مانی کارنیکا: جھانسی کی رانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
منی کارنیکا: جھانسی کی رانی
فائل:Manikarnika Poster.jpg
تھیٹر پوسٹر
ہدایت کاررادھا کرشنا
کنگنا راناوت[1]
پروڈیوسرزی اسٹوڈیوز
کمل جین
نشانت
تحریرپرسون جوشی
(مکالمے)
ستارےکنگنا رناوت
ذیشان ایوب
انکیتا لوکھنڈے
راویامیتابھ بچن
موسیقی
شنکر احسان

سنچت
انکت بلہارا
سنیماگرافیکرن
گنانا شیکھر
ایڈیٹررمیشور بھگت
سورج جگتپ
تقسیم کارزی اسٹوڈیوز
تاریخ نمائش
  • 25 جنوری 2019ء (2019ء-01-25)[2]
دورانیہ
148 منٹ[3]
ملکہندوستان
زبانہندی اردو
بجٹ99–125 crore[4][5]
باکس آفساندازاً۔ 132.95–152 crore[6][7][8]

مانی کارنیکا: جھانسی کی رانی ایک 2019 ہندوستان میں بنی ہندی زبان کی تاریخی فلم ہے جو جھانسی کی رانی لکشمی بائی کی زندگی پر مبنی ہے۔ [9] اس کی ہدایتکاری رادھا کرشنا جگرلامودی اور کنگنا رناوت نے کی، اسکرین پلے کےوی وجندر پرساد نے لکھا ، اور زی اسٹوڈیوز ، کمال جین ، اور نشانت پٹی نے پروڈیوس کیا ۔ اس فلم میں کنگنا رناوت مرکزی کردار میں ہیں۔ [10]

مانیکرنیکا: ملکہ جھانسی کو 25 جنوری 2019 کو ہندی ، تامل اور تیلگو میں دنیا کے 50 ممالک میں 3700 اسکرینوں پر ریلیز کیا گیا۔ [11] اس فلم نے بین الاقوامی سطح پر اوربھارت کے تھیٹروں میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ کسی بھی خواتین پر مبنی فلم کے لئے پہلے دن کی سب سے زیادہ کمائی کرنے والی فلم بنی ۔ [12] [13] اس فلم پر مثبت تنقیدہوئی۔ [14] اس فلم کا انتخاب بوکیون بین الاقوامی تصوراتی ، بہترین فلم فیسٹیول کے لئے کیا گیا تھا۔

منی کارنیکا: جھانسی کی رانی میں اپنی اداکاری کے لئے ، کنگنا رناوت نے 67 ویں قومی فلم ایوارڈ 2021 برائے بہترین اداکارہ جیتا۔

کاسٹ[ترمیم]

  • کنگنا رناوت بطور رانی لکشمی بائی (منی کارنیکا عرف مانو)
  • جشو سنگپتا بطور گنگادھر راؤ، لکشمی بائی کا شوہر
  • اٹل کلکرنی بطور ٹاٹیا ٹوپ
  • محمد ذیشان ایوب بطور سداشو(لکشمی بہنوئی)
  • رچرڈ کیپ بطور جنرل ہیوگ روز
  • سریش اوبرائے بطور باجی راؤ 2
  • ڈینی ڈینزوگپا بطور غلام غوث خان
  • انیل جارج بطور پیر علی
  • ایڈورڈ سونن بلک بطور کپتان گورڈن
  • انکتا لوکھنڈے بطور جھلکاری بائی
  • یش ٹونک بطور راؤ ٹلا رام
  • آر بھکتی کلین بطور لارڈ کیننگ
  • مشتی بطور کشی بائی
  • پریا گمرے بطور سندر
  • سپرنا ماروا بطور راجہ ماتا
  • روی پرکاش بطور سنڈیا گوالیار بادشاہ
  • راجیو کچھرو بطور گل محمد

ایوارڈ اور نامزدگیاں[ترمیم]

