مان گڑھ قلعہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مان گڑھ قلعہ
ضلع رائے گڑھ، مہاراشٹر
مان گڑھ قلعہ is located in مہاراشٹر
مان گڑھ قلعہ
مان گڑھ قلعہ
متناسقات 18°18′43.3″N 73°21′04″E / 18.312028°N 73.35111°E / 18.312028; 73.35111
قسم پہاڑی قلعہ
مقام کی معلومات
مالک حکومت ہند
عوام کے
لیے داخلہ
ہاں
حالت کھنڈر
مقام کی تاریخ
مواد پتھر

مان گڑھ قلعہ بورواڑی گاؤں میں واقع ہے جو صوبہ مہاراشٹر کے ضلع رائے گڑھ کے تعلقہ مان گاؤں کے پاس پڑتا ہے۔[1] اس قلعہ کی اہمیت کی وجہ یہ ہے کہ یہاں مرہٹہ سلطنت کے بانی اور چھترپتی اول شیواجی نے قدم رکھا تھا۔ مان گاؤں ممبئی سے 150 کلومیٹر کی دوری پر واقع ہے۔

مضافات[ترمیم]

اس قلعہ کے جنوب میں جور وادی اور مشرق میں کوکن دیوا ہے، جبکہ جنوب مغرب میں گنگاولی گاؤں واقع ہے جو چھترپتی شاہو کی جائے پیدائش ہے۔

یہ قلعہ سطح سمندر سے 235 میٹر بلندی پر واقع ہے۔ قلعہ کے نیچے دیوی ونجھائی کا پرانا مندر ہے۔ مشرقی جانب سے مندر میں داخلے کا راستہ بنا ہوا ہے جس کی شکل گائے کے منہ کی طرح ہے۔ مندر کے دروازے کے پاس ہی مچھلی اور کنول کا تراشا ہوا مجسمہ موجود ہے۔

قلعہ کی بائیں جانب چار کنویں اور ایک غار ہیں، اس غار میں پچاس آدمی بآسانی سما سکتے ہیں۔ ماضی میں یہ غار غلہ اور اناج کے گودام کے طور پر استعمال ہوتا تھا۔ قلعہ کے اوپر فوجی چھاؤنی اور قلعہ دار کے محل کے آثار نظر آتے ہیں۔ یہ قلعہ دار بادشاہ کی طرف سے قلعہ کی حفاظت کے لیے مامور ہوتے تھے۔ قلعہ کے جنوب میں ایک بہت بڑا میدان ہے جہاں فوجی مشقیں وغیرہ ہوا کرتی تھیں۔

تاریخ[ترمیم]

معاہدہ پورندر کی رو سے مان گڑھ قلعہ اورنگ زیب عالمگیر کو واپس کر دیا گیا تھا۔ سنہ 1818ء میں جب مرہٹہ سلطنت کا سقوط ہوا تو اس قلعہ پر انگریز افسر کرنل پروتھر نے قبضہ کر لیا۔

راستہ[ترمیم]

ممبئی سے بذریعہ سڑک مان گڑھ قلعہ کی مسافت 112 کلومیٹر ہے۔ ممبئی سنٹرل، دادر اور تھانے سے مان گاؤں تعلقہ تک بسیں چلتی ہیں۔ وہاں سے نظام پور بارہ کلومیٹر ہے جس کے لیے دوسری بس یا آٹو رکشا درکار ہوتا ہے۔ نظام پور پہنچ کر دوسرے رکشے سے بورواڑی گاؤں جانا ہوگا جو وہاں سے چار کلومیٹر کی دوری پر واقع ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Google Translate"۔ google.com۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 مارچ 2015۔

متناسقات: 18°18′44″N 73°21′03″E / 18.312113°N 73.350877°E / 18.312113; 73.350877