نمک کے آدمی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
نمک کے آدمی
Saltman1.jpg
پہلے نمک کے آدمی کا سر ایران کے قومی عجائب گھر میں

معلومات شخصیت

نمک کے آدمی (فارسی: مردان نمکی، انگریزی: Saltmen) ایران کے صوبہ زنجان کے شہر زنجان کے مغرب میں واقع چہر آباد میں موجود نمک کی کان سے دریافت ہونے والی انسانوں کی ان باقیات، ڈھانچوں یا تقریباً حنوط شدہ لاشوں کو کہا جاتا ہے جو 1993ء کے موسم سرما میں دریافت ہوئی تھیں۔ ان کی تعداد چھ ہے جن میں ایک عورت اور ایک نوجوان لڑکا بھی شامل ہے۔ ان میں سے کچھ لاشوں کو بُلڈوزر کے ذریعے کان کنی کا کام کرتے ہوئے شدید نقصان بھی پہنچا تھا۔ سنہ 2008ء میں اس کان پر کام روک دیا گیا اور چھٹے آدمی کی لاش ناکافی لوازم و سہولیات کی بنا پر وہیں رہ گئی۔[1][2]

نمک کے ان آدمیوں میں سے دو کا تعلق 400 قبل مسیح کے ہخامنشی دور سے ہے اور دو ساسانی عہد کے ہیں جن کا زمانہ 400 سے 600 قبل مسیح کا تھا۔ نمک کے آدمی دنیا میں دریافت ہونے والے اب تک کے آثار میں سب سے قیمتی سمجھے جاتے ہیں جن کی قیمت کا تاحال تعین نہیں ہو سکا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "SALT MEN OF IRAN" (بزبان انگریزی). pasthorizonspr. 7 June 2011. 
  2. "مردان نمکی" (بزبان فارسی). جهان نیوز. 11 مارچ 2012.