میکسین فیلڈمین

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
میکسین فیلڈمین
Maxine Feldman.jpg

معلومات شخصیت
پیدائش 26 دسمبر 1945(1945-12-26)
بروکلن، نیویارک شہر
وفات 17 اگست 2007(2007-80-17) (عمر  61 سال)
البیکرکی، نیو میکسیکو
قومیت امریکن
عملی زندگی
مادر علمی ایل کمینو کالج
پیشہ گائک-گیت کار، کمیڈیئن
وجہ شہرت خواتین کی موسیقی

میکسین ایڈیل فیلڈمین ("میکس") (26 دسمبر، 1945 – 17 اگست، 2007) ایک امریکی لوک گلوکارہ، شاعرہ، کامیڈیئن [1][2][3] اور خواتین گلوکاری کی علمبردار تھی ۔ فیلڈمین کا گانا "انگری اٹھیس" پہلی بار مئی 1969 میں پیش ہوا اور پہلی بار 1972 میں ریکارڈ کیا گیا[4][5] پہلی بار عام طور پر لیسبیئن گیت ریلیز ہوا،[6] [7][8] فیلڈمین کی شناخت ایک "بزرگ یہودی قصاب ہم جنس پرست" کے طور پر ہوئی۔ [9][10]

ہیلن تھورنٹن کے بقول بعد کے سالوں میں فیلڈمین نے صنف سیال کی شناخت قبول کرلی۔ تھورنٹن نے اپنے ساتھی کی شناخت "دونوں / اور" کے بطور "دونوں / یا" کی حیثیت سے بیان کی۔ فیلڈمین صنف کے لیبل میں سے کسی کے ساتھ راحت بخش تھی اور مردوں کے لباس اسٹیج پر پہنتی تھی[10]

ابتدائی زندگی[ترمیم]

فیلڈمین کی پیدائش 26 دسمبر، 1945 کو برکلن، نیو یارک میں ہوئی۔[11]

1968 میں ، فیلڈمین مینہٹن اور پھر لاس اینجلس چلی گئیں۔فیلڈمین نے لاس اینجلس کاؤنٹی کے ایل کیمنو کالج میں حصہ لیا یہاں کیمپس کی خواتین کی مرکز کی تلاش میں مدد کی۔ [11]

کیریئر[ترمیم]

اسٹیل وال فسادات سے قبل ، فیلڈمین نے مئی 1969 میں شعور اجاگر کرنے والا گانا "اینگری اٹھیس" لکھا تھا۔ ہیریسن اینڈ ٹائلر پروڈکشن نے جنوری 1972 میں "اینگری ایٹھیس" کا ریکارڈ تیار کیا تھا[12]

موت[ترمیم]

فیلڈمین ، جن کے پاس صحت کی انشورینس نہیں تھی ، 1994 میں علیل ہوگئیں اور 17 اگست 2007 کو نیو میکسیکو کے البوکرک میں 61 سال کی عمر میں انتقال کر گئیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Zimmerman، Bonnie، ویکی نویس (اگست 21, 2013). Encyclopedia of Lesbian Histories and Cultures. Routledge. صفحہ 185. 
  2. Keetley، Dawn (فروری 22, 2005). Public Women, Public Words: A Documentary History of American Feminism, Volume 2. Rowman & Littlefield. صفحہ 326. 
  3. Mankiller، Wilma P.؛ Mink، Gwendolyn؛ Navarro، Marysa؛ Smith، Barbara؛ Steinem، Gloria، ویکی نویس (1999). The Reader's Companion to U.S. Women's History. Houghton Mifflin Harcourt. صفحہ 340. 
  4. Johnson، Gail؛ Keith، Michael C (دسمبر 18, 2014). Queer Airwaves: The Story of Gay and Lesbian Broadcasting: The Story of Gay and Lesbian Broadcasting. Routledge. 
  5. Warner، Sara (اکتوبر 26, 2012). Acts of Gaiety: LGBT Performance and the Politics of Pleasure. University of Michigan Press. صفحہ 139. ISBN 978-0-472-03567-0. 
  6. Haggerty، George؛ Zimmerman، Bonnie، ویکی نویس (ستمبر 2, 2003). "Music, women's". Encyclopedia of Lesbian and Gay Histories and Cultures. Taylor & Francis. صفحہ 522. 
  7. Vaid، Urvashi (نومبر 18, 1995). Virtual Equality: The Mainstreaming of Gay and Lesbian Liberation. Knopf Doubleday Publishing Group. 
  8. Morris، Bonnie J. (جولائی 29, 2016). The Disappearing L: Erasure of Lesbian Spaces and Culture. SUNY Press. صفحہ 27. 
  9. Anderson، Jamie (2008). "Maxine Feldman Folk Musician, Lesbian Activist 1945–2007". Sing Out! The Folk Song Magazine. Jewish Women's Archive. 
  10. ^ ا ب Sullivan، Denise (2011). Keep on Pushing: Black Power Music from Blues to Hip-hop. Chicago Review Press. ISBN 978-1-55652-817-0. 
  11. ^ ا ب Cullen، Frank (2007). "Maxine Feldman". Vaudeville, Old & New: An Encyclopedia of Variety Performers in America. New York [u.a.]: Routledge. صفحات 372–375. ISBN 978-0-415-93853-2. 
  12. Mockus، Martha (2000). "Music, Women's". Lesbian Histories and Cultures: An Encyclopedia, Volume 1. New York: Garland. صفحہ 522. ISBN 978-0-8153-1920-7.