انداز میں فروغ دیتے ہیں۔ ~~*بسم اللہ الرحمٰن الرحیم*~~

  • استاد محترم آقا سید جواد نقوی صاحب کے دس سالہ ملی مذہبی بے نظیر خدمات و اعزازات کا مختصر اور اجمالی جائزہ*
  • 🌳 شجرہ طیبہ 🌲 کی چند سر سبز و شاداب شاخیں*

1 ۔ 🔮 ۔ " *مسجد بیت العتیق* "

 4 ہزار مربع میٹر اور 40 ہزار سے زیادہ افراد کی گنجائش پر برصغیر کی سب سے بڑی شیعہ مسجد ۔

2 ۔ 🔮 ۔ *حوزہ علمیہ العروة الوثقی* پاکستان میں اہل تشیع کا سب سے بڑا علمی مرکز جس میں دو ہزار کے لگ بھگ طلبہ تعلیم حاصل کر سکتے ہیں اور اس وقت 1300 طلبہ اسلام ناب محمدی کی تعلیمات سے روشناس ہو رہے ہیں۔

نیز حوزہ علمیہ العروة الوثقی سے ملحقہ دینی مدارس اور مراکز کی بڑھتی ہوئی تعداد تیس تک پہنچ چکی ہے جن میں سے کچھ درج ذیل ہیں : 
  الف 💎 ۔ خواتین کی تعلیم و تربیت کے لیے ملکی سطح کا سب سے بڑا " *حوزہ علمیہ ام الکتاب*" جس میں 3 ہزار کے قریب طالبات فریضہ تعلیم حاصل کر سکتی ہیں اور فی الحال ایک ہزار تک طالبات زیر تعلیم ہیں۔
  ب💎 ۔ قائد فقید کی گرانبہا  میراث " *جامعہ جعفریہ* " گوجرانوالہ کی تعمیر نو ، توسیع و ارتقاء ۔
    ج💎 ۔ *جامعه علمیہ حجت* ، علی پور۔
     د💎 ۔ *جامعہ علمیہ امام صادق ع* بمقام کرڑ خوشاب۔
      ه 💎 *جامعہ بحرالعلوم* ۔ 
    
      و 💎 *جامعہ امام علی نقی علیہ السلام* 
      ی 💎 *جامعہ حجتیہ*  گلگت۔

3 🔮۔ تشیع کا ملکی و ملی سب سے بڑا " *کتاب المبین کتابخانہ* کا قیام ۔

4 🔮 ۔  مجازی حوزہ علمیہ " *جامعة الدین القیم* " ۔
    

5🔮 جامعہ العروۃ الوثقیٰ اور ملحقہ دینی مدارس میں پاکستان کے بزرگ علماء کی دیرینہ خواہش کو عملی جامہ پہنایا گیا ہے اور *مضبوط علمی و تحقیقی حوزوی نصاب تعیین اور تعمیل* کیا گیا ہے جسے تمام بزرگان نے سراہا ہے۔

6 🔮۔ عصری علوم کا " *صراط* " تعلیمی نظام ۔ 

7 🔮۔ *امت مصطفی ص کی بیداری اور قیام* کی نہضت و تحریک ۔

8🔮 ایم آئی6 کے تازہ حملوں اخباریت ، غلو اور تفویض وغیرہ کے جواب میں بھرپور رد عمل اور *"تحریک تحفظ تشیع پاکستان"* کا قیام۔

9 🔮۔ علمی و فکری ملکی و بین الاقوامی مجلات ماہانہ " *مشرب ناب* " ، ششماہی مجلہ " *العروة الوثقی* " اور مجلہ طلاب " *صبح صادق* " ۔
10 🔮۔ " *بعثت* " تعلیمی و نیوز ٹی وی ۔

11 🔮 17 ربیع الاول کو علمی و تحقیقی *سالانہ وحدت کانفرنسوں* اور 12 ربیع الاول کو " *وحدت ریلی* " کا انعقاد۔

12 🔮۔ ہر سال حوزہ علمیہ العروة الوثقی میں سینکڑوں بلکہ ہزار کے لگ بھگ نوجوانوں اور جوانوں کی سالانہ دو اور ملک بھر میں سینکڑوں تربیتی فکری " *مطلع الفجر* " کارگاہیں ۔

