مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی
Maulana Azad National Urdu University Logo.png
قسم [یونیورسٹی
قیام 1998
چانسلر جناب فیروز بخت احمد
وائس چانسلر ڈاکٹر محمداسلم پرویز
مقام حیدر آباد ، تلنگانہ ، بهارت، بھارت
کیمپس Urban
وابستگیاں یونیورسٹی گرانٹ کمیشن
ویب سائٹ www.manuu.ac.in

مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی (Maulana Azad National Urdu University) کا قیام ہندوستانی پارلیمنٹ کے ایک ایکٹ کے تحت 1998ء میں عمل میں آیا۔ اس یونیورسٹی کے قیام کا مقصداردو زبان کی ترقی اور فروغ تھا۔ نیز فاصلاتی و روایتی طرز میں اردو ذریعہ تعلیم میں تکنیکی و پیشہ ورانہ تعلیم فراہم کرنا تھا۔ اس کا صدر مقام حیدرآباد ہے۔ دو سو ایکٹر پر پھیلا ہوا ہے۔ اس میں پورے ہندوستان سے طلبہ و اساتذہ آتے ہیں۔ وہ تمام شعبہ علم کے اندر معیاری اردو تعلیم کے ذریعہ مہارت پیدا کر کے اپنی طرف لوگوں کی توجہ مبذول کرا رہے ہیں۔

تدریس کا ذریع[ترمیم]

میڈیم آف انسٹرکشن اردو ہوگا

کیمپس[ترمیم]

یہ یونیورسٹی پارلیمنٹ کے ایک ایکٹ کے ذریعہ جنوری 1998 میں قائم کی گئی تھی ، جس میں اردو زبان کے فروغ و ترقی اور روایتی اور فاصلاتی طریقوں کے ذریعہ اردو میڈیم میں پیشہ ورانہ اور تکنیکی تعلیم کے حصول کے لیے ایک آل انڈیا کا دائرہ اختیار تھا۔ یونیورسٹی کو قومی تشخیص اور ایکریڈیشن کونسل (این اے اے سی) کے ذریعہ "اے" گریڈ سے نوازا گیا ہے۔ [2] یونیورسٹی کا ہیڈ کوارٹر گچیبوولی ، حیدرآباد کے وسط میں واقع ہے اور 200 ایکڑ پر پھیلا ہویا ہے۔ یونیورسٹی کے طلبہ اور عملے پورے ہندوستان سے آتے ہیں۔ وہ علم کے تمام شعبوں میں معیاری اردو تعلیم میں سربلندی کے عہد سے ان کی طرف راغب ہیں۔

یونیورسٹی کا لکھنؤ میں ایک سیٹلائٹ کیمپس اور سری نگر (جموں و کشمیر) میں ایک کیمپس ہے۔ بھوپال ، دربھنگہ ، سرینگر ، اورنگ آباد ، سنبھل ، آسنسول ، نوح ، بیدر میں اساتذہ تعلیم کے ایسے کالج ہیں جو اسکول آف ایجوکیشن اینڈ ٹریننگ کے ذریعہ رہنمائی کرتے ہیں۔ یونیورسٹی بنگلورو ، دربھنگا اور حیدرآباد میں تین پولی ٹیکنک کالجز چلاتی ہے۔ بنگلورو ، دربھنگا اور حیدرآباد میں تین آئی ٹی آئی۔ اور دربھنگہ ، حیدرآباد اور نوح (میوات) میں تین اردو ماڈل اسکول۔

ملک میں اردو بولنے والے آبادی والے کلسٹروں کی تعلیمی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے ، MANUU کے ڈائریکٹوریٹ آف ڈسٹنس ایجوکیشن نے 11 مختلف ریاستوں میں نو علاقائی مراکز اور پانچ سب علاقائی مراکز کھولے ہیں۔ مزید یہ کہ نظامت کے ملک بھر میں 159 اسٹڈی سنٹرز ہیں

یونیورسٹی کے مقاصد[ترمیم]

  1. اردو زبان کا فروغ و ترقی
  2. اردو ذریعہ تعلیم کے ذریعہ پیشہ وارانہ اور تکنیکی مضامین میں تعلیم و تربیت بہم پہنچانا
  3. اردو ذریعہ تعلمیم کے ذریعہ اعلیٰ تعلیم کے خواہش مند زیادہ سے زیادہ افراد روایتی اور فاصلاتی طرز سے تعلیم کے مواقع فراہم کرنا اور
  4. تعلیم نسواں پر خصوصی توجہ مرکوز کرنا۔

یونیورسٹی کیمپس میں اس وقت سات اسکول ہیں جو مندرجہ ذیل ہیں:

  1. اسکول برائے السنہ، لسانیات و ہندوستانیات
  2. اسکول برائے کامرس و تجارتی انتظامہ
  3. اسکول برائے تعلیم و تربیت
  4. اسکول برائے ترسیل عامہ و صحافت
  5. اسکول برائے فنون و سماجی علوم
  6. اسکول برائے سائنس
  7. اسکول برائے کمپیوٹر سائنس اور انفارمیشن ٹکنالوجی

ان سات اسکولوں کے تحت 13 شعبہ چل رہے ہیں جو ماسٹر پروگرام کے علاوہ ایم۔ فل اور پی۔ ایچ ڈی سطح پر ریسرچ پروگرام بھی مہیا کر رہے ہیں۔ ان اسکولوں سے ان بڑی تعداد ایم۔ فل کی ڈگری حاصل کر رہے ہیں۔ ان تمام اسکولوں کا مقصد یہ ہے کہ علم اور ترقی یافتہ علم کے میدانوں میں تحقیق اور اطلاق کے ذریعہ نئی تحقیق کی جائے۔ یونیورسٹی کے مقاصد

چانسلر[ترمیم]

فیروز بخت احمد کو 17 مئی 2018 کو مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی کا چانسلر مقرر کیا گیا تھا۔ [1]

میموریل لیکچر[ترمیم]

نائب صدر حامد انصاری مولانا آزاد اردو یونیورسٹی میں پہلا محمد قلی قطب شاہ یادگار لیکچر پیش کر چکے ہیں۔

سہولیات[ترمیم]

اس یونیورسٹی میں مولانا آزاد لائبریری ہے ، جو 1998 میں قائم کی گئی تھی ۔ لائبریری اردو ، انگریزی میں 129 ، ہندی میں نو اور اردو ، انگریزی ، تلگو اور ہندی کے 13 اخباروں کے علاوہ 40 مشہور رسائل کی رکنیت رکھتی ہے۔