فرید الاطرش

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
فرید الاطرش
(عربی میں: فريد الأطرش ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
6464hoss.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائشی نام (عربی میں: فريد فهد فرحان إسماعيل الأطرش ویکی ڈیٹا پر (P1477) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیدائش 19 اکتوبر 1910[1]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
السویداء  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 26 دسمبر 1974 (64 سال)[2]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بیروت  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ وفات سکسوفون،  الوحدات اسپورٹس کلب  ویکی ڈیٹا پر (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت  ویکی ڈیٹا پر (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بہن/بھائی
فنی زندگی
صنف جنسی تناسب  ویکی ڈیٹا پر (P136) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
آلات موسیقی صوت  ویکی ڈیٹا پر (P1303) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ اداکار،  فلم ساز،  گلو کار،  نغمہ ساز،  فلم اسکور کمپوزر،  فلم اداکار  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان عربی[3]  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

فرید الاطرش (عربی: فريد الأطرش‎) ایک سوری موسیقار، گلوکار اور اداکار تھے جو مصر میں رہتے تھے۔[4][5] انہیں مصری اور عربی موسیقی کے چار بڑوں میں سے ایک سمجھا جاتا ہے جن میں عبد الحلیم حافظ، ام کلثوم، محمد عبدالوہاب اور فرید الاطرش شامل ہیں۔[6][7]

بیرونی روابط[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. https://www.google.com/doodles/farid-al-atrashs-110th-birthday — اخذ شدہ بتاریخ: 19 اکتوبر 2020
  2. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb138936188 — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — مصنف: Bibliothèque nationale de France — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  3. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb138936188 — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — مصنف: Bibliothèque nationale de France — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  4. "Prominent Egyptians – Egyptian Government State Information Service". Sis.gov.eg. December 26, 1974. February 11, 2012 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 04 فروری 2012. 
  5. Newspaper Article by Abdel-Fadil Taha, 2008-05-23, Al-Quds Al-Arabi, "وحصلت الأسرة علي الجنسية المصرية وظلت تنعم بها ومنهم اسمهان بالطبع"]
  6. El-Saket، Ola (June 21, 2011). "Remembering Abdel Halim Hafez, the voice of revolution". Al-Masry Al-Youm: Today's News from Egypt. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ July 21, 2011. 
  7. "Abdel Halim Hafez". Arabic nights. 2011. اخذ شدہ بتاریخ September 17, 2011.