شانو کھرانا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
شانو کھرانا
پیدائشجودھپور راجستان
اصنافہندستانی کلاسیکل
پیشےگلوکارہ
سالہائے فعالیت(1940s –present)
صدر ، ڈاکٹر اے پی جے عبد الکلام ڈاکٹر (محترمہ) کو پدم بھوشن پیش کرتے ہوئے )

شانو کھرانا ایک معروف بھارتی کلاسیکی گلوکارہ اور موسیقارہ ہیں۔ انہوں نے 1945 میں لاہور آل انڈیا ریڈیو پر گانا شروع کیا۔بعد میں وہ دہلی شفٹ ہوگئیں جہاں انہوں نے آل انڈیا ریڈیو دہلی اور موسیقی کے میلوں میں اپنی گائیکی جاری رکھی۔ انھوں نے موسیقی کی تعلیم بھی حاصل کی آخر کار انھوں نے ایم فل کیا اور کائرا گڑھ یونیورسٹی سے موسیقی میں پی ایچ ڈی کی۔راجستھان کی لوک موسیقی پر ان کا وسیع تحقیقی مقالہ موجود ہے ۔ انہیں 1991 میں پدما شری سے نوازا گیا ، اس کے بعد 2006 میں تیسرا بڑا شہری اعزاز پدم بھوشن ، حکومت ہند کے ذریعہ دیا گیا [1] 2002 میں ، انھیں سنگیت ناٹک اکیڈمی فیلوشپ سے نوازا گیا جو پرفارمنگ آرٹس میں سب سے بڑا اعزاز سنگت ناٹک اکیڈمی ، ہےہندوستان کی نیشنل اکیڈمی برائے موسیقی ، رقص اور ڈرامہ کے ذریعے دیا گیا۔

ابتدائی زندگی اور تربیت[ترمیم]

شانو کھورانا راجستھان جودھ پور میں ایک پنجابی گھرانے میں پیدا ہوئیں۔ [2] اس کا کنبہ زیادہ تر ڈاکٹر ، انجینئر اور غیر ملکی خدمات میں کام کرنے والے افراد پر مشتمل تھا۔ لیکن انکی موسیقی میں دلچسپی ان کے زندگی کے ابتدائی برسوں میں ہی بڑھ گئی جب انہوں نے اپنے بھائی کو موسیقی کے ماہر اور گلوکار پنڈت رگھوناتھ راؤ مصلگاؤںکر سے سیکھتے ہوئے دیکھا جو گوالیار گھرانہ کے راجہ بھیا پونچھ والے کے شاگرد اور بھتیجے تھے۔ انکے قدامت پسند گھرانے میں لڑکیوں کو موسیقی سیکھنے کی اجازت نہیں تھی لیکن جب انکے والد نے اسے ریڈیو پر کلاسیکی موسیقی کو پوری توجہ سے سنتے ہوئے دیکھا تو بارہ سال کی عمر میں موسیقی کی تربیت شروع کرنے کی اجازت دے دی۔

کیریئر[ترمیم]

شانو کی شادی 18 سال کی عمر میں ہندوستانی فضائیہ کے دانتوں کے ڈاکٹر سے ہوئی تھی اور وہ لاہور شفٹ ہوگئی مگر آل انڈیا ریڈیو (اے آئی آر) ، لاہور میں گانا جاری رکھا۔ [3] تقسیم ہند کے بعد ، انکے کنبے کو دہلی منتقل ہونا پڑا ، جہاں ان کے شوہر نے ایئر فورس چھوڑ دی اور اپنی نجی پریکٹس شروع کردی۔ تاہم اپنے شوہر کے اصرار پر شانونے دو چھوٹے بچے اور بیمار ساس ہونے کے باوجود ایک بار پھر اپنا ریاض شروع کیا۔ انھوںنے طبلہ کے استاد پنڈت چتور لال کے ساتھ مشق کی ، جو اگلے 16 سال تک جاری رہی اور جلد ہی ریڈیو پر بھی گانا شروع کیا۔ دریں اثنا ، نرملا جوشی ، جو اس وقت سنگت ناٹک اکیڈمی کی سکریٹری تھیں ،نے انہیں دہلی کے منڈی ہاؤس میں اپنے میوزک اسکول سنگیت بھارتی میں کلاسیکی موسیقی سکھانے کی دعوت دی۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Padma Awards" (PDF). Ministry of Home Affairs, Government of India. 2015. اخذ شدہ بتاریخ July 21, 2015. 
  2. "Shanno Khurama". gharanfestival. 19 ستمبر 2012 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 29 مئی 2013. 
  3. Sangeet Natak Akademi. Dr. Shanno Khurana. doi:ڈی او ئي.