ملیکا سارا بھائی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ملیکا سارا بھائی
Mallika-sarabhai-before-performance-saarang-2011-iit-madras.jpg
 

معلومات شخصیت
پیدائش 9 مئی 1954 (67 سال)  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
احمد آباد[1]  ویکی ڈیٹا پر (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of India.svg بھارت  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
والدہ مرنالنی سارابھائی[2]  ویکی ڈیٹا پر (P25) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ اداکارہ اور ادکارہ[3]،  گلو کارہ،  کارکن انسانی حقوق[4]،  رقاصہ[3]  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
اعزازات
سنگیت ناٹک اکادمی ایوارڈ  (2000)[5]
IND Padma Bhushan BAR.png پدم بھوشن 
Ordre des Arts et des Lettres Chevalier ribbon.svg نشان فنون و آداب (فرانس)  ویکی ڈیٹا پر (P166) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحہ  ویکی ڈیٹا پر (P345) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

ملیکا سارا بھائی (پیدائش 9 مئی 1954) گجرات ، ہندوستان سے تعلق رکھنے والی کلاسیکی ڈانسر اور اداکارہ ہیں۔ کلاسیکی رقاصہ مرینالینی سارہ بھائی اور خلائی سائنسدان وکرم سرا بھائی کی بیٹی ہیں ملیکا ایک ماہر بھراناتیم ڈانسر [6] اور اداکارہ ہیں جنہوں نے معاشرتی تبدیلی کے لئے فنون کو استعمال کرنے میں مہارت حاصل کی ہے۔

ابتدائی زندگی[ترمیم]

ملیکا سارا بھائی کی پیدائش بھارتی شہر گجرات ، احمد آباد میں وکرم سارہ بھائی اور مسرینالینی سارہ بھائی کے گھر میں ہوئی ۔انہوں نے 1974 میں آئی آئی ایم احمد آباد سے ایم بی اے اور 1976 میں گجرات یونیورسٹی سے تنظیمی طرز عمل میں ڈاکٹریٹ کی سند حاصل کی۔ [7] وہ ایک مشہور کوریوگرافر اور ڈانسر ہیں اور کچھ ہندی ، ملیالم ، گجراتی اور بین الاقوامی فلموں میں بھی کام کرچکی ہیں۔ [8]

کارکردگی[ترمیم]

انہوں نے 1975 میں ریلیز ہونے والی ہمالیہ سیےاونچا کے نام سے ہندی فلم میں کام کیا۔ وہ فلم جس میں سنیل دت نےہیرو کی حیثیت سے کام کیا یہ فلم باکس آفس پر بہت اچھا کام نہیں کرسکی۔ 1986 میں انہوں نے باسو چیٹرجی ہدایت کار فلم میں شیشہ کے سپر اسٹار میتھون چکرورتی کے برخلاف کام کیا۔

ذاتی زندگی[ترمیم]

ملیکا نے 1982 میں بپن شاہ سے شادی کی۔ ان کے دو بچے ہیں ، ایک بیٹا ، رونت اور ایک بیٹی اناہیٹا۔ [9] بپن اور ملیکا نے 1984 میں میپین پبلشنگ کی مشترکہ بنیاد رکھی اور اس کو مل کر چلاتے ہیں۔ [10]

گیلری[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. https://www.webindia123.com/dances/dancer/Mallika_Sarabhai.htm — اخذ شدہ بتاریخ: 3 مارچ 2018
  2. http://www.culturalindia.net/indian-dance/dancers/mallika-sarabhai.html — اخذ شدہ بتاریخ: 3 مارچ 2018
  3. https://www.britannica.com/biography/Mallika-Sarabhai — اخذ شدہ بتاریخ: 3 مارچ 2018
  4. http://ahmedabadmirror.indiatimes.com/ahmedabad/others//articleshow/50674594.cms — اخذ شدہ بتاریخ: 3 مارچ 2018
  5. http://www.governancenow.com/news/regular-story/in-conversation-dancer-mallika-sarabhai — اخذ شدہ بتاریخ: 3 مارچ 2018
  6. International encyclopedia of dance: a project of Dance Perspectives Foundation, Inc
  7. indobase Dances of India
  8. "The Hindu : National : Mallika Sarabhai to contest against Advani". 23 مارچ 2009 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 23 فروری 2021. 
  9. Narthaki – you gateway to world of Indian Dance
  10. The Tribune – Magazine section – Saturday Extra