13 🔮 ۔ " *مفازة الحیاة* " ہسپتال ۔

14 🔮 امام خمینی اور علامہ اقبال کی *خالص اور انقلابی افکار کا احیاء*

15 🔮 کتب ، مجلات اور دیگر تبلیغی آثار کی نشر و اشاعت کے لیے *متاب پںلیکیشنز*۔

16 🔮 ۔ ملک بھر کے خواص و عوام کی *علمی ، فکری ، انقلابی اور نظریاتی مرجعیت* ۔

17 🔮۔ *عبادی و سیاسی فریضہ جمعہ* کا احیاء ۔

18 🔮۔ *ہفت روزہ اخبار احیائے جمعہ* میں خطبات جمعہ کے ذریعے پیغام بیداری و مقاومت۔

19 🔮۔ نوجوانوں اور جوانوں کیلیے ہفتہ وار *مطلع الفجر* کلاسیں۔

20 🔮 ملک بھر میں " *المصطفی اسکاؤٹس*" کا با برکت قیام۔

21 🔮 حوزہ اور یونیورسٹی کے درمیان ارتباط اور وحدت کے لئے کوشاں۔

22 🔮۔ علمی ، دینی ، اجتماعی ، سیاسی اور سماجی موضوعات پر سینکڑوں بلکہ *ہزاروں دروس اور تقاریر صوتی ، تصویری اور متنی صورت میں* قوم و ملت کے استفادے کے لیے موجود ۔

23🔮۔ دس سے زیادہ مختلف ویب سائٹس کی فعالیت ۔
24🔮۔ پاکستان ، کشمیر ، ایران اور  ہندوستان میں *بین الاقوامی دینی تربیتی کارگاہیں ۔* 

25 🔮۔ *آئمہ جمعہ و جماعات* کے ساتھ علمی فکری نشستیں ۔

26🔮 حوزہ علمیہ العروۃ الوثقیٰ کے سینکڑوں طلباء کا محرم و رمضان میں *اسلام ناب محمدی کی ہدف مند اور جہت دار تبلیغ و ترویج* ۔

27🔮۔ ثقافتی و حوزوی ضرورت کے تحت " *کہف الصحف* " پرنٹنگ پریس کا قیام ۔ 

28 🔮۔ ابھی تک مختلف موضوعات پر ساٹھ سے زیادہ *اقدار عاشوراء ، کربلا اتمام حجت ، حسین وارث انبیاء ، شناخت قرآن ، آداب فہم قرآن ، وحدت امت ایک تاریخی مطالبہ ، دشمن شناسی ، آفات امت ، سنن الہی ، فتنہ آخر الزمان* جیسی کتب اور متعدد موضوعات پر 150 سے زیادہ کتابچوں کی اشاعت کے علاوہ دسیوں کتابیں اشاعت کے مراحل میں۔

29 🔮 ملت کے اندر *خودی اور خود اعتمادی* کا احساس پیدا کرنا۔

30 🔮 *اسلامی انقلاب* کو علمی ، نظریاتی اور فکری بنیادوں پر پیش کرنا۔

31 🔮 استاد کے مقام کی تجلیل و تکریم کے لیےحوزہ و یونیورسٹی کی سطح پر " *یوم معلم*" کا انعقاد۔

32 🔮 حوزہ کے فاضل طلاب کی عمامہ گزاری کی ثقافت کا احیاء۔

33 🔮 ۔ پاکستانی میں *امامت و ولایت* کو اسلام کے سیاسی نظام کے طور پر تبلیغ و ترویج کرنا ۔

34 🔮 پوری دنیا کے اردو دانوں کے لیے *حالات حاضرہ اور سیاسی و انقلابی بصیرت افروز* راہنمائی۔

35 🔮 *عزاداری سید الشہداء ع* کے اندر فکری و روحی جہت کو اجاگر کرنا۔

36 🔮 امام امت کے فرمان کے مطابق *اسلام ناب محمدی اور امریکی اسلام میں فرق* کی توضیح و تشریح ۔

37 🔮 جوانوں کی فنی و ہنری صلاحیتوں کو نکھارنے کے لیے " *ہنرستان رشد*" نامی ٹیکنکل کالج کا قیام۔

38 🔮 خالص دودھ ، گوشت اور اقتصادی منصوبہ بندی میں *"لبنیات سلسبیل اور مویشی باڑہ*" کا قیام۔

