محمود حسن گنگوہی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

فقیہ الامت مفتی

محمود حسن گنگوہی
گیارہویں صدر مفتی دار العلوم دیوبند
عہدہ سنبھالا
1965 سے 1981 تک
پیشرومہدی حسن شاہجہاں پوری
جانشیننظام الدین اعظمی
لقبمفتی اعظم، دار العلوم دیوبند[1]
ذاتی
پیدائش1907
وفات2 ستمبر 1996
مدفنایلس برگ، جرمسٹن، جنوبی افریقا
مذہباسلام
نسلیتبھارتی
فرقہسنی
فقہی مسلکحنفی
تحریکدیوبندی
مرتبہ
استاذمولانا حسین احمد مدنی، مولانا محمد زکریا کاندھلوی

محمود حسن گنگوہی (1325ھ-1416ھ م 1907ء1996ء) ایک بھارتی مفتی و عالمِ دین اور دار العلوم دیوبند اور مظاہر العلوم سہارنپور کے سابق ​​صدر مفتی تھے۔ وہ شیخ الحدیث محمد زکریا کاندھلوی کے خاص شاگرد تھے۔[2]

ابتدائی و پیشہ ورانہ زندگی[ترمیم]

آپ جولائی 1907ء میں گنگوہ (بھارت) میں پیدا ہوئے اور آپ کی تعلیم مظاہر العلوم سہارنپور اور دار العلوم دیوبند میں ہوئی۔ بعد میں آپ نے سہارنپور اور دیوبند میں دار الافتاء کی خدمات انجام دیں۔[3] آپ کا مجموعۂ فتاوی فتاوی محمودیہ 32 جلدوں پر مشتمل ہے اور یہ حنفی فقہ کے فتاوی پر مشہور کتاب ہے۔

آپ شیخ الحدیث محمد زکریا کاندھلوی کے ایک مجاز و ممتاز شاگرد تھے۔[2]

آپ تقریباً 14 سال جامع العلوم کانپور کے ناظم رہے اور آپ نے اپنی زندگی کے آخری مرحلہ میں دار العلوم دیوبند کے صدر مفتی کی حیثیت سے فتوی نویسی کی خدمات انجام دیں۔[3]

وفات[ترمیم]

آپ کا انتقال جنوبی افریقا میں ہوا جہاں آپ 18 ربیع الاخری 1417ھ بمطابق 2 ستمبر 1996ء کو مولانا ابراہیم پانڈور کی دعوت پر دورہ پر تھے اور ہیزیل ڈین سے تقریباً 4 کلومیٹر دور ایلس برگ میں سپرد خاک کیے گئے۔[4]

مشہور تلامذہ[ترمیم]

آپ کے قابل ذکر تلامذہ میں ابو القاسم نعمانی ، رحمت اللہ میر قاسمی اور ابراہیم ڈیسائی شامل ہیں۔[2]

تصنیفی خدمات[ترمیم]

  • ابن جریر طبری کی کتاب سیرتِ سید البشر کا اردو ترجمہ
  • الفھرس الحاوي لحاشية الطحاوي
  • منازلِ علم و علمِ نافع
  • ملفوظاتِ فقیہ الامت (2 جلدیں)
  • خطباتِ محمود/مواعظِ فقیہ الامت (5 جلدیں)
  • فتاوی محمودیہ (32 جلدیں)
  • حدود ِ اختلاف[5]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Other Great Ulama of Deoband (Hazrat e Mashaikh)". dud.edu.in. اخذ شدہ بتاریخ 25 اپریل 2020. 
  2. ^ ا ب پ Hadhrat Mufti Mahmood HasanGangohi - His Life And Works. Talimi Board. صفحہ 67. اخذ شدہ بتاریخ 16 اپریل 2020. 
  3. ^ ا ب سید محبوب رضوی. History of The Dar al-Ulum Deoband (Volume 2) (PDF). ترجمہ بذریعہ Prof. Murtaz Husain F. Quraishi (ایڈیشن 1981). Idara-e-Ehtemam, دار العلوم دیوبند. صفحہ 194. اخذ شدہ بتاریخ 25 اپریل 2020. 
  4. ڈاکٹر مولانا محمد اللّٰہ قاسمی. دار العلوم دیوبند کی جامع و مختصر تاریخ. شیخ الہند اکیڈمی، دار العلوم دیوبند. صفحہ 654. 
  5. Boundaries of Differences (بزبان انگریزی). Idara Impex, Jamia Nagar, New Delhi. صفحہ 184. ISBN 81-7101--683-9. 

بیرونی روابط[ترمیم]

مذہبی القاب
ماقبل 
مہدی حسن شاہ جہاں پوری
دار العلوم دیوبند کے 11ویں صدر مفتی
23 ستمبر 1965 - 1970
مابعد 
نظام الدین اعظمی