فونیو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
سفید فونیو

فونیو ایک  اصطلاح ہے، جو ڈیجریٹیا جینس کے اناج کے دو پودوں کے لیے استعمال کی جاتی ہے۔ جو مغربی افریقہ کے کچھ حصوں میں قابل ذکر فصل ہے۔ جن میں قابل ذکر فصلوں کے مختلف حصوں میں مغربی افریقا۔ فونیو کے  دانے بہت چھوٹے ہیں۔ اس کا اِستحالہ سی فور ہے اور اونچائی درمیانی ہے۔[1] کروموسوم کی تعداد پرجاتیوں کے لیے ڈاعی پلاعڈ (دو ن)، ٹرعی پلاعڈ (چار ن) یا (ہیگزاپلاعڈ چھ ن) ہو سکتی ہے۔[2]

انگریزی زبان یہ نام فونو فرانسیسی کے لفظ وولف فونو سے مستعار لیا گیا ہے۔[3]

اقسام[ترمیم]

سفید فونیو (ڈیجیٹاریا عیکزلس)[ترمیم]

سفید فونیو (ڈیجیٹاریا عیکزلس) کو  بھوکے کا  چاول بھی کہا جاتا ہے۔ فونیو جنگلی اور قابل کاشت  ڈیجی ٹاریا اقسام کے ایک متنوع گروپ میں سے سب سے اہم ہے۔

جو مغربی افریقہ کے سوانا میں کاشت کی جاتی ہے۔ فونیو باجرا کی تمام اقسام کی سب سے کم بیج کی حامل قسم ہے۔ اس کی سب سے اہم صلاحیت یہ ہے کہ یہ غذائیت کو بہتر بنانے کے لیے،  غذائی تحفظ، دیہی ترقی کو فروغ دینے اور

زمین کا دیرپا استعمال کی صلاحیت رکھتا ہے ۔

فونیو مقامی طور پر اہم ہے کیونکہ یہ غذائیت سے بھرپور ہونے کے ساتھ ساتھ دنیا کی سب سے تیز رفتار سے بڑھنے والے اناج  میں سے ایک ہے جسے پکنے پر صرف چھ سے آٹھ ہفتوں کی مدت درکار ہوتی ہے۔ اس کی فصل نیم بنجر علاقوں کے ساتھ کم زرخیز مٹی، کم بارش  اور ہے۔ اناج میں استعمال کیا جاتا دلیہ اور دلیے کے لیے، روٹی اور بیر کے لیے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. N Haq (1995)۔ Fonio (Digitaria exilis and Digitaria iburua)۔ London: Chapman & Hall۔ صفحات 2–6۔ 
  2. Adoukonou-Sagbadja، H.; Schubert، V.; Dansi، A.; Jovtchev، G.; Meister، A.; Pistrick، K.; Akpagana، K.; Friedt، W. (2007-07-02). "Flow cytometric analysis reveals different nuclear DNA contents in cultivated Fonio (Digitaria spp.) and some wild relatives from West-Africa" (en میں). Plant Systematics and Evolution 267 (1-4): 163-176. doi:10.1007/s00606-007-0552-z. آئی ایس ایس این 0378-2697. https://link.springer.com/article/10.1007/s00606-007-0552-z. 
  3. Christian Seignobos and Henry Tourneux, Le Nord-Cameroun à travers ses mots: Dictionnaire de termes anciens et modernes: Province de l'extrême-nord (KARTHALA Editions, 2002; ISBN 2845862458)، p. 107.