عورت (1940ء فلم)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
عورت
Aurat
Aurat 1940.jpg
پوسٹر
ہندیऔरत
ہدایت کارمحبوب خان
تحریربابو بھائی مہتا
وجاہت مرزا
ستارےسردار اختر
موسیقیانیل بسواس
سنیماگرافیفریدون ایرانی
ایڈیٹرشمس الدین قادری
تقسیم کارنیشنل پکچرز
تاریخ نمائش
  • 1940ء (1940ء)
دورانیہ
154 منٹ
ملکبھارت
زبانہندی [1]

عورت (ہندی: औरत) ، جسے اس کے انگریزی عنوان ویمن سے بھی جانا جاتا ہے، ایک 1940 کی ہندوستانی فلم ہے جس کی ہدایت کاری محبوب خان نے کی تھی اور اس میں مرکزی کردار سردار اخت ، سریندر، یعقوب ، کنہیالال اور ارون کمار آہوجا نے ادا کیے تھے۔ فلم کی موسیقی انیل بسواس کی ہے اور مکالمے وجاہت مرزا نے لکھے تھے۔ محبوب خان نے بعد ازاں اس فلم کو دوبارہ مدرر انڈیا (1957) کے نام سے بنایا [2]۔ ہندوستانی سنیما میں اب تک کی سب سے بڑی ہٹ فلموں میں سے ایک سمجھی جاتی ہے ( دوبارہ مکالموں کے لیے وجاہت مرزا ، کنہیالال بطور سکھی لالہ اور فریدون ایرانی کو سنیما گرافی کے لیے لیا)۔

پلاٹ[ترمیم]

رادھا  (سردار اختر ) ایک غریب عورت ہے جس کے تین بیٹے ہیں  اور وہ گاؤں کے لالچی ساہوکار سے لیے قرض کے پیسے ادا کرنے کے لیے محنت مزدوری کرتی ہے۔ رادھا جب دوبارہ حاملہ ہوتی ہے تو اس کا شوہر شامو( ارون کمار آہوجا ) بہت دور بھاگ جاتا ہے  اور اسے غربت اور سکھی لالہ کی گستاخانہ پیشرفت سے لڑکنے کے لیے اکیلا چھوڑ دیتا ہے۔ رادھا کے دو بڑے بچوں کی موت ہو جاتی ہے اور اس کے صرف دو بیٹے ہی رہ  جاتے ہیں: رامو (سریندر ) اور جنگلی برجو (یعقوب)۔ ان بیٹوں میں سے برجو ڈاکو بن جاتا ہے اور سکھی لالہ کو مار دیتا ہے، اپنے بچپن کے پیارے کو اغوا کرلیتا ہے۔ اس کے نتیجے میں ، رادھا اور رامو کو گاؤں سے باہر نکال دیا جاتا ہے۔ آخر کار ، رادھا برجو کو اسے بے عزت کرنے پر مار ڈالتی ہے۔

کاسٹ[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]



حوالہ جات[ترمیم]

  1. Aḵẖtar، Jāvīd؛ Kabir، Nasreen Munni (2002). Talking Films: Conversations on Hindi Cinema with Javed Akhtar (بزبان انگریزی). اوکسفرڈ یونیورسٹی پریس. صفحہ 49. ISBN 9780195664621. most of the writers working in this so-called Hindi cinema write in Urdu: گلزار, or راجندر سنگھ بیدی or Inder Raj Anand or راہی معصوم رضا or وجاہت مرزا, who wrote dialogue for films like مغل اعظم (فلم) and Gunga Jumna and مدر انڈیا. So most dialogue-writers and most song-writers are from the Urdu discipline, even today. 
  2. Gulzar، Govind Nihalani؛ Chatterjee، Saibal (2003). Encyclopaedia of Hindi Cinema. Popular Prakashan. صفحہ 55. ISBN 81-7991-066-0. اخذ شدہ بتاریخ January 21, 2011.