سال ایوارڈ قسم وصول کنندہ
2019 26 ویں سکرین ایوارڈ بہترین اداکارہ کنگنا رناوت
زی سین ایوارڈ بہترین اداکارہ کنگنا رناوت
2020 فلم فیئر ایوارڈ بہترین اداکارہ کا فلم فیئر ایوارڈ کنگنا رناوت
بہترین لباس ڈیزائن کے لئے فلم فیئر ایوارڈ نیتا للا
2021 67 ویں قومی فلم ایوارڈ بہترین اداکارہ کنگنا رناوت

سیکوئل[ترمیم]

کنگنا رناوت اور پروڈیوسر کومل جین نے منی کارنیکا ریٹرنز: دی لیجنڈ آف ڈیڈا کے سیکوئل پر کام کرنے کے لئے کام شروع کر دیا ہے۔ یہ کشمیری خاتون حکمران ڈیڈا پر مبنی ہوگی۔ قریبی ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ نئی فلم بڑی اور بین الاقوامی پیمانے پربنائی جائے گی ، انہوں نے مزید کہا کہ ٹیم حقیقی زندگی کی خواتین ہیروز پر مبنی عالمی معیار کی فرنچائز بنانے کا ارادہ رکھتی ہے۔ [15]

حوالہ جات[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]

  1. "Kangana Ranaut credited as director along with Radha Krishna Jagarlamudi– Times of India". The Times of India. اخذ شدہ بتاریخ 30 جنوری 2019. 
  2. "It's official! Kangana Ranaut's 'Manikarnika' to clash with 'Super 30' early next year – Times of India". The Times of India. اخذ شدہ بتاریخ 21 جولا‎ئی 2018. 
  3. "Manikarnika: The Queen of Jhansi | British Board of Film Classification". www.bbfc.co.uk (بزبان انگریزی). اخذ شدہ بتاریخ 20 جنوری 2019. 
  4. "Manikarnia: The Queen of Jhansi". Box Office India. اخذ شدہ بتاریخ 08 فروری 2019. 
  5. Gaikwad، Pramod (5 September 2018). "From Rs 60 crore to Rs 125 crore, Manikarnika's budget soars after Kangana Ranaut-Sonu Sood fued". International Business Times, India Edition. 
  6. "Manikarnika - The Queen of Jhansi Box Office Collection till Now - Bollywood Hungama". بالی وڈ ہنگامہ. اخذ شدہ بتاریخ 17 مارچ 2018. 
  7. "Box office report: Manikarnika crosses Rs 100 cr mark in India, Uri collects Rs 225.5 cr". ہندوستان ٹائمز. 18 February 2019. 
  8. "Manikarnika Box Office: Kangana Ranaut's film roars at the ticket windows, enters Rs 100 crore club on 4th Sunday!". DNA. 18 February 2019. 
  9. "More co-stars for Kangana Ranaut in Manikarnika: The Queen of Jhansi". Mumbai Mirror. 
  10. "Manikarnika: Kangana Ranaut to share directorial credit With Krish?". timesnownews.com. 31 October 2018. 
  11. Taran Adarsh [@] (25 January 2019). "#Manikarnika: The Queen Of Jhansi screen count... India: 3000 Overseas: 700... releasing in over 50 countries Worldwide total: 3700 screens #Hindi #Tamil #Telugu" (ٹویٹ) – ٹویٹر سے. 
  12. "Manikarnika box office collection: Kangana Ranaut's film a hit in the global markets, collects $ 1.55 million | Entertainment News". www.timesnownews.com. 29 January 2019. اخذ شدہ بتاریخ 25 جون 2019. 
  13. "The hits and flops of the first quarter of 2019". filmfare.com. اخذ شدہ بتاریخ 25 جون 2019. 
  14. "Positive reviews pour in as Kangana's Manikarnika hits theaters". www.thenews.com.pk (بزبان انگریزی). 25 January 2019. اخذ شدہ بتاریخ 27 جون 2019. 
  15. "Kangana Ranaut to star in 'Manikarnika Returns: The Legend Of Didda'".