39 🔮 جس طرح امام خمینی کے اسلامی انقلاب کی برکت سے علماء و مدارس کا مقام و مرتبہ زندہ ہوا اسی طرح پاکستان میں فرزند انقلاب نے " *دینی مدارس کو خصوصی عزت و عظمت*" فراہم کی۔

40 🔮 عالمی وبا کرونا کے حوالے سے بہترین *قرنطینہ سنٹر* کا قیام اور المصطفی اسکاؤٹس کی ملکی سطح پر خدمات۔

💚 گویا فرزند انقلاب زبان حال و عمل سے گویا ہیں۔

*چمکتے ☀️ سورج سے جا کے کہہ دو وہ اپنی کرنیں سنبھال رکھے*
  • میں اپنے صحرا کے ذرے ذرے کو خود چمکنا سکھا رہا ہوں*

🔮 ۔ *اللہ تعالی* تمام علماء و عوام کی نیک توفیقات میں اضافہ فرمائے ۔


سید جواد نقوی صاحب کے ابھی تک کے علمی کتابی آثار

◼️حماسہ حسینی

◼️مقصد امام حسین

◼️فلسفہ عزاداری

◼️فلسفہ تحریک کربلا

◼️حسین چراغ ہدایت

◼️پیغام عاشورہ

◼️حرارت القلوب

◼️کرامت و شرف حسینی

◼️عہد الہی و میثاق ربوبی

◼️عاشورہ از نظر خمینی

◼️حالت امت بعد از پیغمبر

◼️کربلا کی عبرتیں

◼️کردار زینبی

◼️لوگ دنیا کے بندے

◼️وحدت پیغام کربلا

◼️ہم حسین و غم حسین

◼️اسلامی بیداری و پیغام عاشورہ

◼️عقیدت و حقیقت عزاداری

◼️ مفہوم لبیک یا حسین

◼️غم حسین

◼️کربلا عقیدت سے حقیقت تک

◼️کربلا منشور دفاع حق

◼️کربلا حقیقی و کربلا خیالی

◼️کل یوم عاشورا کل ارض کربلا

◼️مجلس عزا اہمیت و مقصد

◼️عزاداری عالمی تحریک بیداری

◼️کربلا قرآن کی تفسیر

◼️عزاداری عشق حسینی

◼️ تحریک امام حسین از مدینہ تا کربلا

◼️سیاست کوفی و امامت حسینی

◼️امت کی تاریخی موت

◼️فلسفہ قیام امام حسین

◼️مکتب عاشورہ کی نگاہ میں نفرت آنگیز نظریے و راستے

◼️رسوماتی حسینیت و مکتبی حسینیت

◼️اسرار شب عاشور

◼️اقتدار پرستی در مقابل اقدار پرستی

◼️یزید کی بیعت کا انکار

◼️کربلا کے قرآنی اصول

◼️تفسیر زیارت عاشورہ

◼️قیام امام حسین کا مکی مرحلہ(1,2,3,4)

◼️امر بالمعروف نظام اصلاح امت

◼️کربلا میں خواص کا کردار

◼️قافلہ حجاز میں اک حسین بھی نہیں

◼️عاشورہ با عنوان مکتب

◼️کربلا حق و باطل میں جدائی کا راستہ

◼️امت کی امامت فراموشی اور کربلا میں احیا امامت

◼️حامیان دین و حاملان دین

◼️اہل بصرہ کے نام خط

◼️اہل کوفہ کے نام خط

◼️شعار حسینی

◼️کربلا آگاہانہ و اختیاری رستہ

◼️دشمن شناسی از نظر قرآن و عاشورہ

◼️عاشورہ نہضت قیام و بیداری

◼️کربلا اتمام حجت

◼️کوفہ اور کوفی

◼️کربلا ہر دور کی مشکل کا حل

◼️دنیا پرستی اور اس کے نتائج

◼️سر کربلا از نظر علامہ اقبال

◼️خواص کا کردار قیام امام حسین کا مکی مرحلہ

◼️خوشنودی خلق معصیت خالق

◼️خصائص حسینی

◼️قیام امام حسین میں بنی ہاشم کا کردار

[4]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Syed Jawad Naqvi on respecting Ayesha
  2. Magazine Mashrab e Naab -- http://www.mashrabenaab.com
  3. Lectures & Speeches of Agha Syed Jawad Naqvi-- http://www.islamimarkaz.com
  4. Raheislam monthly magazine vol. 26 page 42