مغربی افریقا میں ایبولا وائرس کی وبا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مغربی افریقا میں ایبولا وائرس کی وبا
2014 ebola virus epidemic in West Africa simplified-ur.svg
ایبولا وائرس کی وبا کی صورتحال کا نقشہ
تاریخدسمبر 2013ء – جون 2016ء[1][2]
متاثرین
  • ملاحظہ: موجودہ اندازوں سے پتہ چلتا ہے کہ ایبولا کے 17 فیصد سے 70 فیصد مریضوں کی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔[3]
ملکمریضامواتآخری بار تجدید
9 جون 2016 بذریعہ عالمی ادارہ صحت
لائبیریا 10,675 4,809اختتام وبا 9 جون 2016[2]
سیرا لیون 14,124 3,956اختتام وبا 17 مارچ 2016[4]
گینیا 3,811 2,543اختتام وبا 1 جون 2016[5]
نائیجیریا 20 8اختتام وبا 19 اکتوبر 2014[6]
مالی 8 6اختتام وبا 18 جنوری 2015[7]
مملکت متحدہ 4 1اختتام وبا 21 دسمبر 2014[8]
اٹلی 1 0اختتام وبا 20 جولائی 2015[9]
مملکت متحدہ 1 0اختتام وبا 10 مارچ 2015[10]
سینیگال 1 0اختتام وبا 17 اکتوبر 2014[6]
اسپین 1 0اختتام وبا 2 دسمبر 2014[11]
جملہ28,64611,323بمطابق 8 مئی 2016ء (2016ء-05-08)

مغربی افریقا میں ایبولا وائرس کی وبا (2013ء–2016ء) تاریخ میں ایبولا وائرس مرض (ای وی ڈی) کے بڑے بیمانے پر پھیلنے والی تھی، جس کے سبب کئی افراد لقمہ اجل بنے اور خطے میں سماجی اقتصادی خلل ہوا، بالخصوص گینیا، لائبیریا اور سیرا لیون میں۔ سب سے پہلے متاثرین دسمبر 2013ء میں گینیا میں آئے؛ بعد ازاں مرض پڑوسی ممالک، لائبیریا اور سیرا لیون میں پھیل گیا،[12] کہیں اور بھی مرض کا مدھم پھیلاؤ ہوا۔ اس کی وجہ سے کئی اموات ہوئیں، اور ابتدا میں شرح اموات زیادہ رپورٹ ہوا،[12][13][14] جبکہ زیر علاج مریضوں کا تناسب 57–59% تھا۔[15] حتمی تعداد 28,616 تھی جن میں سے 11,310 کی اموات ہوئی، شرح اموات 40%۔[16] ایبولا وائرس نے نائیجیریا اور مالی میں کم تباہی مچائی،[17][18] اور سینیگال،[19] مملکت متحدہ اور اٹلی[14][20] میں مقید کیس رپورٹ ہوئے۔ باہر سے آیا مرض مملکت متحدہ اور اسپین کے میڈیکل ورکروں کو دوبارہ ہوا لیکن پھر مزید نہ پھیلا۔[21][22]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "WHO Director-General addresses the Executive Board". اخذ شدہ بتاریخ 09 جون 2016. 
  2. ^ ا ب Brice، Makini (9 June 2016). "WHO declares Liberia free of active Ebola virus transmission". Thomson Reuters Foundation. اخذ شدہ بتاریخ 16 اکتوبر 2016. 
  3. Donald G. McNeil Jr. (16 December 2015). "Fewer Ebola cases go unreported than thought, study finds". The New York Times. اخذ شدہ بتاریخ 23 جولا‎ئی 2015. 
  4. "Ebola Situation Report – 16 March 2016 | Ebola". World Health Organization. اخذ شدہ بتاریخ 28 اکتوبر 2016. 
  5. "End of Ebola transmission in Guinea". WHO Regional Office for Africa. 2015. اخذ شدہ بتاریخ 09 جون 2016. 
  6. ^ ا ب
  7. "Ebola situation report" (PDF). World Health Organization. 21 January 2015. اخذ شدہ بتاریخ 22 جنوری 2015. 
  8. "Ebola response roadmap – Situation report 24 December 2014". World Health Organization. 26 December 2014. اخذ شدہ بتاریخ 29 دسمبر 2014. 
  9. "Ebola situation report". World Health Organization. 22 July 2015. 
  10. "Situation summary". World Health Organization. 5 December 2014. اخذ شدہ بتاریخ 06 دسمبر 2014. 
  11. ^ ا ب WHO Ebola Response Team (23 September 2014). "Ebola virus disease in West Africa – the first 9 months of the epidemic and forward projections". New England Journal of Medicine 371 (16): 1481–1495. doi:10.1056/NEJMoa1411100. PMID 25244186. "... we estimate that the case fatality rate is 70.8% (95% confidence interval [CI], 69 to 73) among persons with known clinical outcome of infection.". 
  12. "Case Fatality Rate for ebolavirus". University of Edinburgh. 2015. 29 اگست 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 28 جنوری 2015. 
  13. ^ ا ب (PDF) Ebola response roadmap situation report. WHO. 31 December 2014. http://apps.who.int/ebolaweb/sitreps/20141231/20141231.pdf۔ اخذ کردہ بتاریخ 1 January 2015. "The reported case fatality rate in the three intense-transmission countries among all cases for whom a definitive outcome is known is 71%." 
  14. Ebola Situation report. WHO. 12 January 2015. http://www.who.int/csr/disease/ebola/situation-reports/en/۔ اخذ کردہ بتاریخ 28 January 2015. 
  15. Wappes، Jim. "US health worker monitored as DRC Ebola nears 600 cases" (بزبان انگریزی). CIDRAP. اخذ شدہ بتاریخ 23 جنوری 2019. 
  16. (en میں) End of Ebola transmission in Guinea. WHO Regional Office for Africa. https://afro.who.int/news/end-ebola-transmission-guinea۔ اخذ کردہ بتاریخ 30 October 2018. 
  17. "Update: Mali confirms new case of Ebola, locks down Bamako clinic". Reuters. 12 November 2014. اخذ شدہ بتاریخ 15 نومبر 2014. 
  18. (PDF) Ebola response roadmap situation report update. WHO. 7 November 2014. http://apps.who.int/iris/bitstream/10665/137592/1/roadmapsitrep_7Nov2014_eng.pdf?ua=1۔ اخذ کردہ بتاریخ 7 November 2014. 
  19. "Ebola virus disease – Italy". WHO. اخذ شدہ بتاریخ 28 اکتوبر 2016. 
  20. "Una enfermera que atendió al misionero fallecido García Viejo, contagiada de ébola". El Mundo (بزبان الإسبانية). 6 October 2014. اخذ شدہ بتاریخ 06 اکتوبر 2014. 
  21. (PDF) Ebola outbreak situation report. WHO. 8 October 2014. http://apps.who.int/iris/bitstream/10665/136020/1/roadmapsitrep_8Oct2014_eng.pdf?ua=1۔ اخذ کردہ بتاریخ 15 October 2014.