فردوس گمشدہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

فردوس گمشدہ 17ویں صدی کے انگریز شاعر جان ملٹن (1608–1674) کی نظم معری میں ایک عظیم رزمیہ نظم ہے۔ پہلا ورژن، جو 1667 میں شائع ہوا، دس کتابوں پر مشتمل ہے جس میں دس ہزار سے زائد مصرعے ہیں ۔ اس کے بعد 1674 میں دوسرا ایڈیشن منظرعام پر آیا، جس کو بارہ کتابوں میں ترتیب دیا گیا ( ورجیل کی اینیڈ کے انداز میں) جس میں معمولی نظر ثانی کی گئی۔ [1] [2] اسے ملٹن کا شاہکار سمجھا جاتا ہے۔ [3] یہ نظم انسان کے زوال کی بائبل کی کہانی سے متعلق ہے۔

نظم نگاری[ترمیم]

ملٹن اپنی بیٹی ہنری فوسیلی (1794) کو املا کرتے ہوئے

خلاصہ[ترمیم]

کردار[ترمیم]

شیطان[ترمیم]

شیطان باغی فرشتوں کو ورغلاتے ہوئے ولیم بلیک (1808)

آدم[ترمیم]

ولیم بلیک ، دی ٹیمپٹیشن اینڈ فال آف ایو ، 1808 (ملٹن کے جنت کھو جانے کی مثال)

حوا[ترمیم]

حوا کی تخلیق ، ولیم بلیک (1808)

خدا کا بیٹا[ترمیم]

  1. Milton، John (1674). Paradise Lost; A Poem in Twelve Books (ایڈیشن II). London: S. Simmons. اخذ شدہ بتاریخ 08 جنوری 2017 – Internet Archive سے. 
  2. "Paradise Lost: Introduction". Dartmouth College. اخذ شدہ بتاریخ 26 مارچ 2010. 
  3. "John Milton". Poetry Foundation. 19 April 2018.