مندرجات کا رخ کریں

عالمی یوم اردو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
عالمی یوم اردو
باضابطہ نامعالمی یومِ اقبال
منانے والے پاکستان،  بھارت
تقریباتسیمینار، سمپوزیم، مشاعرے اور دیگر تقاریب
تاریخ09 نومبر
تکرارسالانہ
منسلکیوم اقبال

عالمی یومِ‌ اردو، دنیا بھر میں اردو کے مشہور شاعر ڈاکٹر علامہ محمد اقبال کے یوم پیدائش پر 9 نومبر کو منایا جاتا ہے۔ [1] اس دن کو منانے کا مقصد اردو زبان کی مقبولیت کو اجاگر کرنا اور اس کی اہمیت کو سراہنا ہے۔ اردو برصغیر پاک و ہند میں بولی جانے والی اہم ترین زبانوں میں سے ایک ہے۔ یہ پاکستان کی قومی زبان بھی ہے۔

علامہ محمد اقبال

[ترمیم]

یہ دن علامہ محمد اقبال کے یوم ولادت کے موقع پر پوری دنیا میں منایا جاتا ہے۔

علامہ اقبال اردو کے عظیم شاعر اور مفکر تھے۔ انھوں نے اپنے تصورِ خودی کے ذریعے برصغیر کے نوجوانوں میں نئی جان ڈالی۔ اقبال نے امت مسلمہ کو اس کے شاندار ماضی کی یاد دلائی اور انھیں دوبارہ متحد ہونے کا درس دیا۔

تقریبات

[ترمیم]

اس دن پاکستان اور ہندوستان کے تمام ممتاز اداروں میں اردو کی اہمیت کو اجاگر کرنے اور اقبال کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لیے پر وقار تقریبات کا انعقاد کیا جاتا ہے۔

  • سیمینار
  • سمپوزیم
  • اس بات پر مذاکرے کہ اردو کو کیسے باقی رکھا جائے اور غیر اردو دانوں تک پہنچایا جائے۔
  • مشاعرے

اردو شاعروں، مصنفوں اور مدرسوں میں تقسیم انعامات

[ترمیم]

اردو ڈیولپمنٹ آرگنائزیشن، دہلی اور کچھ رفاہی تنظیمیں اس دن اردو شاعروں، مصنفوں اور مدرسوں میں تقسیم انعامات کرتی ہیں۔[2]

عالمی یوم اردو بدلنے کی وکالت

[ترمیم]

کچھ لوگ اردو کو صرف مسلمانوں کی زبان بتانے کی مخالفت کرتے ہیں۔ ایسے لوگوں کا خیال ہے کہ اردو تقاریب میں غیر مسلم اردو شاعروں، مصنفوں، مدرسوں اور دیگر محبان اردو کی کوششوں کو سراہنے اور آگے کرنے کی ضرورت ہے۔ انھی میں سے کچھ پروفیسر جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے سنٹر فار انڈین لینگویجز اور آل انڈیا ایسوسی ایشن آف اردو ٹیچرز آف کالجز اینڈ یونیورسیٹیز نے مطالبہ کیا ہے کہ 31 مارچ کو یوم اردو منانا چاہیے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ اس دن پنڈت دیو ناراین پانڈے اور جے سنگھ بہادر نے اردو کے حقوق کے لیے لڑتے ہوئے اپنی جانیں دیں۔

اقبال کے برعکس یہ دو حضرات اردو کے شاعر نہیں تھے۔ یہ لوگ اردو محافظ دستہ کے حامی تھے جس نے بھوک ہڑتال کی تھی تاکہ اردو کو اتر پردیش جیسی ریاستوں میں دوسری سرکاری زبان کا درجہ دیا جائے۔ پانڈے بھوک ہڑتال پر 20 مارچ، 1967ء پر کانپور میں کلکٹر کے دفتر کے رو بہ رو بیٹھے تھے جب کہ سنگھ ایک گروہ کا حصہ تھے جس نے لکھنؤ میں قانون ساز اسمبلی کے رو بہ رو دھرنا دیا۔ پانڈے 31 مارچ کو وفات پا گئے جب کہ سنگھ نے اس کے کچھ دنوں بعد اردو کی راہ اپنی جان کی قربانی دی۔[3]

مزید دیکھیے

[ترمیم]

حوالہ جات

[ترمیم]
  1. Urdu Day World Urdu Day۔ "World Urdu Day"۔ 12 اپریل 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 11 مئی 2023 
  2. 'World Urdu Day' Awards announced - Oneindia
  3. ‘Iqbal’s birthday shouldn’t be observed as Urdu Day’ | Mumbai News - Times of India