نسناس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

نسناس (Nasnas) نصف انسان، جس کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ ڈیمن اور انسان کے ملاپ سے پیدا ہوا۔

Midori Extension.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کر کے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔

نسناس انسانوں کی شکل کی ایک مخلوق ہے جو انہں کی نسل سے ہے اور صحاح میں ہے کہ وہ ایسی مخلوق ہے جو ایک پیر سے کود کود کر چلتی ہے۔مسعودی نے "مروج الذھب" میں لکھا ہے کہ یہ انسان کی طرح ایک جانور ہے جس کی صرف ایک آنکھ ہوتی ہے یہ پانی میں رہتا ہے پانی سے نکل کر بات بھی کرتا ہے انسان پر قابو پا لے تو اس کو مار ڈالتا ہے۔اور قزوینی نے اپنی کتاب میں لکھا ہے کہ یہ مستقل ایک قوم ہے جن میں ہر ایک کو انسان کا آدھا جسم ملا ہے آدھا سر، ایک آنکھ،ایک سر، ایک ہاتھ، ایک پیر، جیسے کسی انسان کو چیر کر دو ٹکڑے کردیا گیا ہو۔ایک پیر پر بہت تیز پھدکتا ہے اور بہت تیز دوڑتا ہے دریاۓ چھین کی جزیروں پر پایا جاتا ہے دنیوری کی کتاب "المجالستہ" میں ابن اسحاق سے نقل ہے کہ نسناس یمن میں ایک مخلوق ہے جس کی ایک آنکھ ایک ہاتھ اور ایک پیر ہوتا ہے جس سے وہ چھلانگ لگاتے ہیں ۔اہل یمن اس کا شکار کرتے ہیں۔