غلام علی اوکاڑوی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
غلام علی اوکاڑوی
Shaikh ul Quran.jpg 

معلومات شخصیت
پیدائش 11 جون 1920  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
گجرات  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
وفات 16 مئی 2000 (80 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
لاہور  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of Pakistan.svg پاکستان
British Raj Red Ensign.svg برطانوی ہند  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
جماعت جمیعت علمائے پاکستان  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) ویکی ڈیٹا پر
عملی زندگی
تلمیذ خاص کوکب نورانی اوکاڑوی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شاگرد (P802) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ عالم  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیشہ (P106) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ ورانہ زبان اردو،  پنجابی  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں زبانیں (P1412) ویکی ڈیٹا پر
P islam.svg باب اسلام
غلام علی اوکاڑوی کا مزار

شیخ القرآن مولانا غلام علی اوکاڑوی اہلسنت کے اکابر مشائخ اور اہلسنت کے بڑے علما میں شمار ہوتے ہیں ۔

القابات[ترمیم]

غلام علی اوکاڑوی کو اہلسنت کے علما کی طرف سے انہیں شیخ الاسلام والمسلمین، شیخ القرآن،مفسر ،محدث محقق اور فقیہ جیسے خطابات دیے گئے۔

علمی خدمات[ترمیم]

شیخ القرآن کا مشغلہ دینی مدارس کے طلبہ کو درسی کتب کی تعلیم دینا تھا، ساری زندگی اسی شغف میں لگے رہے، اس کے ساتھ آپ دورہ تفسیر قرآن کورس کے نام سے دینی مدارس کی سالانہ تعطیلات میں اہتمام کرتے جو بڑی اہمیت اختیار کر گیا تھا۔ کیونکہ اس میں برسوں کی ریاضت کا نچوڑ ہوا کرتا۔ اس میں اعتقادی ،علمی اور فقہی مسائل آسان طریقے سے سمجھائے جاتے۔

بانی اشرف المدارس[ترمیم]

غلام علی اوکاڑوی کی کاوش سے 1954ء میں جامعہ حنفیہ اشرف المدارس اوکاڑہ کا قیام ہوا جو علم کا ایک روشن مینار ہے۔

خدمات[ترمیم]

سیاسی و مسلکی خدمات میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینے والے تھے تحریک پاکستان سے تحریک نظام مصطفے ٰ تک ہر پلیٹ فارم پر نمایاں خدمات ہیں سنی کانفرنس ٹوبہ ٹیک سنگھ عالمی سنی کانفرنس ملتان اور میلاد مصطفے ٰ کانفرنس رائے ونڈ ان کے کا رہائے نمایاں میں شامل ہیں۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]