عاصمہ چوہدری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
عاصمہ چوہدری
معلومات شخصیت
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ صحافی  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان انگریزی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

عاصمہ چوہدری ایک پاکستانی صحافی اور نیوز اینکر ہیں۔[1] وہ عاصمہ چوہدری کے ساتھ کے نام سے نیو نیوز کے پروگرام نیوز ٹاک میں اینکر ہیں۔ [2] ۔وہ 7 اپریل ، 2012 کو ڈان نیوز[3] میں ڈپٹی ایڈیٹر ریسرچ اینڈ انیلیسیس اور سینئر اینکر کی حیثیت سے شامل ہوئیں۔ بعد میں ، عاصمہ چوہدری کیپٹل ٹی وی میں شامل ہوگئیں اور پروگرام ممکن کی اینکر بن گئیں۔ پاکستان میڈیا ایوارڈز میں انہیں کرنٹ افیئرز کی بہترین خواتین اینکر کے اعزازسے نوازا گیا۔ وہ ڈیڑھ سال تک کیپیٹل ٹی وی کے لئے کام کرتی رہی۔ بعد میں وہ پہلے پاکستانی کرنٹ افیئر چینل ، چینل 24 کا حصہ بن گئیں۔ وہ پرائم ٹائم سلاٹ میں نیوز پوائنٹ کر رہی ہیں۔ [4]

کیریئر[ترمیم]

عاصمہ چودھری نے جنگ گروپ آف نیوز پیپرز میں سب ایڈیٹر کی حیثیت سے اپنے کیریئر کا آغاز کیا ، عاصمہ جلد ہی سرکاری ٹیلی ویژن سے وابستہ ہوگئیں اور وہاں بطور پروڈیوسر کام کیا۔ وہ 2003 میں پروگرام وژن پاکستان کے لئے پی ٹی وی ایوارڈ وصول کرنے والی خاتون اینکر تھیں۔ بعدازاں انہوں نے بطور پروڈیوسر پاکستان کے اعلی درجہ کے چینلز کے ساتھ کام کیا اور پھر پاکستان کی نامور سیاسی شخصیات کے ساتھ پارلیمنٹ سے پروگرام پارلیمنٹ کیفیٹیریا بھیز کیا۔ خصوصی سفارتی نمائندے کی حیثیت سے ، انہوں نے آگرہ سربراہی اجلاس ، سارک سمٹ ، ہمارے صدارتی انتخابات 2008 کا احاطہ کیا اور امریکہ ، برطانیہ ، ہندوستان ، جرمنی ، سری لنکا ، افغانستان ، بنگلہ دیش میں خصوصی اسائنمنٹ کے لئے بھی دورہ کیا۔ عاصمہ چودھری نے دستاویزی فلموں کی تیاری اور فلم سازی سے متعلق محکمہ ریاست ہائے متحدہ امریکہ کے آئی وی ایل پروگرام میں بھی حصہ لیا ہے۔[5] عاصمہ چوہدری نے ایگرا سمٹ ، سارک سمٹ ، امریکی صدارتی انتخابات 2008 کا بھی احاطہ کیا اور خصوصی ذمہ داریوں کے لئے امریکہ ، برطانیہ ، ہندوستان ، جرمنی ، سری لنکا ، افغانستان اور بنگلہ دیش کا بھی دورہ کیا۔ انہوں نے دستاویزی پروڈکشن اور فلم سازی کے بارے میں ریاستہائے متحدہ امریکہ کے محکمہ کے زیر اہتمام IVL پروگرام میں بھی حصہ لیا۔ [6]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Asma Chaudhry's profile
  2. "Asma Chaudhry's Official Website". 03 جون 2019 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 18 فروری 2020. 
  3. The Newspaper's Staff Reporter. "Asma Chaudhry joins DawnNews". dawn.com. 
  4. "Asma Chaudhry". www.woman.com.pk. 
  5. "Profile of Asma Chaudhry". www.profilepk.com. 04 دسمبر 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2015. 
  6. "International Participation". www.profilepk.com. 04 دسمبر 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2015.