نائیجیریائی شیعوں کا 2015 کا قتل عام

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
نائجیریائی شیعوں کا 2015 کا قتل عام
Zaria is located in نائجیریا
Zaria
Zaria
مقامزاریا, صوبہ کادونا، نائیجیریا
متناسقات11°04′N 7°42′E / 11.067°N 7.700°E / 11.067; 7.700متناسقات: 11°04′N 7°42′E / 11.067°N 7.700°E / 11.067; 7.700
تاریخ12–سانچہ:تاریخ پایان
نشانہنائیجیریا میں شیعت، Islamic Movement of Nigeria
ہلاکتیں[1]-100000+[2][3]
مرتکبیننائیجیریائی فوجی


نائیجیریائی شیعوں کا 2015 کا قتل عام ایک واقعہ ہے جو 12 دسمبر 2015 کو پیش آیا تھا۔[4] [5] نائجیریا کے متعدد فوجیوں نے زاریا شیعوں پر حملہ کر کے انھیں ہلاک کر دیا۔ [6] حملے نے نائیجیریا میں بقیۃ اللہ حسینیہ کو تباہ کر دیا۔ حملے کے دوران اسلامک موومنٹ آف نائجیریا (IMN) کے کئی سینئر ارکان ہلاک ہوئے، جن میں شیخ محمد طوری ، ڈاکٹر مصطفیٰ سعید (بالترتیب شیخ زکزاکی کے نائب اور معالج)، ابراہیم عثمان اور جیمی گلیما شامل ہیں۔ [1]آرکائیو شدہ (Date missing) بذریعہ ahtribune.com (Error: unknown archive URL) کے ذریعے بایگانی‌شده

ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق 15 دسمبر کو انسانی حقوق کے کارکنوں نے نائجیریا کی فوج پر سینکڑوں افراد کے قتل کا الزام لگایا۔ مرنے والوں کی تعداد، جس کا تخمینہ تقریباً 100,000 ہے، کو زاریا میں "مسلم قتل عام" کہا جاتا ہے۔ [7]

شیخ ابراہیم زکزاکی کا حال[ترمیم]

اسلامی تحریک نائیجیریا کے رہنما ابراہیم زکزاکی کے زخمی اور قید ہونے کی غیر مصدقہ اطلاعات ہیں۔ [8]

حملے کی وجوہات[ترمیم]

نائیجیریا کی فوج نے اس حملے کا الزام نائیجیرین اسلامک موومنٹ کے حامیوں کی طرف سے زاریا کے علاقے میں نائیجیرین آرمی چیف آف سٹاف کو قتل کرنے کی کوشش پر لگایا۔ [9] اسلامک موومنٹ آف نائجیریا (IMN) نے ان الزامات کی تردید کی ہے اور فوج کی مذمت کی ہے۔ [10]

بعض کا یہ بھی خیال ہے کہ اس واقعہ کی وجہ زاریا اور ملک کے مختلف شہروں میں نائیجیرین مسلمانوں کی طرف سے سالانہ اربعین کی تقریب کا انعقاد تھا۔ [11]

رد عمل[ترمیم]

  • برطانوی اسلامک ہیومن رائٹس کمیشن کے سربراہ مسعود شجرہ نے شیخ زکزاکی کی صورت حال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے نائجیریا میں مسلمانوں کے قتل کو منصوبہ بند قرار دیا۔ [12]
  • حسن روحانی نے نائجیریا کے صدر محمدو بوہاری کے ساتھ بات چیت میں شیعوں کے قتل کی تحقیقات اور زخمیوں کی صورت حال کی تحقیقات کے لیے ایک فیکٹ فائنڈنگ ٹیم کی ضرورت پر زور دیا۔
  • نائیجیریا کے مسلمانوں پر حملے کی مذمت کرنے والوں میں لطف اللہ صافی گولپائیگانی ، محمد علی علوی گورگانی اور حسین نوری ہمدانی شامل تھے۔ [13]
  • نائیجیریا کی مسلم کمیونٹی کے ارکان اور ان کے حامیوں نے نائیجیریا اور لندن میں اپنے رہنما کی رہائی کے لیے ریلیاں نکالیں۔ [14]
  • اسلامک موومنٹ آف نائجیریا (IMN) کو مبینہ طور پر بند کر دیا گیا ہے۔
  • نائجیریا کی پارلیمنٹ کے اسپیکر کے نام ایک پیغام میں علی لاریجانی نے اس واقعے کو ایک حسابی سازش قرار دیا۔ [15]

ذرائع[ترمیم]

  1. "Iran summons Nigerian envoy over attack on Shia Muslims"۔ PressTV۔ 14 December 2015 
  2. "Nigeria military killed hundreds of Shias, activists say" 
  3. "Nigerian army kills several Shias during clashes",presstv,12 December 2015
  4. "Nigerian army kills several Shias during clashes",presstv,12 December 2015
  5. "Military, Shiite Muslims clash in northern Nigeria",Yahoo News,14 December 2015
  6. "Nigeria military killed hundreds of Shias, activists say" 
  7. ""Army kills senior Shia cleric in northwestern Nigeria"" (بزبان انگلیسی)۔ turkishweekly.net۔ ۲۲ دسامبر ۲۰۱۵ میں اصل |archive-url= بحاجة لـ |url= (معاونت) سے آرکائیو شدہ 
  8. ""Nigeria: Scores feared dead in raid at Shiite leader Ibrahim Zakzaky's home "" (بزبان انگلیسی)۔ INTERNATIONAL BUSINESS TIMES 
  9. "Nigerian army kills several Shias during clashes"۔ PressTV۔ 12 December 2015 
  10. ""Zakzaky's deputy, wife killed "" (بزبان انگلیسی)۔ Daily Trust۔ ۱۵ دسامبر ۲۰۱۵ میں اصل |archive-url= بحاجة لـ |url= (معاونت) سے آرکائیو شدہ 
  11. "ابراز نگرانی از وضعیت شیخ زکزکی /کشتار مسلمانان در نیجریه برنامه‌ریزی شده بود" (بزبان فارسی)۔ خبرگزاری ایرنا 
  12. "شیخ زکزاکی باید فوری مداوا و آزاد شود/خون این افراد مظلوم دامنگیر حکومت نیجریه می‌شود" (بزبان فارسی)۔ خبرگزاری فارس 
  13. ""Nigerian soldiers arrest top Shia cleric after house raid "" (بزبان انگلیسی)۔ Daily Messenger۔ ۲۲ دسامبر ۲۰۱۵ میں اصل |archive-url= بحاجة لـ |url= (معاونت) سے آرکائیو شدہ 
  14. "حادثه دلخراش حمله به شیعیان نیجریه برای ایجاد تفرقه بین مسلمانان و توطئه‌ای حساب شده است" (بزبان فارسی)۔ خبرگزاری فارس 

انگریزی ویکیپیڈیا کے لیے صارف کا تعاون

متعلقہ مضامین[ترمیم]

  • نائجیرین شیعہ

بیرونی روابط[ترمیم]