قاری زبید رسول

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

قاری زبید رسولپاکستان کے مشہور و معروف نعت خواں گزرے ہیں۔

  • قاری زبید رسول کے استاد گرامی الحاج محمد علی ظہوری قصوری قاری زبید رسول کے متعلق فرما رہے تھے کہ مجھ سے اگر اللہ نے پوچھا کہ ظہوری تم نے دنیا میں کیا کیا ہے؟اگر اور کوئی جواب نہ دے پایا تو اتنا ضرور کہوں گا کہ میں نے تیرے محبوب کا ایک ثناءخوان تیار کیا ہے جس پر مجھے ناز ہے۔....
  • ایک حادثے میں 22 فروری 1990ء کو شہادت پائی ۔
  • مشہور کلام جو آپ نے پڑھے
  • پیکر دلربا بن کے آیا۔
  • بڑی امید ہے سرکار قدموں میں بلائیں گے،
  • واحسن منک لم تر قط عینی، [1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. حضور و سرور،ص 198،ارسلان احمد ارسل، ارفع پبلشرزلاہور، 2011،