ورینہ پنجاب

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ورینہ قدیم آباد کاری سے مغالطہ نہ کھائیں۔

ورینہ گاؤں چهوٹامگر بہت ہی خوبصورت گاؤں ہے۔ گاؤں کی کل آبادی تقریباً ایک یا دو ہزار کے لگ بھگ ہے۔ یہ گاؤں منڈی بہاؤالدین اور سرائے عالمگیر کے درمیان میں واقع ہے۔ اس گاؤں کے مشرق میں اوپری جہلم نہر اور مغرب میں دریائے جہلم رواں ہے۔ اس گاؤں میں ننانوے فیصد مغل بردی مقیم ہے جبکہ ایک فیصد راجا برادری ہے۔ اور ایشیا کی سب سے پہلی وکیل عورت بھی اسی گاؤں کی ہے۔[کون؟] یہ گاؤں کب وجود میں آیا اس کا تو کوئی سہی اندازہ نہیں لگا سکتا مگر مغلیہ دور حکومت سے پہلے اس گاؤں کا کوئی نام و نشان نہیں تھا۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]