غدر (نکسل قائد)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
غدر (نکسل قائد)
تفصیل= غدر نظام کالج گراؤنڈ پر ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے۔ 2005ء

معلومات شخصیت
پیدائش سنہ 1949 (عمر 69–70 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
رہائش حیدرآباد، تلنگانہ، بھارت
شہریت Flag of India.svg بھارت  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
پیشہ سیاست دان،  شاعر  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر

گُماڈی وِٹل راؤ عوام الناس میں غدر کے نام سے مشہور ہے۔ اس کی پیدائش 1949ء میں ہوئی تھی۔ وہ ایک شاعر، تیلگو گویا اور مقامی نکسلیت پسندانہ رجحان والی فعالیت پسند شخصیت ہے جس کا تعلق تلنگانہ، بھارت سے ہے۔ اس نے ماقبل آزادی غدر پارٹی کو حراج تحسین پیش کرتے ہوئے غدر عرفیت اختیار کی۔ غدر پارٹی نے تحریک آزادی ہند کے دوران برطانوی ہند کی پنجاب کے علاقے میں شدید مخالفت کی تھی۔ یہ 1910ء کی بات تھی جب شاعر غدر پیدا بھی نہیں ہوئے تھے۔

الگ تلنگانہ ریاست کے لیے احتجاج[ترمیم]

غدر ورا ورا راؤ کی گرفتاری کا احتجاج کرتے ہوئے - 2005ء

جسے جیسے انیسویں صدی کے اواخر اور اکیسویں صدی کے شروع میں الگ تلنگانہ ریاست کے لیے جد و جہد پھر سے شروع ہوئی، غدر نے کھل کر الگ تلنگانہ ریاست کے لیے اپنی تائید کا اظہار کیا۔ اس نے اس کے پس پردہ یہ ارادہ ظاہر کیا کہ اس کی حمایت کرنے والے نچلے طبقوں بالخصوص دلتوں اور پسماندہ ذاتوں کو بااختیار بنانے کی کوشش کریں گے۔ اس کے لیے اس نے کہا کہ وہ شدت سے ان لوگوں کے ساتھ ہے جو سماجی انصاف کے حامل تلنگانہ کے لیے کھڑے ہیں جہاں درج فہرست طبقات و درج فہرست قبائل کے پاس ایسی سیاسی نمائندگی ہے جو ریاست کے عام لوگوں اور بی سی شہریوں کے مساوی ہے۔ اس نے نوا تلنگانہ پرجا پارٹی کے ساتھ اظہار یگانگت کی اگر چیکہ اسی کے دیویندر گوڑ کی غیر منقسم آندھرا پردیش کی وزارت داخلہ سنبھالنے کے دور میں اس پر پولیس نے گولی چلائی تھی۔[1][2][3]

غدر کو حیدرآباد، دکن کے کئی اردو اخبارات اپنے دفاتر میں بلا چکے ہیں، جن میں روزنامہ سیاست بھی شامل ہے۔ وہ کئی مسائل پر کھل کر بات کر چکا ہے۔ اس نے غیر منقسم آندھرا پردیش میں مسلمانوں کے تحفظات کی حمایت کی تھی۔ وہ خاص طور نکسلیت پسندوں کے ساتھ ہوئے تمام پولیس انکاؤنٹروں کو فرضی قرار دیا ہے۔ وہ نکسل تحریک کو سرکاری دبدبے اور عوام پر ظلم و ستم کے خلاف ایک ضروری رد عمل قرار دیتے آیا ہے۔

غدر کا نغمہ "اما تلنگانہ اکالی کیکالا گانما" کو تلنگانہ کے ریاستی نغمے کے طور منتخب کیا تھا۔[حوالہ درکار]

اعزازات[ترمیم]

نندی ایوارڈ:

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Fight forces opposing separate Telangana, says Gadar"۔ The Hindu۔ مورخہ 2008-03-27 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  2. "Telangana minus Hyderabad unimaginable: Gadar"۔ The Hindu۔ مورخہ 2008-01-23 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  3. "Smaller States viable, say leaders"۔ The Hindu۔ مورخہ 2008-02-09 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔

بیرونی روابط[ترمیم]