مندرجات کا رخ کریں

لالا لطیفہ حمو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
لالا لطیفہ حمو
(عربی میں: لطيفة حمو ویکی ڈیٹا پر (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
معلومات شخصیت
پیدائشی نام (عربی میں: فاطمة أمحزون ویکی ڈیٹا پر (P1477) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیدائش سنہ 1946ء [1]  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
خنیفرہ   ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 29 جون 2024ء (77–78 سال)[2][3][4]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رباط   ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت المغرب   ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شریک حیات حسن ثانی (1961–1999)  ویکی ڈیٹا پر (P26) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اولاد محمد سادس المغربی ،  شہزادی لالہ مریم آف مراکش   ویکی ڈیٹا پر (P40) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان عربی ،  فرانسیسی ،  وسطی اطلس تشلحیت   ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

شہزادی لالا لطیفہ (عربی: الحاجة للا لطيفة: الحجۃ اللہ لطیفۃ ʼ (1946 -29 جون 2024) مراکش کے بادشاہ حسن دوم کی بیوی اور بادشاہ محمد ششم ، شہزادی لالہ مریم المغربی، للا اسماء ، للا حسنہ اور شہزادہ مولی راشد کی والدہ تھیں۔ [5][6][7][8]

سوانح عمری[ترمیم]

لطیفہ 1946 میں خینیفرا میں لطیفہ اماہزونی کے نام سے پیدا ہوئیں۔ [7] للا لطیفہ کا تعلق زیان قبیلے سے تھا اور ان کا تعلق ایک اہم امیجیگ خاندان سے تھا۔ [9][10] وہ ایک صوبائی گورنر کی بیٹی تھی، اس کے والد حسن اولد موہا او ہممو زینی، خینیفرا کے پاشا اور زینیس کے عادل تھے۔ [11][12] اس کے دادا مشہور موہا او ہممو زیانی تھے۔ [13] اس نے حسن دوم سے 9 نومبر 1961 کو مراکش کے شہزادہ مولی عبداللہ کی دلہن للا لامیا اس سولہ کے ساتھ ایک دوہری شادی کی تقریب میں شادی کی۔ [14][15] لطیفہ جنرل محمد میڈبوح کی سوتیلی بہن تھی (مؤخر الذکر کے والد جننایا رفیان قبیلے کے تھے جنہیں 9 دیگر اعلی فوجی افسران کے ساتھ-حسن دوم کے خلاف 1971 کی ناکام بغاوت کی کوشش میں بڑے پیمانے پر حصہ لینے پر پھانسی دے دی گئی تھی، جو بادشاہ کی بیالیسویں سالگرہ کی تقریب کے دوران ان کے موسم گرما کے محل میں ہوئی تھی۔ [16] پھانسی 13 جولائی 1971 کو دی گئی اور اسے سرکاری ٹیلی ویژن پر براہ راست نشر کیا گیا۔ [16]

نجی زندگی[ترمیم]

اس نے حسن دوم سے 9 نومبر 1961 کو شادی کی، اپنے بہنوئی شہزادہ مولی عبداللہ کی دلہن لامیا ال سولہ کے ساتھ ایک دوہری شادی کی تقریب کے دوران۔[14] اس کے بعد سے وہ شہزادی للا لطیفہ بن گئیں۔ [5][17] ان کے پانچ بچے پیدا ہوئے، جن میں موجودہ بادشاہ محمد ششم بھی شامل ہیں:[18]

  • شہزادی للا میریم (26 اگست 1962)
  • بادشاہ محمد ششم (21 اگست 1963) جب وہ ولی عہد تھے تو وہ سیدی محمد کے نام سے جانے جاتے تھے
  • شہزادی للا اسماء (29 ستمبر 1965)
  • شہزادی للا حسنہ (19 نومبر 1967)
  • شہزادہ مولی راچد (20 جون 1970)

حسن دوم کی موت کے بعد، لطیفہ نے محمد میڈیوری سے دوبارہ شادی کی،جو مرحوم بادشاہ کے محافظ اور شاہی محل کے سابق سیکیورٹی چیف تھے۔ [19][20][21]] اس کی دوبارہ شادی مئی 2000 میں ہوئی۔ [22][23]

وفات[ترمیم]

