فنطاسی ادب

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

فنطاسی ادب ان کہانیوں کو کہتے ہیں جن میں ایک خیالی دنیا بسائی گئی ہو۔ اس خیالی دنیا میں عموماً حقیقی دنیا کا کوئی کردار مقام یا واقعہ نہیں رکھا کیا جاتا۔ فنطاسی ادب کی ان خیالی دنیاؤں میں جادوئی اعمال، مافوق الفطرت واقعات اور جادوئی مخلوقات ہر طرف دکھائی دیتے ہیں۔

دراصل فنطاسی ادب تخمینی ادب کی ایسی ذیلی صنف ہے جس میں سائنسی موضوعات نہیں ہوتے۔ سنہ 1960ء کی دہائی سے فنطاسی ادب کا چلن عام ہوا اور فلموں، ٹیلی ویژن پروگرام، ناولوں، موسیقی، فنون لطیفہ اور ویڈیو گیموں میں اسے خوب استعمال کیا جا رہا ہے۔

گوکہ فنطاسی ادب پر مشتمل ناول عموماً بچوں کے لیے تحریر کیے جاتے ہیں لیکن ان کہانیوں کی معصومیت، تخیل اور انوکھے کردار بڑوں کے لیے بھی کشش کا باعث بن جاتے ہیں۔