پتھر کا خون (ناول)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
پتھر کا خون
مصنف ابن صفی
اصل عنوان پتھر کا خون
ملک پاکستان
زبان اردو
سلسلہ عمران سیریز
صنف ناول، (جاسوسی ادب)
تاریخ اشاعت
1956ء
ذرائع ابلاغ کارڈ کور
متن [[s:{{{Wikisource}}}|پتھر کا خون (ناول)]] at ویکی ماخذ

پتھر کا خون ابن صفى کی عمران سيريز کا گیارھواں ناول ہے۔

ناول کا خلاصہ[ترمیم]

محکمئہ خارجہ کی سیکرٹ سروس کا سربراہ علی عمران، سیکرٹ سروس کے دیگر آٹھ مبران کی مدد سے ایک ایسے ملک دشمن منظم گروہ کا پتہ لگاتا ہے، جو ملک کی تباہی کے لئیے اعلیٰ حکومتی افسران کو اغوا کرتا ہے اور انہیں نجی جیلوں میں بند کر دیتا ہے۔ اس کے بعد ان پر بے پناہ تشدد کر کے ان سے ملک کے خفیہ رازوں کا پتہ لگایا جاتا ہے۔

اسی دوران جولیانا فٹزواٹر ان ظالم لوگوں کے ہاتھ آجاتی ہے اور وہ اسے تشدد کا نشانہ بنانے کی نیت سے اغوا کر لیتے ہیں۔ عمران عین موقع پر پہنچ کر جولیا کو بچا لیتا ہے۔ مگر وہ اسے پھر بھی معاف نہیں کرتی کیونکہ وہ کہتی ہے کہ عمران کو اس کی مدد کے لیے اتنی دیر نہ کرنی چاہئیے تھی۔

عمران گروہ کے دونوں لیڈروں کو پکڑ لیتا ہے۔ مگر ایکسٹو کے آدمی عمران کو ذلیل کرنے کے بعد اس سے ان کو چھین لیتے ہیں اور عمران روتا رہ جاتا ہے۔ انھیں یہ نہیں پتہ ہوتا، کہ دراصل عمران ہی ان کا سربراہ ایکسٹو ہے اور وہ دل ہی دل میں قہقہے لگا رہا ہے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]