للا لطیفہ 29 جون 2024 کو مراکش کے شہر ربات میں انتقال کر گئیں۔ [24] اس کی آخری رسومات کی تقریب اسی دن پرائیویسی میں، ربات کے شاہی محل کے میدان میں واقع مولی الحسن مقبرے میں ہوئی۔ [25] بادشاہ، اس کے بیٹے، بادشاہ محمد ششم سے تعزیت پیش کرنے والے پہلے ممالک متحدہ عرب امارات اور الجزائر تھے۔ [26][27]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. وفاة والدة ملك المغرب محمد السادس عن عمر يناهز 78 عامًا — اخذ شدہ بتاریخ: 30 جون 2024 — سے آرکائیو اصل فی 30 جون 2024 — شائع شدہ از: 30 جون 2024
  2. القصر الملكي ينعى الأميرة للا لطيفة .. والدة الملك محمد السادس في ذمة الله — اخذ شدہ بتاریخ: 30 جون 2024 — سے آرکائیو اصل فی 30 جون 2024 — شائع شدہ از: 29 جون 2024
  3. شائع شدہ از: 29 جون 2024
  4. شائع شدہ از: 29 جون 2024
  5. ^ ا ب "Hassan II du Maroc invité de "L'Heure de Vérité" | Archive INA"۔ YouTube (بزبان الفرنسية)۔ 23 July 2019۔ From 1:06:30s to 1:07:30s۔ 20 جون 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 جون 2023۔ Journalist: Why don't we know the Queen of Morocco ? King Hassan II's response: ... there has never been a Queen ... when I have the opportunity to present the mother of princes who bears the title of Princess [but who] not that of Queen. Who has no political activity ... I present her very normally because I believe that she is, that she is well brought up, that she is very presentable ... 
  6. "وزير سابق رافق الأميرة للا لطيفة للعمرة والحج: كان تدينها قويا وتواضعها شديدا"۔ اليوم 24 – أخبار اليوم على مدار الساعة (بزبان عربی)۔ اخذ شدہ بتاریخ 01 جولا‎ئی 2024۔ Regarding his accompanying the mother of King Mohammed VI to perform the Umrah and Hajj rituals in 2005, Al-Samadi explained that he was honored, along with Dr. Muhammad Al-Sarrar, a professor at the Faculty of Sharia in Fez, upon assignment by the Scientific Committee of the Ministry of Endowments and Islamic Affairs, to accompany Her Royal Highness the Honorable Lalla Latifa, the mother of His Majesty the King. “In performing the rituals of Umrah and Hajj.” 
  7. ^ ا ب Historic Images۔ "1962 Press Photo Morocco's King Hassan II with his infant daughter, Mariam"۔ Historic Images (بزبان انگریزی)۔ 09 جنوری 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 09 جنوری 2024۔ Morocco's King Hassan II visited his daughter, Mariam, who was born in a Rome clinic. Announcement of the infant's birth was the first word that the king had married a commoner. The Moroccan embassy in Rome said she is Latifa, 18, daughter of a Berber chieftain. 
  8. (15 February 2009). Prohibido publicar fotos de la madre de Mohamed VI (Forbidden to publish photographs of Mohamed VI's mother), El País (in Spanish)
  9. "Lalla Latifa"۔ frontend (بزبان انگریزی)۔ 18 September 2020۔ 10 دسمبر 2021 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 دسمبر 2021 
  10. Bernard Reich (21 February 1990)۔ Political Leaders of the Contemporary Middle East and North Africa: A Biographical Dictionary (بزبان انگریزی)۔ Greenwood Publishing Group۔ صفحہ: 231۔ ISBN 978-0-313-26213-5۔ 02 اکتوبر 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 27 ستمبر 2023 
  11. Beverley Mack، Jean Boyd (23 September 2013)۔ Educating Muslim Women: The West African Legacy of Nana Asma u 1793-1864 (بزبان انگریزی)۔ Kube Publishing Ltd۔ صفحہ: 123۔ ISBN 978-1-84774-061-8۔ 02 اکتوبر 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 27 ستمبر 2023۔ Hassan II (r.1961-99), on his accession, married Lalla Latifa, the daughter of a provincial governor 
  12. Bulletin des études arabes: (intermédiaire des arabisants). (بزبان فرانسیسی)۔ Swets and Zeitlinger۔ 1966۔ صفحہ: 29۔ 02 اکتوبر 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 27 ستمبر 2023۔ Hassan ould Moha ou Hammou, Adel of the Zaïanes, Pacha de Khenifra 
