مسوراتی علماء

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

مسوراتی علماء (انگریزی: Masoretes) چھٹی سے دسویں صدی کے وہ یہودی عالم جو پُرانے عہد نامے کی حفاظت اور اشاعت میں بڑے سرگرم تھے۔ عبرانی زبان میں مسورہ ”روایت“ کو کہا جاتا ہے۔ اُس زمانے سے پہلے عہد نامہ قدیم کے نسخے بڑی احتیاط نقل کیے جاتے تھے۔ لیکن چھٹی صدی سے پہلے یہ متن کس طرح تیار کیا جاتا اور محفوظ رکھا جاتا تھا اِس کا تاریخ میں ذکر موجود نہیں۔ مسوراتی علماء نے بڑی محنت سے قواعد و ضوابط مُرتب کیے جن سے نسخوں کی کتابت اور نقل میں غلطی کا امکان بہت کم رہ گیا۔ مثلاً نقل کرنے کے بعد سب الفاظ اور حروف گِن لئے جاتے تھے۔ متن کی دیگر خصوصیات بھی قلم بند کرلی جاتی تھیں۔ اگر متن میں کوئی غلطی محسوس ہوتی تو اُسے جوں کا توں چھوڑ دیا جاتا تھا لیکن حاشیہ میں اس کا ذکر اور درست کی ہوئی عبارت یا الفاظ لکھ دیئے جاتے تھے۔ اعراب لگانے کا سہرا بھی مسوراتی علماء کے سر ہے۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. مسورہ یہودی دائرۃ المعارف۔ اخذ کردہ بتاریخ 29 جولائی 2017ء