نا پیرو سوریا نا الو انڈیا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
نا پیرو سوریا نا الو انڈیا
تیلگو: నా పేరు సూర్య నా ఇల్లు ఇండియా
Naa Peru Surya, Naa Illu India.jpg
اشاعت پوسٹر
ہدایت کار وکنٹھم ومسی
پروڈیوسر سریدھار لگدپتی
بنی واس
کے ناگیندرا بابو
کہانی وکنٹھم ومسی
ستارے اللو ارجن
بومن ایرانی
ارجن سارجہ
انو امانیل
سرتھکمار
موسیقی وشال-شیکھر
سنیماگرافی رجیو روی
ایڈیٹر کوٹاگری وینکٹیسورا رائو
پروڈکشن
کمپنی
رامالکشمی سینے کریشنز
تاریخ اشاعت
  • 4 مئی 2018 (2018-05-04) (دنیا بھر میں)[1]

  • 7 ستمبر 2018 (2018-09-07) (ہندی ورژن)[2]
دورانیہ
168 منٹ
ملک بھارت
زبان تیلگو
باکس آفس ₹120 تا 130₹ کروڑ

نا پیرو سوریا نا الو انڈیا (میرا نام سوریا ہے اور بھارت میرا گھر ہے) 2018ء کی بھارتی تیلگو فلم ہے۔ اس فلم کے ہدایتکار وکنٹھم ومسی ہیں، جو اس فلم سے اپنی ہدایتکاری کے کیریئر کا آغاز کر رہے ہیں۔ اس سے پہلے وکنٹھم ومسی نے مشہور فلمز ریس گرم اور کک (تیلگو) کی کہانی لکھی۔ اس فلم کے ستارے اللو ارجن، انو امانیل، ارجن سارجہ، بومن ایرانی، سرتھکمار ہیں۔ ساتھی اداکاروں میں راؤ رمیش، پوسانی کرشنا مرالی، ٹھاکر انوپ سنگھ, سے کمار، پردیپ روت، ہریش عٹھامن ہیں۔ یہ فلم 4 مئی، 2018ء کو جاری ہوئی۔[3][4]

یہ فلم تمل میں "عن پیر سوریا عن وےدو انڈیا" اور ملیالم میں "عنٹے پیرو سوریا عنٹے وےدو انڈیا" کے نام سے ڈب کی گئی۔ اس فلم کو باکس آفس پر فلاپ قرار دیا گیا اور شائقین نے بھی اسے اچھے رویو نہیں دیے۔ اس فلم کا ہندی ورژن 7 ستمبر، 2018ء کو جاری ہوا۔

کردار[ترمیم]

  • اللو ارجن بطور سوریا
  • انو امانیل بطور ورشا
  • بومن ایرانی بطور کرنل سنجے شری واستو
  • راؤ رمیش بطور سوریا کا گاڈ فادر
  • ارجن سارجہ بطور پروفیسر راما کرشنم راجو
  • آر سرتھکمار بطور چھلا
  • ٹھاکر انوپ سنگھ بطور چھلا کا بیٹا
  • سئے کمار بطور مصطفی
  • پرادیپ روت بطور پی سی
  • ہریش عٹھمن بطور پی سی کا بھائی
  • وینیلا کشور بطور کشور
  • چروہسن بطور مصطفی کا باپ
  • ندھیا بطور ستیہ
  • پوسانی کرشنا مرالی بطور ورشا کا چچا
  • روی کلے بطور انسپیکٹر پرادیپ نیگی
  • کاسی وشواناتھ بطور ورشا کا باپ
  • ستیہ کرشنن بطور مصطفی کی بیوی
  • وکرم سہادیو بطور انور، مصطفی کا بیٹا
  • پربھاس سرینو بطور چھلا کا ساتھی
  • ڈینزل سمتھ بطور سیاست دان
  • ایلی اورام، خصوصی ظہور

تیاری[ترمیم]

یہ فلم وکھنٹم ومسی کی بطور ہدایتکار پہلی فلم ہے۔ اس سے پہلے انہوں نے ریس گرم اور کک (تیلگو) جیسی سپرہٹ فلموں کی کہانی لکھی۔ اللو ارجن، انو امانیل، بومن ایرانی، ارجن سارجہ اور سرتھکمار کو مرکزی کرداروں کے لیے چنا گیا۔ یورپی اداکارہ ایلی اورام نے ایک آئٹم نمبر میں اللو ارجن کے ساتھ رقص کیا۔

