مہندر یادیو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
مہندر یادیو
معلومات شخصیت
تاریخ پیدائش سنہ 1949  ویکی ڈیٹا پر (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 5 جولا‎ئی 2020 (70–71 سال)[1]  ویکی ڈیٹا پر (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
نئی دہلی  ویکی ڈیٹا پر (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجہ وفات کووڈ-19  ویکی ڈیٹا پر (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
طرز وفات طبعی موت  ویکی ڈیٹا پر (P1196) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of India.svg بھارت  ویکی ڈیٹا پر (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
جماعت انڈین نیشنل کانگریس  ویکی ڈیٹا پر (P102) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان ہندی  ویکی ڈیٹا پر (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

مہندر یادیو (وفات جولائی 5, 2020) ایک انڈین نیشنل کانگریس کے سیاست دان تھے۔ جو دہلی کے حلقے پالم سے 1998ء میں ایم ایل اے منتخب ہوئے۔ یادیو کو 1984ء کے سکھ مخالف فسادات [2] کے ایک مقدمے میں مجرم قرار دیا گیا تھا اور دس سال کی سزا سنائی گئی تھی۔[3]

یادیو کی وفات 5 جولائی 2020ء کو بھارت میں کورونا وائرس کی وبا کووڈ-19 سے ہوا۔ ان کا کورونا وائر کے مرض کا نتیجہ 26 جون 26 2020ء کو مثبت آيا تھا[4]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. https://indianexpress.com/article/cities/delhi/former-delhi-mla-and-convict-in-1984-anti-sikh-riots-case-dies-of-covid-19-6491318/ — اخذ شدہ بتاریخ: 6 جولا‎ئی 2020
  2. Nair، Harish (9 مئی، 2013). "3 sentenced to life in jail in '84 riots". ہندوستان ٹائمز. 
  3. "Anti-Sikh riots: 2 convicts surrender". دکن ہیرالڈ. دسمبر 13, 2018. 
  4. "Former Delhi MLA and convict in 1984 anti-Sikh riots case dies of Covid-19". دی انڈین ایکسپریس. جولائی 5, 2020.