نرگس (پاکستانی اداکارہ)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ضد ابہام صفحات کے لیے معاونت زیر نظر مضمون پاکستانی اداکارہ کے بارے میں ہے۔ بھارتی اداکارہ کے لیے نرگس دیکھیے۔
نرگس
نرگس
نرگس (پاکستانی اداکارہ)

معلومات شخصیت
پیدائش 12 اگست 1974 (45 سال)  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
لاہور  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام پیدائش (P19) ویکی ڈیٹا پر
رہائش لاہور  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں رہائش (P551) ویکی ڈیٹا پر
قومیت Flag of Pakistan.svg پاکستان
بہن/بھائی
عملی زندگی
پیشہ فلمی اداکارہ، رقاصہ
IMDb logo.svg
IMDB پر صفحات  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں آئی ایم ڈی بی - آئی ڈی (P345) ویکی ڈیٹا پر

نرگس پاکستان کی فلمی اور سٹیج اداکارہ اور رقاصہ ہیں۔ سٹیج پر اپنے متنازع رقص اور پر اسرار ذاتی زندگی کی وجہ سے مشہور ہیں۔ معروف ساؤنڈ ریکارڈسٹ ادریس بٹ کی بیٹی ہیں، وہ سیالکوٹ کے مشہور بٹ خاندان سے ہیں , انکی والدہ عارفوالہ کے قصاب خاندان سے ہے جبکہ ان کی والدہ بلو بھی فلموں میں ہیروئین رہ چکی ہیں اور ان کے کریڈٹ میں بھی متعدد ہٹ فلمیں ہیں۔ وہ بچپن میں اپنی والدہ کے ساتھ فلم سٹوڈیو جایا کرتی تھیں۔ ان حالات میں ان کے لیے فلموں میں دلچسپی لینا ایک لازی امر تھا۔

پہلی فلم[ترمیم]

انہیں 1992ء میں فلم ناگن سپیرا میں ہیروئین کے رول کی پیش کش ہوئی جو انہوں نے قبول کر لی۔ اس فلم میں افضل خان عرف جان ریمبو ان کے مقابلے میں ہیرو تھے۔ بعد میں انہوں نے رانی بیٹی راج کریگی جنت، سالا بگڑا جائے، عروسہ، لیلیٰ، آج کی لڑکی، انسانیت، اولاد کی قسم، وارث، میڈم رانی، دشمن زندہ رہے، دیور دیوانے، دنیا دیکھے گی، چلتی کا نام گاڑی، کرسی اور قانون، کڑی منڈا راضی، چوریاں، لونگ دا لشکارا، کندن اور یار چن ورگا جیسی فلموں میں کام کیا۔

نرگس نے اب تک سو سے زائد فلموں میں کام کیا ہے۔ سید نور کی فلم چوڑیاں میں نرگس پر بارش میں پکچرائز کیا ہوا گانا اس قدر مقبول ہوا کہ اسٹیج کے گلوکار اپنے مکالموں میں اس کا اب تک حوالہ دیتے ہیں۔ جب نرگس فلم انڈسٹری میں وارد ہوئی تو اس وقت وہاں انجمن اور ریما کا راج تھا۔ تاہم نرگس کی اصل حریف ریما تھیں۔

ذاتی زندگی[ترمیم]

اپنی زندگی کے چند غلط فیصلے انہیں مہنگے پڑے اور وہ سٹیج ڈرامے تک محدود ہو کر رہ گئیں۔ ان کی زندگی کا بدترین دور پولیس انسپکٹر عابد باکسر کے ساتھ مبینہ وابستگی کا دور تھا۔ اس مبینہ دوستی کا انجام اس وقت ہوا جب عابد باکسر نے ایک رات نرگس پر شدید تشدد کیا اور اپنے تیز دھار چاقو سے ان کے سر کے بال مونڈ دیے۔ اس واقعے کے بعد نرگس نے مبینہ طور عابد باکسر کے خوف کی وجہ سے کچھ عرصہ کے لیے ملک چھوڑ دیا۔

وہ 2003ء میں کینیڈا میں ڈیڑھ سال گزارے کے بعد پاکستان واپس آئیں لیکن گوجرانوالہ میں ایک شو کے دوران انہیں پولیس نے حراست میں لے لیا اور ان پر عریانی اور لچر ڈانس کا الزام لگا کر حوالات میں بھیج دیا گیا۔

سٹیج[ترمیم]

نرگس فلم کے ساتھ ساتھ سٹیج ڈراموں میں اداکاری کر رہی ہیں۔ سٹیج ڈراموں میں دیگر اداکاراؤں کے برعکس چست جملے بازی کی وجہ سے کافی شہرت پائی ہے۔ اکثر منجھے ہوئے مرد اداکاروں کے ساتھ فی البدیہہ اور برجستہ جملوں کے تبادلہ میں مشغول نظر آتی ہیں۔ کہا جاتا ہے کہ سٹیج ڈرامے میں ہیجان انگیز رقص کی روایت نرگس نے ہی ڈالی ہے۔

انہوں نے حال ہی میں کئی وڈیو اقراص میں بھی اپنے رقص کے فن کا مظاہرہ کیا ہے جو پاکستان اور بیروں ملک بہت مقبول ہوئیں ہیں۔

مقبولیت[ترمیم]

کہا جاتا ہے کہ سیالکوٹی مشہور خاندان سے تعلق رکھنے کی وجہ سے انکو اور بھی زیادہ مقبولیت ملی۔ حال ہی میں نرگس اور انکی بہن دیدار(ڈانسر) ،دونوں نے سٹیج ڈراموں میں کام کرنا اور ڈانس کرنا چھوڑ دیا ہے۔ دیدار کی شادی کے بعد انہوں نے باقائدہ پریس کانفرنس کے ذریعے بتایا کہ انہوں نے سٹیج ڈراموں میں ڈانس کرنا چھوڑ دیا ہے۔ نرگس کی پاکستان بھر میں مقبولیت ان کے ڈانس اور ان کے بات کرنے کے انداز کی وجہ سے ہے۔ نرگس کی آواز ان کے دیوانوں کو بہت لبھاتی تھی۔