شاہ عبد الرحیم دہلوی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

شاہ عبد الرحیم دہلوی فتاویٰ عالمگیری کی مجلس مؤلفین کے حصہ دارتھے
شاہ ولی اللہ کے والد ابو الفیض عبد الرحیم دہلوی 1054ھ میں پیدا ہوئے فتاویٰ عالمگیری کی تکمیل کے بعد نظر ثانی کا مرحلہ درپیش تھا اس سلسلہ میں کچھ حصہ شیخ حامد جونپوری کے سپرد تھا ان کی وساطت سے نظر ثانی کے لیے کچھ حصہ شاہ عبد الرحیم کے سپرد بھی کیا گیا لیک کچھ ایسے حالات پیدا ہوئے کہ یہ سلسلہ قائم نہ رہ سکا شاہ عبد الرحیم صاحب عہد فرخ سیر میں ستتر برس کی عمر پا کر 14 صفر 1131ھ کو وفات پائی۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اردو دائرہ معارف اسلامیہ جلد 15 صفحہ 152 دانش گاہ پنجاب لاہور