محمد یوسف شاہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
محمد یوسف شاہ
صدور آزاد کشمیر
مدت منصب
30 مئی 1956 – 8 ستمبر 1956
Fleche-defaut-droite-gris-32.png کرنل شیر احمد خان
سردار محمد عبدالقیوم خان Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
مدت منصب
2 دسمبر 1951 – 18 مئی 1952
Fleche-defaut-droite-gris-32.png کپتان جنرل سید علی احمد شاہ
راجہ محمد حیدر خان (نگران) Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
میر واعظ
مدت منصب
1931 – 1968
Fleche-defaut-droite-gris-32.png Atiqullah
Mirwaiz Maulvi Farooq Fleche-defaut-gauche-gris-32.png
معلومات شخصیت
پیدائش 19 فروری 1894  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
راجوری  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 12 دسمبر 1968 (74 سال)  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
راولپنڈی  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
مذہب اسلام
جماعت آل جموں و کشمیر مسلم کانفرنس  ویکی ڈیٹا پر سیاسی جماعت کی رکنیت (P102) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رشتے دار Mirwaiz Maulvi Farooq (nephew)

میر واعظ مولانامحمد یوسف شاہ مسلم کانفرنس کے بانی،آزاد کشمیر کے دو بار صدر اور میر واعظ رہے ہیں۔

ولادت[ترمیم]

میر واعظ محمد یوسف شاہ بن غلام رسول شاہ ثانی بن محمد یحیٰ کی ولادت 24شعبان بمطابق 10فروری 1896ء کو سرینگر میں ہوئی۔

تعلیم[ترمیم]

ابتدائی تعلیم اپنے والد محترم اور چچا کی نگرانی میں حاصل کی۔ گھر میں علمی ماحول تھا۔ تفسیر وحدیث، فقہ و اصول دین کا درس مولانا محمد حسین وفائی سے لیا۔ والد کی وفات کے بعد 22سال کی عمر میں اعلیٰ تعلیم کے لیے دار العلوم دیوبند چلے گئے۔ یہاں شیخ الحدیث کی نگرانی میں 8سال گزارے۔ 1925میں واپس وادی لوٹے۔

عملی زندگی[ترمیم]

ساری زندگی درس و تدریس میں مشغول رہے۔ ساتھ ہی کشمیر میں سیاسی بیداری مہم شروع کی۔ کشمیر میں خلاف کمیٹی تشکیل دی۔ کشمیر میں پہلا قومی پریس مسلم پرنٹنگ پریس کے نام سے شروع کیا۔ دو جرائد’’ اسلام‘‘ اور’’ راہنما‘‘ کے نام سے جاری کیے۔ ساتھ ہی کشمیر میں اورینٹل کالج قائم کیا۔ ان کا بنیادی مقصد دین کی تعلیم و تربیت تھا۔ دین کی تبلیغ اور اشاعت کے لیے انھوں نے پوری عمر وقف کر دی۔

سیاسی جدو جہد[ترمیم]

بھارت کے خلاف سب سے پہلے مسلح جدوجہد بھی میرواعظ مولوی محمد یوسف شاہ کی تحریک پر شروع ہوئی۔ انہوں نے ڈی اے وی کالج راولپنڈی کی عمارت حاصل کی۔ کشمیری نوجوان جو ممبئی، کلکتہ اور دیگر شہروں میں تھے۔ وہ قیام پاکستان کی خوشی میں کشمیر جانے کی بجائے پاکستان آ گئے۔ ان میں کشمیر کو آزاد کرانے کی زبردست خواہش تھی۔ وہ جدوجہد کرنا چاہتے تھے۔ انہیں راولپنڈی کے اس کالج میں مسلح ٹریننگ دی گئی۔ ان میں غلام محی الدین، سیف الدین، عبد العزیز وانی بھی شامل تھے۔ وہ کشمیر جا کر مہاراجا کے خلاف بغاوت کرنا چاہتے تھے۔ بعض وادی گئے۔ مگر کامیابی نہ ملی۔

وفات[ترمیم]

میر واعظ محمد یوسف شاہ 16رمضان المبارک 1388بمطابق 7دسمبر 1968ء بروز جمعۃ المبارک مالک حقیقی سے جا ملے۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]