عمر سیف

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
عمر سیف
تفصیل=

وائس چانسلر انفارمیشن ٹیکنالوجی یونیورسٹی
آغاز منصب
20 جنوری 2013
چیئرمین Punjab Information Technology Board
مدت منصب
نومبر 2011 – 12 نومبر 2018
معلومات شخصیت
مقام پیدائش پاکستان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
مادر علمی جامعہ کیمبرج
ایچی سن کالج
ٹرینٹی کالج، کیمبرج
لاہور یونیورسٹی آف مینجمنٹ سائنسز  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تعلیم از (P69) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ کمپیوٹر سائنس دان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
ملازمت میساچوسٹس انسٹیٹیوٹ برائے ٹیکنالوجی،  ولاہور یونیورسٹی آف مینجمنٹ سائنسز  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں نوکری (P108) ویکی ڈیٹا پر
اعزازات

عمر سیف (انگریزی: Umar Saif) (پیدائش 1979ء) پاکستانی کمپیوٹر سائنس دان ہیں۔ وہ آئی ٹی یونیورسٹی کے وائس چانسلر اور پنجاب آئی ٹی بورڈ کے چیئرمین بھی رہے۔ان کا نام امریکی یونیورسٹی ایم آئی ٹی کی طرف سے دنیا کے 35 نوجوان موجدوں میں شامل کیے جانے کی خبر میڈیا کے ذریعے منظر عام پر آئی تو سابق وزیرِ اعلیٰ شہباز شریف نے انہیں حکومت پنجاب کے لیے کام کرنے کی پیشکش کی۔ چند ہی برسوں میں انہوں نے صحت، تعلیم، پولیس سمیت درجنوں شعبوں اور سرکاری محکموں میں آئی ٹی کے نفاذ کے لیے انقلابی اقدامات کیے۔ مائیکروسافٹ کے بانی بل گیٹس نے 2018ء میں ڈاکٹر عمر سیف کو امریکا بلا کر ان کی پولیو کے خاتمے کے لیے کاوشوں پر تحسین کی۔ ورلڈ بینک نے ان کے دور میں وضع کیے جانے والے ای ویکس نظام اور سٹیزن فیڈ بیک مانیٹرنگ پروگرام کو دنیا کے پندرہ عظیم منصوبوں کی گلوبل رپورٹ میں بطور مثال شامل کیا۔ ڈاکٹر عمر سیف کو یونیسکو کی پاکستان کے لیے چیئر کے طور پر بھی منتخب کیا گیا[1]۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]