  13. Laboratoire d'anthropologie et de préhistoire des pays de la Méditerranée occidentale (France)، Institut de recherches et d'études sur le monde arabe et musulman (2005)۔ Encyclopédie berbère (بزبان فرانسیسی)۔ EDISUD۔ ISBN 978-2-7449-0538-4۔ 06 اپریل 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 جون 2023۔ That King Mohammed VI, who is himself the great-grandson of Moha ou Hammou, took advantage of a stay in Khenifra to announce in October 2001 ... 
  14. ^ ا ب "magazine picture – 1961 – morocco moulay abdallah king hassan II wedding"۔ eBay (بزبان انگریزی)۔ 10 دسمبر 2021 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 دسمبر 2021 
  15. Jihane Rahhou (29 June 2024)۔ "Mother of Morocco's King Mohammed VI Passes Away Aged 78"۔ Morocco World News۔ 30 جون 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جون 2024 
  16. ^ ا ب شاهد على العصر – أحمد المرزوقي – الجزء الثالث (بزبان عربی)۔ Al Jazeera۔ 3 March 2009۔ 17 مئی 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 مارچ 2014 
  17. "SM le Roi, Amir Al-Mouminine, inaugure à Salé la "Mosquée SA la Princesse Lalla Latifa" et y accomplit la prière du vendredi – La commune de Salé" (بزبان فرانسیسی)۔ 3 August 2023۔ 02 اگست 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 09 اگست 2023 
  18. Jihane Rahhou (29 June 2024)۔ "Mother of Morocco's King Mohammed VI Passes Away Aged 78"۔ Morocco World News۔ 30 جون 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جون 2024 
  19. Mahjoub Tobji (13 September 2006)۔ Les officiers de Sa Majesté:Les dérives des généraux marocains 1956-2006 (PDF) (بزبان فرانسیسی)۔ Fayard۔ صفحہ: 52۔ ISBN 978-2-213-64072-3۔ 03 مارچ 2018 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 31 مئی 2023۔ Médiouri ... ended up marrying the widow of Hassan II, Latifa, a few years after the disappearance of the sovereign. 
  20. Ali Amar (29 April 2009)۔ Mohammed VI, le grand malentendu (PDF) (بزبان فرانسیسی)۔ Calman-Levy۔ صفحہ: 52۔ ISBN 978-2-702-14857-0۔ 31 مئی 2023 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 31 مئی 2023۔ Mohamed Médiouri ... had married the mother of Mohammed VI, and therefore the former wife of Hassan II, Latifa 
  21. AFP۔ "Moroccan king also targeted by NSO Group's malware"۔ www.timesofisrael.com (بزبان انگریزی)۔ 31 مئی 2023 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 31 مئی 2023۔ ... and Hassan II’s former bodyguard, Mohamed Mediouri, who is the current king’s stepfather. 
  22. Ignace Dalle (9 March 2011)۔ Hassan II entre tradition et absolutisme۔ Fayard۔ ISBN 978-2-213-66458-3 
  23. "MOROCCO : MOHAMED MEDIOURI - 25/05/2000 - Maghreb Confidential"۔ Africa Intelligence (بزبان انگریزی)۔ 25 May 2000۔ 04 جنوری 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 04 جنوری 2024 
  24. The National (29 June 2024)۔ "Tributes paid as King of Morocco's mother dies"۔ The National (بزبان انگریزی)۔ 29 جون 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 29 جون 2024 
  25. "Maroc : mort de la princesse Lalla Latifa, mère de Mohammed VI - Jeune Afrique.com"۔ JeuneAfrique.com (بزبان فرانسیسی)۔ 30 جون 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 29 جون 2024 
  26. "UAE leaders offer condolences to King of Morocco"۔ gulfnews.com (بزبان انگریزی)۔ 29 June 2024۔ 29 جون 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جون 2024 
  27. "Algérie - Maroc : Tebboune présente ses condoléances à Mohamed VI suite au décès de sa mère"۔ TSA (بزبان فرانسیسی)۔ 29 June 2024۔ 30 جون 2024 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 جون 2024