شین کاف نظام

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
شِیو کشن بسا
پیدائش شِیو کشن بسا
1947 (عمر 71–72 سال)
جودھ پور, راجستھان, بھارت
قلمی نام شین کاف نظام
پیشہ شاعر, نقاد
زبان اردو
قومیت بھارتی
نمایاں کام گمشدہ دیر کی گونجتی گھنٹیاں
اہم اعزازات ساہتیہ اکیڈمی ایوارڈ (2010)

شین کاف نظام، جو 1947 میں جودھ پور، بھارت میں پیدا ہوئے، اردو کا ایک شاعر اورادبی عالم ہے۔ اس کا پیدائشی نام شِی کشن بسا ہے۔ شین کاف نظام اس کا قلمی نام ہے.[1] انہوں نے دیوناگری میں دیوان غالب اور دیوان میر سمیت کئی شاعروں کے دیوان اڈیٹ کیے ہیں [2]

شین کاف نظام اردو شاعری کے موجودہ منظر نامے کا ایک انتہائی اہم معتبر اور مستند حوالہ ہیں۔

اگر چہ ان کی شہرت کا بڑا سبب ان کی شاعری بنی لیکن انہوں نے جس طرح ایک نثر نگار، نقاد، ادبی تذکرہ نگار اور ادبی صحافت کے اہم ستون کی حیثیت سے اپنی جگہ بنائی ہے اس سے کوئی انکار نہیں کر سکتا۔

ان کا ادبی سفر اور شاعر و نثر نگار کی حیثیت سے اردو زبان و ادب میں ان کی موجودگی ان لوگوں کے لیے ایک تازیانہ ہے جو اردو کو مسلمانوں کی زبان قرار دیتے ہیں۔

شعری مجموعے[ترمیم]

نظام کے کئی شعری مجموعے شائع ہوئے، ان کی فہرست درج ذیل کتاباں نیں.[3]

  • لمجوں کے سیلاب
  • دشت میں دریا
  • ناد
  • سایہ کوئی لمبا نا تھا
  • بیاضیں کھو گئی ہیں
  • گمشدہ دیر کی گونجتی گھنٹیاں
  • رستہ یہ کہیں نہیں جاتا

نظام کی شاعری کے مجموعے گمشدہ دیر کی گونجتی گھنٹیاں نے 2010 کا اردو ساہتیہ اکیڈمی ایوارڈ جتیا ۔ [1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب Shafey Kidwai (2010-12-29)۔ "Words' Worth"۔ The Hindu۔ اخذ شدہ بتاریخ 2011-01-05۔
  2. "The Write Circle with Sheen Kaaf Nizam"۔ Siyahi | A Literary Consultancy۔ 2009-05-14۔ اخذ شدہ بتاریخ 2016-08-03۔
  3. "Sheen Kaaf Nizam"۔ Samanvay Indian Languages Festival۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 جنوری 2013۔