فلم کا ٹیزر 1 جنوری، 2018ء کو یوٹیوب پر جاری ہوا اور 29 گھنٹوں میں 1 کروڑ ویوز حاصل کیے۔[5]

اشاعت[ترمیم]

یہ فلم 4 مئی 2018ء کو تمل میں "عن پیر سوریا عن وےدو انڈیا"[6] اور ملیالم میں "عنٹے پیرو سوریا عنٹے وےدو انڈیا" کے ڈب ورژن کے ساتھ جاری کی گئی۔[7]

فلم کا ہندی ورژن سوریا:دی سولجر کے عنوان سے 7 ستمبر کو جاری ہوا۔

اس فلم کوشائقین نے ملے جلے رویوں کے بعد منفی رویے دیے۔ یہ اللو ارجن کی چھ ہٹ فلموں کے بعد پہلی فلاپ فلم ثابت ہوئی۔[8][9][10][11][12][13][14][15][16][17]

گانے[ترمیم]

گانوں کی فہرست
نمبر شمارعنوانگلوکارطوالت
1."سینیکا"وشال ڈڈلانی4:15
2."لور آلسو فائٹر آلسو"شیکھر روجیانی4:10
3."بیوٹیفل لو"ارمان ملک، چھئترا ایچ جی5:13
4."مایا"ارجیت سنگھ، رمیا3:54
5."ینییالو ینییالو"ملاویکا1:44
6."ارگا ارگا"موہن بھوگراج, راحل سپلیگنج3:49

بیرونی روابط[ترمیم]

نا پیرو سوریا نا الو انڈیا انٹرنیٹ مووی ڈیٹابیس (IMDb) پر

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Mahesh Babu's Bharat Ane Nanu and Allu Arjun's Naa Peru Surya Naa Illu India get new release dates"۔ The Indian Express۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 24 فروری 2018۔
  2. "Surya The Soldier Hindi Dubbed Full Movie - Theatrical Release Date Confirm"۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔
  3. "'En Peyar Surya En Veedu India' trailer: Allu Arjun hits it out of the park - Times of India"۔ The Times of India۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-03۔
  4. "Allu Arjun's Naa Peru Surya Naa Illu India will release in Tamil too, teaser to be unveiled soon"۔ The Indian Express (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-03۔
  5. "Allu Arjun's Naa Peru Surya Naa Illu India teaser sets a new record: 10 million views so far"۔ The Indian Express (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-01-19۔
  6. "'En Peyar Surya En Veedu India' trailer: Allu Arjun hits it out of the park - Times of India"۔ The Times of India۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-03۔
  7. "Allu Arjun's Naa Peru Surya Naa Illu India will release in Tamil too, teaser to be unveiled soon"۔ The Indian Express (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-03۔
  8. Shekhar H Hooli۔ "Naa Peru Surya review roundup: Critics are not happy with Vakkantham Vamsi's script"۔ International Business Times, India Edition۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  9. "Naa Peru Surya Naa Illu India Review & Rating {3.25/5}"۔ The Hans India (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  10. Naa Peru Surya Review: Idlebrain
  11. "Naa Peru Surya Naa Illu India Review"۔ Chitramala (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  12. "En Peyar Surya En Veedu India review. En Peyar Surya En Veedu India Tamil movie review, story, rating - IndiaGlitz.com"۔ IndiaGlitz.com۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  13. "Allu Arjun, Naa Peru Surya, Naa Peru Surya Rating, Naa Peru Surya Review, Naa Peru Surya Telugu Review, Vakkantham Vamsi"۔ greatandhra.com۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  14. Naa Peru Surya: Naa Illu India Review {2.5/5}: NPS is a film that is confused as to which direction it wants to take، اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04
  15. "Naa Peru Surya Naa Illu India Movie Review , Rating , Public Talk"۔ Telugu360.com (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  16. "Naa Peru Surya Telugu Movie Review, Rating"۔ APHerald [Andhra Pradesh Herald] (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔
  17. "Naa Peru Surya movie review: This Allu Arjun starrer is a coming of age drama gone wrong"۔ www.hindustantimes.com/ (انگریزی زبان میں)۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-05-04۔