ملک التونیا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

ملک اختیار الدین التونیا سلطنت مملوک کے دوران سلطنت دہلی کے زیر نگین علاقہ بھٹنڈہ (پنجاب) کا گورنر تھا- وہ دہلی کی سلطانہ اور اپنے بچپن کی دوست رضیہ سلطانہ کے خلاف بغاوت میں کامیاب ہوا- موت سے بچنے کے لیے رضیہ سلطانہ نے ملک التونیا سے شادی کرنے کے لیے آمادہ ہو گئی تھی- التونیا اور رضیہ نے سلطنت پر قبضہ کرنے کے لیے رضیہ کے بھائی معز الدین بہرام شاہ سے جنگ کی جس میں انہیں ہتھیار ڈالنے پڑے اسی جنگ میں یہ دونوں کیتھل، ہریانہ کے قریب 14 اکتوبر (بعض وقائع نگاروں کے مطابق 13 اکتوبر) 1240ء میں مارے گئے-[1]

حوالہ جات[ترمیم]