فہرست ممالک بلحاظ کوئلہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
کوئلے کے ذخائر 2009

یہ مضمون ممالک کے ثابت شدہ کوئلے کے ذخائر اور پیداوار فہرست پر مشتمل ہے.

ثابت شدہ کوئلے کے ذخائر 2006
(ملین ٹن)
[1]
2007 میں کوئلہ کی پیداوار
(ملین ٹن)
[2]
درجہ ملک Bituminous & anthracite SubBituminous & lignite مجموعہ حصہ
1  ریاستہائے متحدہ امریکہ 111,338 135,305 246,643 23.3
2  پاکستان 0 185,050 185,050 19.3
3  روس 49,088 107,922 157,010 14.9
4  چین 62,200 52,300 114,500 12.6
5  بھارت 90,085 2,360 92,445 10.2
6  آسٹریلیا 38,600 39,900 78,500 7.4
7  جنوبی افریقہ 48,750 0 48,750 4.7
8  یوکرین 16,274 17,879 34,153 3.3
9  قازقستان 28,151 3,128 31,279 3.0
10  پولینڈ 14,000 0 14,000 1.3
11  برازیل 0 10,113 10,113 1.0
12  جرمنی 183 6,556 6,739 0.7
13  کولمبیا 6,230 381 6,611 0.6
14  کینیڈا 3,471 3,107 6,578 0.6
15  چیک جمہوریہ 2,094 3,458 5,552 0.5
16  انڈونیشیا 740 4,228 4,968 0.5
17  ترکی 278 3,908 4,186 0.4
18  یونان 0 3,900 3,900 0.4
19  مجارستان 198 3,159 3,357 0.3
20  بلغاریہ 4 2,183 2,187 0.2
21  تھائی لینڈ 0 1,354 1,354 0.1
22  شمالی کوریا 300 300 600 0.1
23  نیوزی لینڈ 33 538 571 0.1
24  ہسپانیہ 200 330 530 0.1
25  زمبابوے 502 0 502 0.1
26  رومانیہ 22 472 494 0.1
27  وینزویلا 479 0 479 0.1
مجموعہ 478,771 578,081 1,056,852 100.0
درجہ ملک پیداوار حصہ
  دنیا 6,395.6 100
1  چین 2,536.7 39.7
2  ریاستہائے متحدہ امریکہ 1,039.2 16.2
 EU 590.5 9.2
3  بھارت 478.2 7.5
4  آسٹریلیا 393.9 6.2
5  روس 314.2 4.9
6  جنوبی افریقہ 269.4 4.2
7  جرمنی 201.9 3.2
8  انڈونیشیا 174.8 2.7
9  پولینڈ 145.8 2.3
10  قازقستان 94.4 1.5
11  ترکی 76.6 1.2
12  یوکرین 76.3 1.2
13  کولمبیا 71.7 1.1
14  کینیڈا 69.4 1.1
15  چیک جمہوریہ 62.6 1.0
16  یونان 62.5 1.0
17  ویتنام 41.2 0.6
18  رومانیہ 35.4 0.6
19  بلغاریہ 30.4 0.5
20  تھائی لینڈ 18.3 0.3
21  ہسپانیہ 18.2 0.3
22  برطانیہ 17.0 0.3
23  میکسیکو 12.2 0.2
24  مجارستان 9.8 0.2
25  وینزویلا 8.0 0.1
26  برازیل 5.9 0.1
27  نیوزی لینڈ 4.6 0.1
28  پاکستان 3.6 0.1
28  زمبابوے 3.3
29  جنوبی کوریا 3.2
31  جاپان 1.3
32  فرانس 0.9
  • پاکستان کے تھر کے علاقے میں حالیہ دریافت میں تقریبا 185 ارب ٹن ایک اہم دریافت ہے۔ [3]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "BP Statistical review of world energy June 2007" (XLS). British Petroleum. June 2007. اخذ کردہ بتاریخ 2007-10-22. 
  2. "Statistical Review of World Energy 2008". British Petroleum. 
  3. http://www.steelguru.com/raw_material_news/Thar_coal_reserves_can_turn_around_Pakistani_fortunes/60113.html